بنگلور اور ہوسکوٹہ کے درمیان ٹرافک مسئلہ حل کرنے میٹرو ریل سرویس کی توسیع کرنے ریاستی وزیر ناگراج کامطالبہ

Source: S.O. News Service | Published on 1st September 2021, 11:14 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو ،یکم ستمبر(ایس او  نیوز) ریاستی وزیر برائے بلدی انتظا میہ ایم ٹی بی ناگراج نے بیپن ہلی تا ہوسکوٹہ کے درمیان میٹرو ریل سرویس کی توسیع کر نے کی گزارش کرتے ہو ئے مرکزی وزیر برائے شہری ترقیات ہر دیپ سنگھ پوری کو ایک یادواشت پیش کی۔ ناگراج نے اخباری نمائندوں سے بات کر تے ہو ئے کہاکہ بنگلور سے ہو سکوٹہ کے درمیان فاصلہ بہت کم ہو نے کے باوجود مذکورہ دونوں شہروں کے درمیان سفر کرنے کے لئے ایک سے دیڑھ گھنٹہ تک کا وقت درکار ہے اور دونوں شہروں کے درمیا ن ہمیشہ گاڑیوں کی تعداد کافی زیادہ ہوا کرتی ہے،جس کی وجہ سے ٹرافک مسئلہ رہتا ہے۔انہوں نے بتا یا کہ جس طرح نائینڈہلی۔ کینگیری کے درمیا ن میٹرو روٹ کی توسیع کر تے ہوئے سرویس کا آغاز کیا گیاہے اسی طرح بیپنہلی۔ ہو سکوٹہ کے درمیان بھی میٹرو ریل سرویس کی توسیع کرنی چائیے۔ناگراج نے بتا یا کہ ہوسکوٹہ شہر بی بی ایم پی سے صرف10کلو میٹر دور ہے،ہندوستان کا سلکان سٹی ویلی وائٹ فیلڈ اور آئی ٹی پارک بھی ہو سکوٹہ سے بہت قریب ہے،وائٹ فیلڈ اورر اس کے اطراف واکناف سینکڑوں آئی ٹی کمپنیاں،کمرشیل کامپلکس،بڑے کارخانے اور کئی صنعتی علاقہ ہیں جہاں لاکھوں افراد بر سر روزگار ہیں،ان تمام باتوں کو مد نظر رکھ کر بیپن ہلی۔ہوسکوٹہ میٹرو ریل سرویس کو توسیع اشد ضروری ہے۔ ناگراج نے بتا یا کہ ہوسکوٹہ،مالور انڈسٹرئیل ایریا،نندی گڑی اور کو لار ضلع کے صنعتی علاقوں کے لئے گیٹ وے ہے،انہوں نے بتا یا کہ ہوسکوٹہ سے شہر کا بین الا قوامی ہوائی اڈہ بھی قریب ہے یہاں سے ہوائی اڈہ کو راست سڑک کی سہولت بھی موجودہ ہے۔انہوں نے بتا یا کہ شہر میں کام کرنے والے ملاز مین شہر چھوڑ کر مضافات میں قیام کرنا پسند کرتے ہیں،کئی ملاز مین ہوسکوٹہ میں قیام کرتے ہیں اسلئے ہوسکوٹہ میں مکانوں کی کافی مانگ ہو رہی ہے۔ وزیر موصوف نے بتا یا کہ بنگلور اور ہوسکوٹہ کے درمیان جو ٹرافک کا مسئلہ ہے اس کو مستقل طور پر حل کرنا ہو تو میٹرو ریل سرویس کی تو سیع کر تے ہو ئے بیپن ہلی۔ہوسکوٹہ روٹ تعمیر کر ے کی اشد ضرورت ہے انہوں نے وزیر اعلیٰ اور مرکزی وزیر برائے شہرت ترقیات سے گزارش کی کہ وہ اس روٹ کی منظوری کے لئے وزیراعظم نریندر مودی پر دباؤ ڈالیں۔

ایک نظر اس پر بھی

ہبلی میں مبینہ تبدیلی مذہب کی مخالفت کرتے ہوئے شدت پسند ہندو تنظیموں کے کارکنوں نے چرچ کے اندر گھس کر گایا بھجن

ہبلی میں تبدیلی مذہب کی مخالفت کرتے ہوئے ہندو شدت پسند تنظیموں کے کارکنوں نے ایک چرچ کے اندر گھس کر بھجن گانا شروع کردیا جس کی وائرل ہونے والی ویڈیو میں درجنوں مرد و خواتین کو دیکھا گیا ہے کہ وہ کس طرح ہبلی کے بیری ڈیوارکوپا چرچ کے اندر بیٹھے ہاتھ جوڑ کر بھجن گارہے ہیں۔

ایڈی یورپاکی عوامی تحریکوں میں کروبا طبقے کاتعاون اہم رہاہے:راگھویندرا

تعلقہ میں بی ایس ایڈی یورپاکے تمام عوامی وفلاحی تحریکوں میں کروبا طبقہ کا تعاون اہم رہاہے،اس کے بدلے میں ایڈی یورپانے بھی اپنے دور اقتدار میں طبقے کی ترقی کیلئے جتنابھی ممکن ہوسکے کام کیا اور ہر طرح سے امداد فراہم کی۔یہ بات رکن پارلیمان بی وائی راگھویندرانے کہی۔

جے ڈی ایس ہی مسلمانوں کو سیاسی مستقبل کی ضمانت دے سکتی ہے: محیط الطاف

ریاستی اسمبلی میں اس وقت مسلم نمائندگی پر تشویش ظاہر کرتے ہوئے جے ڈی ایس لیڈر ونئی دہلی میں سابق خصوصی نمائندہ برائے کرناٹک ڈاکٹر سید محیط الطاف نے آج کہا کہ ریاست کرناٹک میں 45اسمبلی حلقے ایسے ہیں جہاں اگر مسلمان متحد ہوکر کام کریں تو مسلم امیدوار منتخب ہوسکتے ہیں اور 75اسمبلی ...

بنگلورومیں بارش کے ساتھ ڈینگی معاملات میں اضافہ، 15دنوں میں 177نئے کیس سمیت جملہ 717متاثرین

راجدھانی بنگلورومیں بارش کی مقدارمیں اضافہ ہوتاجارہاہے،سلسلہ وارحادثات بھی پیش آرہے ہیں،ا س کے ساتھ ڈینگی بخار کے معاملات میں اضافہ ہورہاہے۔برساتی موسم سے پہلے یعنی ماہ مئی میں 102ڈینگی معاملات دکھائی دئے تھے،اکتوبر میں اس تعدادمیں 717تک اضافہ ہوگیا،گزشتہ 15دنوں کے دوران ...