دہلی میں سرکاری زمین پر موجود سبھی مساجد کا ٹوٹنا طے: بی جے پی رکن پارلیمنٹ پرویش ورما

Source: S.O. News Service | Published on 13th January 2020, 9:21 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی،13/جنوری (ایس او نیوز/ایجنسی) دہلی میں اسمبلی انتخابات کی تاریخوں کا اعلان ہونے کے بعد سیاسی پارٹیوں کی انتخابی تشہیر تیز ہو گئی ہے۔ لیکن اس درمیان بی جے پی کے کئی لیڈران نے مسلمانوں کے خلاف زہر افشانی شروع کر دی ہے۔ تازہ بیان مغربی دہلی کے بی جے پی رکن پارلیمنٹ پرویش ورما نے دیا ہے جس میں انھوں نے کہا ہے کہ سرکاری زمین پر بنی ہوئی مساجد کا ٹوٹنا طے ہے۔ بی جے پی رکن پارلیمنٹ کے اس بیان کو ووٹوں کے پولرائزیشن سے جوڑ کر دیکھا جا رہا ہے۔

دراصل پرویش ورما دہلی واقع بی جے پی دفتر میں ایک پریس کانفرنس سے خطاب کر رہے تھے۔ اس پریس کانفرنس میں انھوں نے مساجد کو منہدم کیے جانے سے متعلق بیان دیا اور پھر دہلی کی عآپ حکومت کے خلاف بھی کئی طرح کے بیان دیے۔ دہلی اسمبلی انتخاب کے مقصد سے منعقد پریس کانفرنس میں وزیر اعلیٰ اروند کیجریوال کو پوری طرح سے ناکام قرار دے کر اور پھر مساجد کے تعلق سے زہر انگیز بیان دے کر انھوں نے ہندو ووٹروں کو پولرائز کرنے کی کوشش کی ہے۔ حالانکہ پہلے بھی وہ سرکاری زمین پر موجود مساجد توڑنے کو لے کر بیان دے چکے ہیں۔

گزشتہ سال جون میں پرویش ورما نے دہلی کے لیفٹیننٹ گورنر کو ایک خط لکھا تھا جس میں انھوں نے الزام عائد کیا تھا کہ ملک کی راجدھانی دہلی میں کئی مساجد کی تعمیر سرکاری زمین پر غیر قانونی طریقے سے کی گئی ہے۔ بی جے پی رکن پارلیمنٹ نے مطالبہ کیا تھا کہ ایسی مساجد کو سرکاری زمین سے ہٹایا جائے۔ حالانکہ دہلی اقلیتی کمیشن نے پرویش ورما کے ان الزامات کو سرے سے خارج کر دیا تھا اور کہا تھا کہ ان کے دعوے میں ذرا بھی سچائی نہیں ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

کیرالہ میں آر ایس ایس کارکن گرفتار، پوچھ تاچھ میں ہوئے حیرت انگیز انکشافات

کیرالہ کے کنور میں آر ایس ایس دفتر کے پاس واقع پولس پوسٹ پر بم پھینکے جانے کے الزام میں پولس نے آر ایس ایس کارکن کو گرفتار کیا ہے۔ تمل ناڈو کے کوئمبٹور سے آر ایس ایس کا یہ ورکر بدھ کے روز گرفتار ہوا جس کے بعد اس سے سختی کے ساتھ پوچھ تاچھ کی گئی۔

اندرا جے سنگھ کے بیان پر کنگنا کا نازیبا تبصرہ؛ ایسی خواتین کی کوکھ سے عصمت دری کرنے والے پیدا ہوتے ہیں

نربھیا عصمت دری معاملہ مستقل خبروں میں بنا ہوا ہے اور اب مجرموں کو پھانسی دینے کا معاملہ سرخیوں میں ہے۔ نربھیا کے والدین ذرائع ابلاغ کے لئے سیلیبریٹی سے کم نہیں ہیں اور اسی وجہ سے حال ہی میں دہلی اسمبلی انتخابات میں یہ بات بہت تیزی کے ساتھ پھیلی کہ نربھیا کی والدہ اسمبلی چناؤ ...

راجستھان: کوٹہ میں بھی خواتین نے بنایا ’شاہین باغ‘، احتجاج کا سلسلہ 9 دنوں سے جاری

دہلی کے شاہین باغ سے تحریک لیکر ملک کے مختلف طول و عرض میں شہریت ترمیمی قانون، این آر سی اور این پی آر کے خلاف خواتین کے مظاہروں کا سلسلہ لگاتار جاری ہے۔ ت تکنیکی تعلیمی اداروں کے لیے مشہور راجستھان کے شہر کوٹہ میں بھی خواتین نے ایک ’شاہین باغ‘ قائم کر لیا ہے اور گذشتہ 9 روز سے ...

میری بیٹیوں پر مقدمہ درج ہوا تو امت شاہ پر کیوں نہیں؟ منور رانا

شہریت ترمیمی قانون (سی اے اے) کے خلاف مظاہرے میں شامل ہونے کی پاداش میں اپنی بیٹیوں کے خلاف مقدمہ درج لکھے جانے کے بعد اردو کے نامور شاعر منور رانا نے امت شاہ کی لکھنؤ ریلی پر سوال اٹھایا ہے۔ انہوں نے کہا کہ مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ نے جلسہ عام سے خطاب کر کے انتظامیہ کی طرف سے ...

ملک گیر احتجاج: ’شاہین باغ کی دبنگ دادیوں کو گمراہ کر کے ایل جی کے پاس لے جایا گیا‘

قومی شہریت ترمیمی قانون، این آر سی اور این پی آر کے خلاف شاہین باغ مظاہرین انتظامیہ نے واضح کیا ہے کہ احتجاج جاری رہے گا۔ بیان میں کہا گیا ہے کہ دبنگ دادیوں کو گمراہ کر کے لیفٹننٹ گورنر سے ملاقات کرائی گئی تھی اور جو لوگ انہیں وہاں لے کر گئے تھے وہ شاہین باغ خواتین مظاہرین کی ...