بھیو مہاراج کا سوسائڈ نوٹ ، ذہنی تناؤ کو خودکشی کی وجہ بتایا 

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 12th June 2018, 11:09 PM | ملکی خبریں |

اندور12جون ( ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا ) بھیو مہاراج نے آج کھنڈوا روڈ پر واقع رہائش گاہ پر خود کو گولی مار کر خود کشی کر لی۔ اندور کے بامبے ہسپتال میں ان کی موت کی تصدیق کی گی ہے۔ بتایا جا رہا ہے کہ بھیو مہاراج نے لائسنسی روالور سے اپنے سر میں گولی مار دی۔ گولی کی آواز سننے کے بعد ان کی رہائش گاہ میں موجود لوگ ان کے کمرے کی جانب دوڑے پھر زخمی حالت میں انہیں ہسپتال میں داخل کرایا گیا ۔ بھیو مہاراج کی موت کے بعد پولیس کو ان کا ایک سوسائڈ نوٹ ملا ہے۔ سوسائڈ نوٹ میں لکھی چند لائنوں ہی بھیو مہاراج نے انکشاف کیا ہے وہ کتنے کشیدگی میں تھے۔ پولیس کو ملے سوسائڈنوٹ میں لکھا گیا کہ خاندانی ذمہ دار یوں کو ہینڈل کرنے کے لئے کسی کو وہاں ہونا چاہئے۔ میں انتہائی دباؤ میں ہوں اور اسی عالم میں جا رہا ہوں۔ مدھیہ پردیش کے وزیر اعلی شیوراج سنگھ نے حال ہی میں ان ریاستی وزیر کا درجہ دیا تھا۔ بھیو مہاراج کے موت پر شیوراج سنگھ نے گہرا غم جتایا۔ سی ایم شیوراج سنگھ کے علاوہ بی جے پی اور کانگریسی لیڈروں نے بھی ان کے موت پر غم جتایا ہے ۔ بھیو مہاراج اس وقت چرچامیں آئے تھے جب انا تحریک کے وقت انہوں نے حکومت کے ساتھ بات چیت میں بڑا کردار ادا کیا تھا۔ اس تحریک کے وقت شرد یادو نے بھیو مہاراج کی تنقید بھی کی تھی۔ وہ پہلے فیشن ڈیزائنر تھے بعد میں روحانیت سے متاثرہوگئے ۔ انہوں نے قریب 49 سال کی عمر میں دوسری شادی کی تھی۔ انہوں نے پہلی بیوی کی موت کے بعد بیٹی اور ماں کا خیال رکھنے کے لئے ہی یہ شادی کی تھی۔ ان کی پہلی بیوی کادو سال پہلے انتقال ہو چکا ہے۔ 

ایک نظر اس پر بھی

وزیراعظم مودی نے کابینہ سمیت سونپا صدرجمہوریہ کو استعفیٰ، 30 مئی کو دوبارہ حلف لینےکا امکان

لوک سبھا الیکشن کے نتائج کے بعد جمعہ کی شام نریندرمودی نے وزیراعظم عہدہ سے استعفیٰ دے دیا۔ ان کے ساتھ  ہی سبھی وزرا نے بھی صدرجمہوریہ کواپنا استعفیٰ سونپا۔ صدر جمہوریہ نےاستعفیٰ منظورکرتےہوئےسبھی سے نئی حکومت کی تشکیل تک کام کاج سنبھالنےکی اپیل کی، جسے وزیراعظم نےقبول ...

نوجوت سنگھ سدھوکی مشکلوں میں اضافہ، امریندر سنگھ نے کابینہ سے باہرکرنے کے لئے راہل گاندھی سے کیا مطالبہ

لوک سبھا الیکشن میں زبردست شکست کا سامنا کرنے والی کانگریس میں اب اندرونی انتشار کھل کرباہرآنے لگی ہے۔ پہلےسے الزام جھیل رہے نوجوت سنگھ سدھو کی مشکلوں میں اضافہ ہونےلگا ہے۔ اب نوجوت سنگھ کوکابینہ سےہٹانےکی قواعد نے زورپکڑلیا ہے۔

اعظم گڑھ میں ہارنے کے بعد نروہوا نے اکھلیش یادو پر کسا طنز، لکھا، آئے تو مودی ہی

بھوجپوری سپر اسٹار نروہوا (دنیش لال یادو) نے لوک سبھا انتخابات کے دوران سیاست میں ڈبیو کیا تھا،وہ بی جے پی کے ٹکٹ پر یوپی کی ہائی پروفائل سیٹ اعظم گڑھ سے انتخابی میدان میں اترے تھے لیکن اترپردیش کے سابق وزیر اعلی اکھلیش یادو کے سامنے نروہا ٹک نہیں پائے۔