رافیل معاملہ: راہل کے الزامات جھوٹے ہیں، سپریم کورٹ کے فیصلے کے بعد جے پی سی کی ضرورت نہیں:ارون جیٹلی

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 3rd January 2019, 8:14 AM | ملکی خبریں |

نئی دہلی،3 جنوری (ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا) رافیل معاملے میں کانگریس صدر راہل گاندھی کے الزامات کو‘جھوٹا‘ اور سابقہ یو پی اے حکومت پر ملک کی سلامتی سے سمجھوتہ کرنے کا الزام لگاتے ہوئے وزیر خزانہ ارون جیٹلی نے بدھ کو لوک سبھا میں کہا کہ کچھ لوگ ایسے ہوتے ہیں جنہیں فطری طور پر سچائی ناپسند ہوتی ہے۔انہیں صرف پیسے کا ریاضی سمجھ میں آتا ہے، ملک کی سلامتی کا نہیں۔

جے پی سی کی مانگ کو مسترد کرتے ہوئے جیٹلی نے کہا کہ اس میں مشترکہ پارلیمانی کمیٹی نہیں ہو سکتی ہے، یہ پالیسی موضوع نہیں ہے۔یہ معاملہ سودے کے حق کے سلسلے میں ہے۔سپریم کورٹ میں یہ درست ثابت ہوا ہے۔انہوں نے کہا کہ جے پی سی میں دلگت سیاست کا موضوع آتا ہے۔بوفورس معاملے میں جے پی سی نے کہا تھا کہ اس میں کوئی رشوت نہیں دی گئی۔اب وہ ہی لوگ جے پی سی کا مطالبہ کر رہے ہیں تاکہ ایک شفاف حکومت کے خلاف مقدمہ قائم کرنے کا موقع مل سکے۔رافیل طیارے سودا معاملے پر لوک سبھا میں بحث میں مداخلت کرتے ہوئے جیٹلی نے کہاکہ یہ ایک ایسا معاملہ ہے جس میں پہلے سے لے کر آخری لفظ تک جو بھی بولا گیا، مکمل طور پر جھوٹ ہے۔

جیٹلی نے کہا کہ آج یہ راہل: کوئی ٹیپ لے کر آئے ہیں اور اس کی تصدیق نہیں کر رہے ہیں کیونکہ وہ غلط ہے۔یہ مکمل طور پر منگڑھت ہے۔یہ باتیں غلط اور ناقص ہیں۔وزیر خزانہ نے گاندھی خاندان پر نشانہ لگانے کے لئے بوفورس، آگسٹا ویسٹ لینڈ اور نیشنل ہیرالڈ معاملے کا ذکر کیا۔جیٹلی نے کہا کہ ہیرالڈ معاملے میں کیا ہوا، کس طرح سے پراپرٹی کو ذاتی ملکیت بنا دیا گیا۔آگسٹا ویسٹ لینڈ معاملے میں جس شخص کو لایا گیا ہے، اس سے متعلق ایک ای میل میں مسز گاندھی اور سنکشیپن کا استعمال کیا گیا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

 گجرات:  ٹھاکر کمیونٹی کادقیانوسی قانون،لڑکیوں کے موبائل کے استعما ل پر مکمل پابندی، بھاگ کر شادی کرنے پر اہل خانہ کو بھرنا ہوگا جرمانہ 

گجرات کے بناس کا ٹھا میں ٹھا کر کمیونٹی کی طرف سے 12 دیہات میں عجیب و غریب اور دقیانوسی قوانین بنائے گئے ہیں۔ اس میں ایک اصول ایسا ہے کہ لڑکیاں اپنے پاس موبائل نہیں رکھ پائیں گی۔

 اب تمام علاقائی زبانوں میں ہون گے ڈاک محکمہ کے امتحانات، راجیہ سبھا میں ہنگامہ کے بعد حکومت نے منسوخ کیا پیپر 

ڈاک محکمہ کی گزشتہ ہفتے ہوئے ایک امتحان کا ذریعہ صرف ہندی اور انگریزی رکھنے کی مخالفت میں منگل کو راجیہ سبھا میں کئی جماعتوں کے ارکان کے ہنگامے کی وجہ سے کاروائی کئی بار روکنا پڑی۔

پاکستانی جیل میں قید سابق ہندوستانی افسر کلبھوشن پر بین الاقوامی عدالت کا فیصلہ آج

پاکستان کی جیل میں بند ہندوستانی بحریہ کے سابق فوجی افسر کلبھوشن جادھو کے معاملے میں بدھ کو ہیگ واقع بین الاقوامی عدالت (آئی سی جے) اپنا فیصلہ سنائے گی۔ ’دی ہیگ‘ کے پیس پیلس میں 17 جولائی کو ہندوستانی وقت کے مطابق شام ساڑھے چھ بجے کھلی سماعت ہوگی جس کے بعد چیف جسٹس عبدالقوی ...