بھیو مہارادج خودکشی کیس کی ہو سی بی آئی جانچ: کانگریس

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 12th June 2018, 11:31 PM | ملکی خبریں |

بھوپال12جون ( ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا ) کانگریس نے مطالبہ کیا ہے کہ بھیومہاراج کے آج اندور میں مبینہ طور پر گولی مارکر کی گئی خودکشی کے معاملے کی سی بی آئی جانچ ہو۔بھیو کے انتقال پر گہرا دکھ کا اظہار کرتے ہوئے مدھیہ پردیش کانگریس کے ترجمان اگروال نے یہاں بتایا کہ ' بھیو بہت زیادہ ذہنی دباؤ میں تھے۔ اس معاملے کی سی بی آئی جانچ ہونی چاہیے، تاکہ ان کی طرف سے اٹھائے گئے اس گھناؤنے اقدام کے بارے میں جو بھی حقیقت ہے، وہ عیاں ہوجائے۔ انہوں نے کہا کہ مدھیہ پردیش کی بھاجپا حکومت نے تقریبا دو ماہ پہلے بھیو کو وزیر مملکت کا درجہ دیا تھا۔ لیکن انہوں نے اسے لینے سے انکار کر دیا تھا۔ میں نے ان سے کچھ دن پہلے بات چیت کی تھی اور بھیو نے مجھے بتایا تھا کہ وہ بی جے پی حکومت کے دباؤ میں ہیں اور وہ چاہتی ہے کہ بھیو ان کے لئے کام کریں۔ واضح رہے کہ 50 سالہ روحانی گرو بھیو مہاراج نے ذہنی دباؤ کی وجہ سے آج اندور واقع اپنے بنگلے میں مبینہ طور پر دائیں کنپٹی پر گولی مار کر خود کشی کر لی۔اسی درمیان، مدھیہ پردیش میں اپوزیشن لیڈر اجے سنگھ نے ان کے انتقال پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ بھیونیک دل انسان تھے۔ کانگریس کے سینئر لیڈر سنگھ نے کہا کہ وہ نرمدا سمیت دیگر دریاؤں میں ہو رہے غیر قانونی کھدائی سے فکر مند تھے جس کا اظہار انہوں نے کیا تھا۔ 

ایک نظر اس پر بھی

ملک کے مفادمیں متحد رہنے کانگریس جے ڈی ایس قائدین کا فیصلہ،14سال بعد دیوے گوڈا اور سدرامیا کی ایک ساتھ اخباری کانفرنس

آنے والے لوک سبھا انتخابات میں سیکولر سیاسی طاقتوں کو مضبوط کرنے کی غیر معمولی پہل کرتے ہوئے آج کانگریس اور جے ڈی ایس قیادت نے اتحاد کا غیر معمولی پیغام دیا۔

حکومت یونیورسیٹیوں میں اساتذہ کی اظہاررائے کی آزادی پربندش نہیں لگائے گی

فروغ انسانی وسائل کے مرکزی وزیرپرکاش جاویڈیکر نے دہلی یونیورسٹی میں لازمی خدمات فراہمی ایکٹ ( ا یسما) لگانے کے الزامات پر صفائی دیتے ہوئے کہا ہے کہ حکومت کا ارادہ اساتذہ کے اظہار رائے کی آزادی کو روکنے کا نہیں ہے۔