مودی حکومت کے اور بھی کئی بڑے گھوٹالے سامنے آئیں گے: راہل گاندھی

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 7th December 2017, 12:02 AM | ملکی خبریں |

انجار، 06؍دسمبر (ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا)کانگریس صدرکے عہدے کے لیے نامزدگی کے بعدگجرات کے پہلے انتخابی دورے پر آنے والے راہل گاندھی نے آج دعویٰ کیا کہ مودی حکومت کے کئی بڑے گھوٹالے آنے والے وقت میں عوام کے سامنے آئیں گے۔ انہوں نے آج ضلع کچھ کے انجار میں ایک انتخابی ریلی میں کہا کہ رافیل جنگی طیارہ سودے اور بی جے پی صدر امت شاہ کے بیٹے جے شاہ کی کمپنی کے گھوٹالے تو بس شروعات ہیں۔ آنے والے وقت میں ان سے بڑے گھوٹالے ملک اور گجرات کے عوام کے سامنے آئیں گے۔مسٹر راہل گاندھی نے رافیل سودے پر دوبارہ مسٹر مودی سے تین سوال پوچھے اور نوٹ بندی اورجی ایس ٹی سے پیدا ہوئی افراتفری کے درمیان جے شاہ کی کمپنی کا کاروبار 50 ہزار روپے سے چند ماہ میں بڑھ کر 80 کروڑ ہونے کی بات بھیدوہرائی۔ انہوں نے الزام لگایا کہ ان معاملات کی پارلیمنٹ میں گجرات انتخابات کے دوران بحث نہ ہو اور عوام اسے نہ سن سکیں، اسی لیے پارلیمنٹ کے سرمائی اجلاس کو گجرات انتخابات کے بعد تک جان بوجھ کر ٹال دیا گیا۔مسٹر راہل گاندھی نے رافیل سودے پر دوبارہ مسٹر مودی سے تین سوال پوچھے اور نوٹ بندی اور جی ایس ٹی سے پیدا ہوئی افراتفری کے درمیان جے شاہ کی کمپنی کا کاروبار 50 ہزار روپے سے چند ماہ میں بڑھ کر 80 کروڑ ہونے کی بات بھی دوہرائی۔مسٹر راہل گاندھی نے مسٹر مودی سے گجرات میں 50 لاکھ گھر بنانے، گجرات کے تعلیم کے معاملے میں26 ویں مقام پر کھسکنے، صنعت کاروں سے مہنگی بجلی خریدنے اور ریاست پر قرض بڑھ کر ڈھائی لاکھ کروڑ ہو جانے کے بارے میں اپنے چار پرانے سوال دو?را ئے اور بی جے پی سے ان میں سے کسی ایک کا بھی جواب دینے کا چیلنج کیا۔ مسٹر گاندھی نے کہا کہ 22 سال بعد گجرات میں کانگریس کی حکومت بنے گی اور لوگوں کو ایک فرق محسوس ہوگا۔

ایک نظر اس پر بھی

بی جے پی کوپاکستان جیسے بیانات دینے پربہارمیں نقصان ہوچکاہے:اسدالدین اویسی

حیدرآباد کے رکن پارلیمنٹ و صدر کل ہند مجلس اتحاد المسلمین بیرسڑاسد الدین اویسی نے کہا ہے کہ گجرات کے انتخابی جلسوں میں جس طرح کی زبان وزیراعظم نریندر مودی استعمال کر رہے ہیں، اس پر ان کو کوئی تعجب نہیں ہوا ہے۔

’’بھگوا غنڈہ گردی ملک کی سلامتی کے لیے سب سے بڑا خطرہ ‘‘: آل انڈیا امامس کونسل

ہندوتواوادی اور فسطائی غنڈے نے پھر سے ملک کو شرمسار کر دیا۔ ایک نہتے اور بے قصور مزدور افراز الاسلام کو مزدوری دینے کے بہانے بلاکر پھاوڑے سے قتل کر دینا اور پھر پٹرول چھڑک کر آگ لگا کر جلا دینا ملک کے لیے ایک انتہائی شرمناک معاملہ ہے۔