نتیش کمار نے پھر اٹھایا بہار کو خصوصی ریاست کا درجہ دینے کا معاملہ

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 12th July 2019, 10:43 PM | ملکی خبریں |

بہار،12/جولائی (ایس او نیوز/ آئی این ایس انڈیا) سی ایم نتیش کمار نے جمعہ کو ایک بار پھر بہار کو خصوصی ریاست کا درجہ دئیے جانے کا مسئلہ اسمبلی میں اٹھایا۔نتیش کمار اسمبلی میں آر جے ڈی کے سینئر لیڈر عبدالباری صدیقی کے ریاست میں پنشن سے فائدہ اٹھانے والے لوگوں کے مسئلے پر اٹھائے گئے سوالات کا جواب دے رہے تھے۔صدیقی نے کہاہے کہ ریاست میں پنشن کی رقم تمل ناڈو، آندھرا پردیش، ہریانہ جیسی ریاستوں کے مساوی کیوں نہیں کی جاتی۔اس پر نتیش کمار نے کہا کہ آپ بھی وزیر خزانہ رہے ہیں اور جن ریاستوں سے آپ نے موازنہ کیا ہے وہ ترقی یافتہ ریاستوں کے زمرے میں آتے ہیں۔نتیش کمارنے کہاہے کہ آپ جا کر ان ریاستوں کے ریونیو کے بارے میں معلوم کر لیجیے۔وہاں جو فی کس آمدنی ہے وہ قومی اوسط سے زیادہ ہے، جبکہ بہار اب بھی قومی اوسط سے کم ہے۔نتیش کمارنے کہا کہ موازنہ غلط ہے اور قومی اوسط تک پہنچا جائے اسی لیے ہم بہار کو خصوصی ریاست کا درجہ دینے کامطالبہ کرتے ہیں۔ حالانکہ نتیش کمار نے کہا کہ جتنا حق اقتصادی بنیاد پر ریاست کا ہے، اس کے حساب سے لوگوں کی مددکی جارہی ہے۔ نتیش نے کہاکہ بہار میں خط افلاس سے نیچے رہنے والے ہوں یا اوپر سب کے لیے وزیراعلیٰ پنشن کی منصوبہ بندی اور قومی اوسط تک پہنچنے کے لیے ہم بہار کو خصوصی ریاست کے درجہ کا مطالبہ کررہے ہیں۔نتیش کمارنے کہاہے کہ اقتصادی بنیادپر لوگوں کی مددکی جا رہی ہے۔لہٰذا بہار میں وزیراعلیٰ پنشن اسکیم کی شروعات کی گئی ہے جس پر ہر سال اٹھارہ سوکروڑکاسودہوگا۔فی الحال اس منصوبہ کے تحت ایک لاکھ سے بھی زیادہ لوگوں کو پنشن دی جا رہی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی