متھراعیدگاہ معاملہ: 28 جنوری کوپھرسماعت ہوگی

Source: S.O. News Service | Published on 19th January 2021, 11:02 AM | ملکی خبریں |

متھرا،19؍جنوری(آئی این ایس انڈیا)متھرا میں نیاتنازعہ کھڑاکردیاگیاہے۔ شاہی عیدگاہ مینجمنٹ کمیٹی کے دلائل اور اعتراض پرپیر کو ضلع جج یشونت مشرا کی عدالت میں سماعت ہوئی۔

عیدگاہ نے عرضی کو غلط قرار دیتے ہوئے مسترد کرتے ہوئے کہاہے کہ اس معاملے میں نظر ثانی کی دائر اپیل پرسماعت نہیں ہونی چاہیے۔ اس پر شری کرشنا کے وکیل وشنو شنکر جین نے بھی بات کی اور کہا کہ اس معاملے میں دونوں اپیلیں اور نظرثانی دائر کی جاسکتی ہیں۔جس پرعدالت نے نظرثانی کی شکل میں سماعت کا حکم دیا ہے۔ اب اگلی سماعت 28 جنوری کوہوگی۔عرضی میں 12 اکتوبر 1968 کو سیوا سنگھ اور شاہی مسجدعیدگاہ کے مابین ہونے والے معاہدے کاذکرکرتے ہوئے ، مقدمہ نمبر 43/1967 میں دائر معاہدہ قانونی طور پر عدم موجود ہے۔ 7 جنوری کوبحث کے دوران شاہی عیدگاہ مینجمنٹ کمیٹی کے سکریٹری تنویر احمدکی جانب سے درخواست دی گئی تھی کہ مدعی کادعویٰ قانونی نہیں ہے اورمعاملہ درج نہیں ہوناچاہیے۔

مدعی دعویٰ کرتے ہیں کہ ادگاہ مسجد سری کرشنا کی جائے پیدائش پر تعمیر کی گئی ہے۔ یہاں سے 30 ستمبر کو کیس خارج ہونے کے بعد ، قانونی چارہ جوئی کے لیے ضلعی عدالت میں پناہ لی گئی۔ اس میں پوری 13.37 ایکڑ مساجد کو سری کرشنا جنم بھومی ٹرسٹ کے حوالے کرنے کا مطالبہ کیا گیا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

ہریانہ میں سرکاری اداروں کو احتجاجاًدودھ100؍ روپے لیٹر بیچنے کی اپیل

زرعی قوانین  کے خلاف کسانوں کے احتجاج کو مودی حکومت  کے ذریعہ پوری طرح نظر انداز کردیئے جانے  کے  بعد احتجاج کا نیا طریقہ تجویز کرتے ہوئے ہریانہ کی کھاپ پنچایت نے کسانوں سے دودھ خریدنے والی سرکاری کوآپریٹیو سوسائٹیوں کو دودھ 100؍ روپے لیٹر فروخت کرنے کی اپیل کی ہے۔ یہ اپیل ...

پرشانت کشور نے پھر ممتا کی فتح کو یقینی قرار دیا، یہ چیلنج بھی دہرایا کہ زعفرانی پارٹی بنگال میں 2ہندسی عدد پار نہیں کرپائیگی

انتخابات کی تاریخوں کا اعلان ہوتے ہی ممتا بنرجی کی انتخابی مہم کی حکمت عملی تیار کرنے والے پرشانت کشور نے اپنے اس  چیلنج کو دہرایا ہے کہ مغربی بنگال میں ایک بار پھر ممتا بنرجی ہی اقتدارمیں واپس آئیں گی۔

کانگریس کی کمزوری پر سینئر لیڈروں کا درد پھر چھلک آیا، قیادت سے نالاں، کانگریس میں نئی جان پھونکنے کی ضرورت‘جموں میں منعقدہ ’شانتی سمیلن‘ سے سینئر کانگریس لیڈروں کا خطاب

آل انڈیا کانگریس پارٹی کے کئی سینئر لیڈروں نے آج کہا ہے کہ پارٹی گزشتہ ایک دہائی کے دوران بہت کمزور ہوگئی ہے اور اسے واپس ڈگر پر لانے کے لئے متحد ہوکر کوششیں کرنے کی ضرورت ہے۔