کولکاتہ کے سابق کمشنر راجیو کمار کو سپریم کورٹ سے جھٹکا

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 22nd May 2019, 11:51 AM | ملکی خبریں |

نئی دہلی،22/ مئی (ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا) کولکاتہ کے سابق کمشنر راجیو کمار کو سپریم کورٹ سے جھٹکا لگا ہے۔سپریم کورٹ کے چیف جسٹس نے معاملے میں فوری طور پر تین ججوں کی بنچ کے قیام سے انکار کیا۔ سپریم کورٹ کے سالیسٹرجنرل نے سی جے آئی کا حکم راجیو کمار کے وکیل کو مطلع کیا۔ 24 مئی تک راجیو کمار کو گرفتاری سے تحفظ حاصل ہے۔کولکاتہ کے سابق پولیس کمشنر راجیو کمار سپریم کورٹ پہنچے تھے۔عرضی میں سپریم کورٹ سے حکم میں ترمیم کرکے عبوری تحفظ کو بڑھانے کا مطالبہ کیا ہے۔راجیو کمار کے وکیل نے کہا تھا کہ مغربی بنگال میں عدالتوں میں ہڑتال چل رہی ہے اس لیے وہ عرضی داخل نہیں کر پا رہے ہیں کیونکہ وہاں وکلاء کی ہڑتال ہے۔ لہٰذا پیشگی ضمانت کی درخواست دائر کرنے کے لئے ان کے عبوری تحفظ کے حکم میں ترمیم کرکے ہڑتال تک بڑھایا جائے۔بنچ نے کہا تھا کہ یہ تین ججوں کی بنچ کا فیصلہ تھا اس سے سالیسٹر جنرل کے سامنے ذکر کریں تاکہ وہ سی جے آئی کے سامنے معاملے کو رکھ سکیں۔ اس سے پہلے سپریم کورٹ نے گرفتاری پر روک کو ہٹا لیا تھا اور راجیو کمار کو سات دن کے عبوری تحفظ دیا تھا تاکہ وہ متعلقہ کورٹ سے پیشگی ضمانت لے سکیں۔

ایک نظر اس پر بھی

کورٹ نے راجیو سکسینہ کو بیرون ملک جانے کی اجازت دینے والے عدالت کے فیصلے پر روک لگائی

سپریم کورٹ نے آگسٹا ویسٹ لینڈ ہیلی کاپٹر سودے سے منسلک منی لانڈرنگ معاملے میں سرکاری گواہ راجیو سکسینہ کو دیگر بیماریوں کا علاج کرانے کے لئے بیرون ملک جانے کی اجازت دینے کے دہلی ہائی کورٹ کے حکم پر بدھ کو روک لگا دی