یوپی میں خاتون مظاہرین پر پولس نے برسائی لاٹھیاں! ویڈیو وائرل

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 22nd January 2020, 8:31 PM | ملکی خبریں |

اٹاو،22/جنوری(ایس او نیوز/ایجنسی) اترپردیش کے ضلع اٹاوہ میں شہریت(ترمیمی)قانون کے خلاف احتجاج کے لئے کثیر تعداد میں اکٹھا ہونے والی خواتین پر پولیس نے دھکا مکی کے بعد اس وقت لاٹھی چار ج کردیا جب تحریک کار خواتین نے احتجاج ختم کرنے سے انکار کر دیا۔

اطلاعات کے مطابق اٹاوہ کے پچراہ علاقے میں منگل کو کثیر تعداد میں خواتین شہریت(ترمیمی) قانون کے خلاف احتجاج کے لئے اکٹھا ہوئی تھیں۔پولیس نے انہیں منتشر کرنے کے لئے پہلے ان کے ساتھ دھکا مکی کی اور پھر جب خواتین احتجاج پر بضد رہیں تو پولیس نے وہاں موجود افراد پر لاٹھیاں چارج کردیں ۔خواتین پولیس کی لاٹھیوں سے بچنے کے لئے دوکانوں میں گھسنے پر مجبور ہوئیں۔

منگل کی صبح چند خواتین کی جانب سے شروع ہونے والا احتجاج میں رات تک کثیر تعداد میں افراد پہنچ گئے۔ پولیس اطلاع پاتے ہی موقع پر پہنچی اور انہیں ہٹانے کی کوشش کرنے لگی۔پولیس کی اس کاروائی کا ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہورہا ہے۔

سوشل میڈیا پر وائرل ایک ویڈیو میں پولیس بھاگ رہی خواتین کا تعاقب کرتی اور احتجاج کرنے والوں کو ڈنڈوں سے پیٹی ہوئی نظر آرہی ہے۔17 سینکڈ کی ویڈیو میں خواتین کو چلاتے ہوئے اور پولیس سے یہ پوچھتے ہوئے دیکھا جاسکتا ہے کہ وہ ان کے ساتھ مارپیٹ کیوں کررہی ہے۔قابل ذکر ہے کہ شہریت (ترمیمی) قانون کے خلاف پورے ملک میں مظاہرے ہورہے ہیں۔

یو پی میں گذشتہ دسمبر کو ہوئے احتجاجی مظاہروں میں تشدد پھوٹ پڑا تھا اور تقریبا 23 افراد کی جانیں گئی اور سینکڑوں افراد کو گرفتار کیا گیا تھا۔ پولیس کی راتوں رات دبش اور نقصان کی تلافی کے نوٹس جاری کرنے کے بعد یو پی میں خوف کی لہر سی دوڑ گئی تھی۔

اب خواتین نے احتجاجی مظاہروں کی قیادت شروع کی ہے اور کانپور ،پریاگ راج کے بعد لکھنؤ میں احتجاجی مظاہرے شروع ہوگئے۔ یو پی میں احتجاجی مظاہروں کو ختم کرانے کے لئے ہر ممکن کوشش کی جارہی ہے اور ہر حربہ اپنا یا جارہا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

ہندوؤں کو اقلیتی درجہ دینے کا مطالبہ کرنے والی عرضی سپریم کورٹ سے خارج

سپریم کورٹ نے لفظ اقلیت کی تعریف کرنے اور ملک کی 9 ریاستوں میں اقلیتوں کی شناخت کےلئے ہدایت جاری کرنے سے متعلق عرضی جمعرات کو خارج کر دی۔ عرضی میں مطالبہ کیا گیا تھا کہ جن ریاستوں میں ہندوؤں کی تعداد کم ہے وہاں انہیں اقلیتی درجہ فراہم کیا جائے۔

اپہار آتشزدگی سانحہ: متاثرین کی ’كيوریٹو عرضی‘ خارج، انسل برادران نہیں جائیں گے جیل

سپریم کورٹ نے اپہار سینما آتشزدگی سانحہ میں لاپروائی کے مجرم اورملک کے جانےمانے بلڈر انسل برادران کو بڑی راحت دیتے ہوئے آتشزدگی شکار کی ایسوسی ایشن کی كيوریٹو عرضی خارج کردی ہے۔ اب سشیل انسل اور گوپال انسل کو جیل نہیں جانا پڑے گا۔

دہلی: ڈاکٹر کفیل کی رہائی کے لئے یوپی بھون پر مظاہرہ، جامعہ کے متعدد طلبا پولیس حراست میں

اتر پردیش میں سیاسی اور سماجی کارکنان کے خلاف استعمال کیے جانے والے سخت قوانین کے خلاف جامعہ ملیہ اسلامیہ کے طلبہ نے جمعرات کو یہاں اتر پردیش بھون کا گھیراؤ کرنے کی کوشش کی لیکن پولیس نے انھیں حراست میں لے لیا۔

کیرالہ: وزیر اعلیٰ وجین کا سڑک حادثے میں 20 افراد کی موت پر تعزیت کا اظہار

 کیرالہ کے وزیراعلی پنارائی وجین نے جمعرات کو تمل ناڈو کے تروپور ضلع کے اویناشی کے نزدیک قومی شاہراہ پرایک لاری کے کیرالہ ریاستی ٹرانسپورٹ کارپوریشن (کے ایس آرٹی سی) کی بس سے ٹکرانے کی وجہ سے ہوئے حادثے میں 20 افراد کی موت پر گہرے دکھ کا اظہار کیا ہے۔