جموں وکشمیرمیں 2018 میں مارے گئے 230 سے زیادہ دہشت گرد

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 8th December 2018, 9:05 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی8دسمبر(ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا) جموں وکشمیر میں سیکورٹی فورسز نے اس سال اب تک 230 سے زیادہ دہشت گردوں کو مار گرایا ہے جبکہ پتھراؤ کے واقعات میں زخمی ہونے والوں کی تعداد میں کمی آئی ہے۔حکام نے ہفتہ کو بتایا کہ 25 جون سے 14 ستمبر کے درمیان 80 دن کی مدت میں تقریباََ51 دہشت گرد مارے گئے جبکہ 15 ستمبر سے پانچ دسمبر کے درمیان 85 دہشت گرد ڈھیر ہوئے ہیں۔افسر نے کہاہے کہ اس سال اب تک 232 دہشت گرد مارے گئے جبکہ غیر ملکیوں سمیت 240 دہشت گرد وادی کشمیر میں سرگرم ہیں۔اس سال 25 جون سے 14 ستمبر کے درمیان پتھر بازی کے واقعات میں سکیورٹی سمیت آٹھ افراد کی جان گئی جبکہ216 دیگر زخمی ہوئے۔ افسر نے کہا کہ اس کے بعد کے 80 دن یعنی 15 ستمبر سے پانچ دسمبر کے درمیان ان واقعات میں صرف دو لوگوں کی موت ہوئی جبکہ 170 زخمی ہوئے۔ایک اور اہلکار نے کہا کہ بی جے پی کی طرف سے محبوبہ مفتی کے زیر قیادت حکومت سے حمایت واپس لینے اور 19 جون کو ریاست میں گورنر راج لگائے جانے کے بعد وادی کشمیر کی سلامتی کی صورتحال میں بہتری آئی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

وزیر اعظم نریندر مودی پہلے چائے و الا، اب چوکیدار بن کر کر رہے تشہیر: مایاوتی

وزیر اعظم نریندر مودی کی طرف سے شروع کی گئی’میں بھی چوکیدار‘ مہم پر بہوجن سماج پارٹی (بی ایس پی) کی سربراہ مایاوتی نے منگل کو طنز کرتے ہوئے کہا کہ گزشتہ انتخابات میں چائے والا اور اب چوکیدار...، ملک واقعی بدل رہا ہے،