اب پاکستان سے صرف ’مقبوضہ کشمیر‘ پر بات چیت ہوگی: راج ناتھ

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 19th August 2019, 11:53 AM | ملکی خبریں |

کالکا،19؍اگست (ایس او نیوز؍یو این آئی )  وزیر دفاع راج ناتھ سنگھ کی بالاکوٹ پر کی گئی سرجیکل اسٹرائیک پر سوال اٹھانے والوں کو آج جواب دیتے ہوئے کہا کہ پاکستان بھی اب یہ کہہ رہا ہے کہ جموں و کشمیر سے آرٹیکل 370 اوردفعہ 35 اے ہٹانے کے بعد ہندوستان بالاکوٹ سے بھی بڑی کارروائی اس پر کرسکتا ہے۔

سنگھ نے ہریانہ کے پنچکلا ضلع کے کالکا اسمبلی حلقہ سے وزیراعلی منوہر لال کھٹر کی ریاستی اسمبلی انتخابات کے سلسلے میں 90 اسمبلی حلقوں میں شروع کیے گئے جن آشرواد یاترا کے موقع پر اپنے خطاب میں یہ باتیں کہی۔ انہوں نے کہا کہ ملک کے اندر ہی موجود کچھ لوگ پلوامہ حملے کے بعد ہندوستان کے ذریعہ پاکستان کے بالاکوٹ میں واقع دہشت گردوں کے ٹھکانے پر کی گئی سرجیکل اسٹرائک پر سوال اٹھا رہے تھے۔

لیکن انہیں اس بات کا جواب اب پاکستان کے وزیراعظم نے ہی دے دیا ہے جو اب کہہ رہے ہیں کہ جموں وکشمیر سے آرٹیکل 370 اور دفعہ 35 اے ہٹانے کے بعد مودی حکومت پاکستان پر بالاکوٹ سے بھی بڑی کارروائی کرنے کا منصوبہ بنا رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ پڑوسی بالاکوٹ کے بعد دوسری بڑی ممکنہ کارروائی کے سلسلے میں ڈرا ہوا ہے۔ اسے ہماری طاقت کا احساس ہوچکا ہے۔ انہوں نے واضح کیا کہ پاکستان سے اگر اب بات چیت ہوگی تو صرف اس کے قبضے والے کشمیر کے سلسلے میں ہوگی۔

وزیر دفاع نے کہا کہ جموں وکشمیر کی ترقی کے لئے وہاں آرٹیکل 370 کو ختم کرنے پر وزیراعظم نریندر مودی نے اپنا 56 انچ کا سینہ سبھی کو دیکھا دیا ہے۔ پاکستان اس قدم سے بری طرح تلملا گیا ہے اور اس معاملے میں دوسرے ممالک کا دروازہ کھٹکھٹا رہا ہے لیکن جموں وکشمیر کی نوتشکیل ہندوستان کا اندرونی معاملہ ہونے کی وجہ سے اسے ان ممالک سے بھی کوئی حمایت نہیں مل رہی ہے۔

اسی بوکھلاہٹ میں پاکستان اب ہندوستان کو دہشت گردی سے ڈرانے کی کوشش کررہا ہے لیکن اس کے ان کوششوں کو پوری طرح کچل دیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ اب پاکستان سے پاکستان مقبوضہ کشمیر کے تعلق سے بات چیت ہوگی لیکن وہ بھی اس شرط پر کہ وہ ہندوستان میں دہشت گردی میں اضافہ کرنا بند کردے گا۔

راج ناتھ سنگھ نے کہا کہ آرٹیکل 370 اور 35 اے ہٹانے کے بعد اب ملک میں ایک آئین۔ ایک نشان ہوچکا ہے۔ جو لوگ یہ کہتے تھے کہ جموں وکشمیر سے ان التزاموں کو ہٹانے سے ہندوستان تقسیم ہوجائے گا لیکن ایسا کچھ نہیں ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جےپی) صرف اقتدار کا مزہ لینے کے لئے ایسا کچھ نہیں کرتی۔ کشمیر میں حالات نارمل ہیں اور آنے والے دنوں میں مزید بہتر ہوجائے گیں۔

ایک نظر اس پر بھی

ممتا بنرجی کا پی ایم مودی پر حملہ، موجودہ وقت کو ’سپر ایمرجنسی‘ کا دور قرار دیا

مغربی بنگال کی وزیر اعلی ممتا بنرجی نے عالمی یوم جمہوریت کے موقع پر اتوار کو مرکز کی نریندر مودی حکومت پر شدید حملہ کرتے ہوئے کہا کہ ’سپر ایمرجنسی‘ کے اس دور میں لوگوں کو ان کے حقوق اور آزادی کی حفاظت کے لئے ہر ممکن کوشش کرنی چاہیے۔

سنگھ پریوار زبان کے نام پر لوگوں کو تقسیم کرنے پر آمادہ: وزیر اعلی پنارائی وجين

کیرالہ کے وزیر اعلی پنارائی وجين نے ہندی زبان پر مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ کے بیان پر نکتہ چینی کرتے ہوئے اتوار کو کہا کہ سنگھ پریوار نے زبان کے نام پر لوگوں کو تقسیم کرنے کے لئے ایک نئی جنگ کا میدان تیار کر دیا ہے۔