تمام ہائیکورٹ پاسکو ایکٹ کے تحت زیر التوا معاملوں کی فہرست سونپیں: سپریم کورٹ

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 13th March 2018, 11:03 AM | ملکی خبریں |

نئی دہلی12مارچ(ایس او نیوز؍ آئی این ایس انڈیا )سپریم کورٹ نے تمام ہائیکورٹ سے کہا ہے کہ پاسکو ایکٹ کے تحت زیر التوا معاملوں کی فہرست سونپیں۔ درخواست گزار نے عدالت کو بتایا کہ 2006 این سی آر بی کے اعدادوشمار کے مطابق بچوں کے ساتھ جنسی جرائم کے 89 فیصد معاملے زیر التوا ہیں۔2017 تک کے اعداد و شمار این سی آر بی مہیا نہیں کرا رہا ہے؛ لیکن اب تک ضرور یہ اعداد و شمار 90فیصدی سے تجاوز کر چکا ہوگا۔ این سی آر بی کے مطابق پاسکو ایکٹ کے تحت درج 101326 معاملات میں 11 ہزار کا ہی نمٹا ہوا ہے اور 90205 معاملے زیر التوا ہی ہیں۔ کورٹ میں اگلی سماعت 28 اپریل کو ہوگی۔ درخواست گزار نے کہا کہ پاسکو ایکٹ کے تحت مجرم کو سزائے موت کا قانون ہو۔ اس پر عدالت نے کہا کہ آپ اس معاملے میں اپنی حد میں ہی رہیں۔ دہلی میں 8 ماہ کی بچی کے ساتھ جنسی استحصال کے معاملے میں سپریم کورٹ سماعت کر رہا ہے، گزشتہ سماعت میں عدالت نے مرکزی حکومت سے پوچھا کہ پاسکو کے کیس کے تحت تفتیش مکمل کرنے میں کتنا وقت لگنا چاہئے۔ کورٹ نے مرکز اور درخواست گزار سے پوچھا کہ پاسکو ایکٹ کے تحت ملک بھر میں کتنے ٹرائل زیر التواء ہیں۔ وہیں مرکزی حکومت نے کورٹ کو بتایا تھا کہ بچی کو ایمس میں داخل کیا گیا ہے اور اس کا پورا خیال رکھا جا رہا ہے۔ حکومت نے کہا کہ 75 ہزار روپے کا معاوضہ فوری طور پر بچی کے گھر والوں کو دیا گیا ہے۔ ایمس کے دونوں ڈاکٹروں کی رپورٹ میں کہا گیا کہ بچی کی سرجری کی گئی تھی اور اب وہ بہتر ہے۔ اس سے پہلے عدالت نے حکم دیا تھا کہ ایمس کے دو ڈاکٹر بچی کی تحقیقات کریں گے اور ضرورت پڑنے پر ایمس میں داخل کریں گے۔ بدھ کو سپریم کورٹ نے تشویش ظاہر کرتے ہوئے مرکزی حکومت کو ایمس کے دو مناسب ڈاکٹروں کو کلاوتی شرن ہسپتال جاکر بچی کا معائنہ کرنے کا حکم دیا تھا۔ کورٹ نے کہا تھا کہ ڈاکٹروں کے ساتھ خصوصی ایمبولینس بھی جائے گی اور ڈاکٹروں نے ضرورت محسوس کی تو بچی کو ایمس میں فوری طور پر بھرتی کیا جائے گا۔کورٹ نے کہا کہ اس دوران دہلی لیگل سروس اتھارٹی کا رکن بھی موجود رہے گا۔ سپریم کورٹ نے کہا تھا کہ امید ہے کہ بچی کے ماں باپ تعاون کریں گے۔ دہلی کی شکور بستی علاقے سے آٹھ ماہ کی بچی کے جنسی استحصال کا معاملہ سامنے آیا تھا۔ اس معاملے میں پولیس نے بچی کے کزن (28 سال) کو گرفتار کیا تھا۔ یہ معاملہ اتوار کا ہے۔ 

ایک نظر اس پر بھی

اب مدرسہ تعلیم میں تبدیلی کی تیاری میں مرکزی حکومت ، بورڈ سے منظوری لینا ہوگا لازمی

فروغ انسانی وسائل کی وزارت مدرسہ تعلیم میں تبدیلی کے منصوبہ پر غور و خوض کررہی ہے۔ اس کے پیچھے وزارت کا مقصد مدارس میں پڑھنے والے طلبہ کو اچھی معیار ی تعلیم فراہم کرنا ہے۔ اس منصوبہ کے تحت تعلیمی اداروں کا مدرسہ بورڈ یا پھر اسٹیٹ بورڈ سے الحاق ضروری ہوگا۔

داعش مقدمہ ،اریب مجید کی ضمانت عرضداشت سپریم کورٹ میں داخل، ملزم کے والد کی درخواست پر جمعیۃ علماء نے سپریم کورٹ سے رجوع کیا: گلزار اعظمی

ممنو ع تنظیم داعش کے رکن ہونے اور دہشت گردانہ سرگرمیوں میں ملوث ہونے کے الزامات کے تحت کلیان کے ساکن اریب مجید کی ضمانت عرضداشت ملزم کے والد ڈاکڑاعجاز مجید کی درخواست پر جمعیۃ علماء نے سپریم کورٹ میں داخل کی ہے جس کا ڈائری نمبر 22076/2018 ہے، یہ اطلاع آج یہاں ملزم کو قانونی امداد ...

کولگام میں فوجی ٹکڑی پر حملہ، جوابی کارروائی میں لشکر طییہ کے دو جنگجو جاں بحق 

گورنر راج نافذ ہونے کے بعد بھی جموں و کشمیر میں جنگجوئیت میں کمی نہیں آئی ہے۔ اتوار کو کولگام میں گشت پر نکلی فوج کی ایک ٹکڑی پر گھات لگا کر بیٹھے دہشت گردوں نے حملہ کر دیا۔ حملے کے بعد دہشت گرد وہاں سے فرار ہوگئے۔

امت شاہ کے الزامات پر محبوبہ مفتی کاترکی بہ ترکی جواب، ہر فیصلہ میں بھاجپا کی حمایت شامل تھی : محبوبہ مفتی 

جموں کشمیر کی سابق وزیر اعلی محبوبہ مفتی نے اتوار کو اپنے اوپر لگے جموں اور لداخ کے علاقے کے ساتھ امتیازی سلوک کے الزامات کو مسترد کر تے ہوئے حیرت کا اظہار کیا کہ اگر یہ سچ ہے تو اب تک کسی بھی بی جے پی کے وزیر نے اس کے بارے میں کیوں نہیں کہا۔