جمعیت علماء ہند کرناٹک شاخ کا دورہ رام نگرم

Source: S.O. News Service | Published on 3rd September 2022, 11:42 AM | ریاستی خبریں |

رام نگر،3؍ستمبر (ایس او نیوز) شہر رام نگرمیں حالیہ برسات کی تباہی کے بعد بہت ساری ریلیف تنظیموں نے بڑھ چڑھ کر حصہ لیا ہے جس میں جمعیت علماء ہند، ایس ڈی پی آئی،پاپولر فرنٹ آف انڈیا، ایچ آر ایس کرناٹک اور دوسری مسلم تنظیمیں قابل ذکر ہیں۔ جہاں تک سرکاری وعدوں کی بات ہے ابھی تک کسی بھی قسم کی کوئی مدد سرکار کی طرف سے نہیں آئی ہے۔ کئی لیڈروں نے دورہ کیا اور چلے گئے یہاں تک کہ وزیر اعلیٰ نے بھی دور ہ کیا صرف زبانی جمع خرچ کے علاوہ کچھ نہیں کیا۔ ابھی تک کوئی سرکاری نمائندہ ان علاقوں کا دورہ کرنا تک گوارا نہیں کیا۔ بجلی پوری طرح سے منقطع ہے۔ چھ دن گذر چکے ہیں مگر ابھی تک بجلی اور پانی کی فراہمی بحال نہیں ہو پائی ہے۔ اگر اس علاقے میں مسلم تنظیمیں اگر نہ آئی ہوتیں تو یہاں کے عوام برسات کی بربادی سے نہیں بلکہ یہاں کی گندگی کی وجہ سے دم توڑ چکے ہوتے۔ یہی خیالات اس علاقے کے لوگوں میں پائے جاتے ہیں۔ ایک طرف تو وہ سرکار سے بد ظن ہوچکے ہیں اور دوسری طرف ہمارے مسلم لیڈروں کے رویہ سے بھی مایوس ہوچکے ہیں۔کیونکہ ابھی تک کسی مسلم لیڈر نے بھی دور ہ نہیں کیا ہے اس علاقے کے عوام سخت ناراض ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

بجٹ 2023: ’کوئی امید نہیں، بجٹ ایک بار پھر ادھورے وعدوں سے بھرا ہوگا‘، سدارمیا کا اظہارِ خیال

یکم فروری کو مرکز کی مودی حکومت رواں مدت کار کا آخری مکمل بجٹ پیش کرنے والی ہے۔ مرکزی وزیر مالیات نرملا سیتارمن کے ذریعہ بجٹ پیش کیے جانے سے قبل بجٹ 2023 کو لے کر کانگریس کے کچھ لیڈران نے اپنے خیالات ظاہر کیے ہیں۔

کرناٹک ہائی کورٹ کی وارننگ، کہا: چیف سکریٹری دو ہفتوں میں لاگو کرائیں حکم

کرناٹک ہائی کورٹ نے منگل کو انتباہ دیا کہ اگر ریاستی حکومت دو ہفتوں کے اندر سبھی گاؤں اور قصبوں میں قبرستان کے لئے زمین فراہم کرانے کے اس کے حکم پر عمل درآمد کرنے میں ناکام رہتی ہے تو وہ چیف سکریٹری کے خلاف توہین عدالت کی کارروائی شروع کرنے پر مجبور ہوجائے گا ۔

منگلورو: محمد فاضل قتل میں ہندوتوا عناصر ملوث ہونے کا دعویٰ - اپوزیشن پارٹیوں نےکیا کیس کی دوبارہ جانچ کامطالبہ 

بی جے پی یووا مورچہ لیڈر پروین نیٹارو قتل کے بدلے میں عناصر کی طرف سے سورتکل میں محمد فاضل کو قتل کرنے کا کھلے عام دعویٰ کرنے والے وی ایچ پی اور بجرنگ دل لیڈر شرن پمپ ویل کے خلاف کانگریس ، جے ڈی ایس اور ایس ڈی پی آئی جیسی اپوزیشن پارٹیوں نے اس قتل کیس کی ازسر نو جانچ کا مطالبہ کیا ...

ٹمکورو میں اشتعال انگیز بیان دینے والے شرن پمپ ویل سمیت دیگر ہندوتوا لیڈروں کے خلاف قانونی کارروائی کا مطالبہ لے کر اے پی سی آر نے ایس پی کو دیا میمورنڈم

حال ہی میں ریاست کرناٹک کے  ٹمکور میں  منعقدہ شوریہ یاترا کے دوران وی ایچ پی لیڈر شرن پمپ ویل نے جو متنازع اور اشتعال انگیز بیان دیا  تھا ، اس پر کٹھن کارروائی کرتے ہوئے اسے گرفتارکرنے کا مطالبہ لے کر  ایسوسی ایشن فار پروٹیکشن آف سوِل رائٹس (اے پی سی آر) کے  ایک وفد نے ٹمکورو ...