نوٹ بندی کی آئینی درستگی کو چیلنج کرنے والی 59 عرضیوں پر سپریم کورٹ میں 12 اکتوبر کو ہوگی سماعت

Source: S.O. News Service | Published on 28th September 2022, 9:57 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی، 28؍ستمبر (ایس او نیوز؍ایجنسی) مودی حکومت کی جانب سے 2016 میں نافذ کی گئی نوٹ بندی کے آئینی جواز کے خلاف دائر کی گئی عرضیوں پر سپریم کورٹ میں پانچ ججوں کی آئینی بنچ میں 12 اکتوبر کو سماعت ہوگی۔ نوٹ بندی کے خلاف عرضیوں پر سپریم کورٹ نے سوال کیا ہے کہ اب اس معاملے میں کیا باقی ہے؟ کیا اس معاملے کی جانچ کرنے کی ضرورت ہے؟ کیا یہ معاملہ بے اثر تو نہیں ہو گیا؟ کیا یہ مسئلہ اب صرف علمی تو نہیں رہ گیا؟

بنچ کی سربراہی کر رہے جسٹس عبدالنظیر نے پوچھا- لیکن کیا اس معاملے میں اب کچھ باقی رہ گیا ہے؟ جسٹس گوائی نے کہا اگر کچھ نہیں بچا تو ہم کیوں آگے بڑھیں؟ عرضی گزاروں میں سے ایک کے لیے پیش ہونے والے پرناؤ بھوشن نے کہا کہ کچھ مسائل ہیں، بعد میں آنے والے نوٹیفکیشنز کی درستگی، تکلیف سے متعلق معاملات، کیا نوٹ بندی نے مساوات کے حق اور اظہار رائے کی آزادی کے حق کی خلاف ورزی کی ہے؟ وہیں سالیسٹر جنرل نے کہا کہ ’میرے خیال میں کچھ علمی مسائل کے علاوہ کچھ نہیں بچا ہے۔ کیا تعلیمی مسائل پر فیصلہ کرنے کے لئے 5 ججوں کو بیٹھنا چاہئے؟‘

خیال رہے کہ نوٹ بندی کی عرضیوں پر سماعت کرنے والی بنچ جسٹس ایس عبد النظیر، جسٹس بی آر گوائی، جسٹس اے ایس بوپنا، جسٹس وی راما سبرامنیم اور جسٹس بی وی ناگرتھنا پر مشتمل ہے۔ اس آئینی بنچ کے سامنے پانچ اہم نکات زیر غور آئیں گے۔ پہلا نکتہ نوٹ بندی کے حکم کو چیلنج کرنا ہے۔

عرضی 2016 میں ہی دائر کی گئی تھی۔ اس وقت وزیر اعظم نریندر مودی کی قیادت میں حکومت نے 500 اور 1000 روپے کے نوٹ منسوخ کر دیئے تھے۔ تب وویک نارائن شرما نے عرضی داخل کر کے حکومت کے اس اقدام کو چیلنج کیا تھا۔ اس عرضی کے بعد مزید 57 عرضیاں دائر کی گئیں۔ اب ان تمام عرضیوں کو یکجا کر کے سماعت کی جائے گی۔ مرکز کی جانب سے سالیسٹر جنرل تشار مہتا نے کہا- ’ہم تیار ہیں، جب چاہیں سماعت کی جا سکتی ہے۔‘

ایک نظر اس پر بھی

راہل گاندھی کی بھارت جوڑو یاترا اندور سے برولی پہنچی

 کانگریس کے سابق صدر راہل گاندھی کی بھارت جوڑو یاترا چھٹے دن آج صبح اندور سے مدھیہ پردیش کے برولی گاؤں کی طرف روانہ ہوئی۔ ان کے ساتھ کانگریس کے درجنوں سینئر رہنما اورافسران کے علاوہ ہزاروں کارکنان بھی موجود ہیں۔

مہاراشٹر میں ریلوے فٹ اوور برڈج کاحصہ گرپڑا 20افراد سے زیادہ زخمی،8کی حالت تشویشناک

) مہاراشٹر کے چندر پور میں بلارشاہ ریلوے اسٹیشن پر فٹ اوور برڈج کا ایک حصہ گرنے سے ایک بڑا حادثہ پیش آیا- کئی مسافر تقریباً 60فٹ کی بلندی سے پٹری پر پل سے گر گئے- حادثے میں 20مسافر زخمی ہو گئے-8 افراد کی حالت تشویشناک بتائی جاتی ہے-

گجرات کے نوجوان نوکریاں دینے کے جھانسے کو سمجھ چکے ہیں: ملکارجن کھرگے

کانگریس کے صدر ملکارجن کھڑگے نے اتوار کے روز بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) پر نوجوانوں کو روزگار فراہم کرنے کے نام پر صرف جھانسہ دینے کا الزام لگاتے ہوئے کہا کہ گجرات کے نوجوان اس کی اصلیت کو سمجھ چکے ہیں اور اسمبلی انتخابات میں بی جے پی کو اس کا مناسب جواب ملے گا۔

راہل گاندھی نے 'بھارت جوڑو یاترا' میں چلائی بلیٹ موٹر سائیکل، پدیاترا میں انہیں دیکھنے کے لیے امڈا جم غفیر

مدھیہ پردیش میں کانگریس کی 'بھارت جوڑو یاترا' جاری ہے۔ پدیاترا میں کافی بھیڑ جمع ہو رہی ہے۔ روزانہ ہزاروں کی تعداد میں لوگ پد یاترا میں شامل ہو رہے ہیں۔ راہل گاندھی کو آج 'بھارت جوڑو یاترا' کے دوران بلٹ موٹر سائیکل چلاتے ہوئے دیکھا گیا۔ اس جی تصاویر اور ویڈیوز منظر عام پر آگئی ...

مدھیہ پردیش کی شیوراج سنگھ حکومت عوام کو دے رہی ’انتخابی دھوکہ‘:میناکشی نٹراجن

حال ہی میں صدر دروپدی مرمو نے مدھیہ پردیش میں دو دن کا قیام کیا۔ ریاستی حکومت کی طرف سے شہڈول ضلع کے لال پور میں برسا منڈا جینتی کے موقع پر منعقدہ ’آدیواسی گورو دیوس‘ میں مدھیہ پردیش 'پی ای ایس اے' اصول کے باضابطہ نفاذ کا اعلان کیا گیا۔