مہاراشٹر لاک ڈاؤن: ماہ رمضان میں مساجد میں عبادت پر عائد پابندی سے مسلمان بے چینی کا شکار

Source: S.O. News Service | Published on 7th April 2021, 6:06 PM | ملکی خبریں |

ممبئی،7؍اپریل (ایس او نیوز؍ایجنسی) مہاراشٹر سرکار نے کورونا کے بڑھتے ہوئے معاملات کے درمیان ریاست میں لاک ڈاؤن کی سختیاں نافذ کردی ہیں ۔اس درمیان عبادت گاہوں میں بھی عبادت کے متعلق پابندیاں عائد کی گئی ہیں۔ مساجد میں امام کے علاوہ صرف اسٹاف کو ہی نماز کی ادائیگی کی اجازت ہے۔ ماہِ رمضان کے پیشِ نظر مساجد میں عام لوگوں کے داخلے پر پابندی کے نئے سرکاری حکم نامے کے خلاف لوگوں میں بے چینی اور غم و غصہ پایا جا رہا ہے۔ ممبئی اور مہاراشٹر کے مساجد ٹرسٹ اور ملی و سماجی تنظیموں نے وزیراعلیٰ مہاراشٹر کو مکتوب روانہ کرتے ہوئے ماہ رمضان میں گائیڈلائن اور شرائط کی بنیاد پر مساجد میں پنج وقتہ نماز مع تروایح کی اجازت طلب کی ہے۔

جامع مسجد بمبئی ٹرسٹ نے وزیر اعلیٰ کو مکتوب روانہ کیا: جامع مسجد بمبئی ٹرسٹ نے وزیر اعلی کو مکتوب روانہ کرتے ہوئے ماہ رمضان میں پنج وقتہ نماز مع تراویح اور اعمال کی اجازت طلب کی ہے۔ جامع مسجد کے خطیب و امام مفتی اشفاق قاضی مکتوب پر روشنی ڈالتے ہوئے کہا کہ وزیراعلیٰ کو گائیڈ لائن اور شرائط و ضوابط کے ساتھ مساجد میں عبادت کی اجازت دینے کی اپیل کی گئی ہے۔

ممبئی کی کئی مساجد نے وزیراعلی مہاراشٹر کو مکتوب روانہ کیا: ممبئی اور مضافات کی کئی مساجد نے وزیراعلیٰ مہاراشٹر ادھو ٹھاکرے کو مکتوب روانہ کرتے ہوئے ماہ صیام میں عبادت کی اجازت طلب کی ہے۔ ان مکتوبات میں کورونا گائیڈ لائن پر عمل آوری کا بھی خاص ذکر ہے۔ آل انڈیا ملی کونسل کے جنرل سیکریٹری اور تنظیم رابطہ مدارس سے وابستہ عالم دین مولانا محمود دریابادی نے کہا کہ ممبئی و مضافات کی کئی مساجد کے ذمہ داران نے وزیر اعلیٰ مہاراشٹر اور انتظامیہ کو خط لکھ کرمساجد میں عبادات کی پابندی پر رنج و غم و اظہار کیا ہے۔ ممبئی کی پتھر والی مسجد کےامام و خطیب مفتی عبدالاحد نے بتایا کہ ان مساجد کے ذمہ دارن مقامی پولیس اسٹیشن کے ذمہ داروں سے رابطے میں ہیں اس مسئلے میں حکومت پر سیاسی دباؤ بنانا بھی اشد ضروری ہے۔

ماہم اور حاجی علی درگاہ کا ممبئی ضلع کلکٹر کے نام مکتوب روانہ: ممبئی کی حاجی علی درگاہ اور ماہم درگاہ ٹرسٹ نے ممبئی ضلع کلکٹر کے نام مکتوب روانہ کرتے ہوئے تمام مذہبی مقامات میں پچاس فیصد حاضری کی اجازت طلب کی ہے۔ مماہم درگاہ کے ٹرسٹی سہیل کھنڈوانی نے کہا کہ حکومتی اور کورونا گائیڈ لائن کے ساتھ تمام مذہبی مقامات میں پچاس فیصد عقیدت مندوں کی حاضری سے سماجی فاصلہ بھی قائم رہے گا اور لوگوں کے مذہبی مقامات سے جڑے رہنے کے سبب نظم و نسق کی بہتر صورتِ حال بھی قائم رہے گی۔ سہیل کھنڈوانی نے کہا کہ حکومت اگر سیاسی اجتماعات کو اور شادی بیاہ کے معاملات میں اجازت دینے کی حامی بھر سکتی ہے تو مذہبی مقامات کو کیوں مستثنیٰ رکھا گیا ہے۔

رضا اکیڈمی نے بھی وزیر اعلی کو مکتوب روانہ کیا: رضا اکیڈمی نے بھی وزیراعلی مہاراشٹر ادھو ٹھاکرے سے خط و کتابت کرتے ہوئے شرائط وضوابط کی بنیاد پر مساجد میں پنج وقتہ نمازی کی اجازت طلب کی ہے۔ رضااکیڈمی نے اپنے تحریری مکتوب میں کہا کہ گائیڈ لائن اور ایس او پیز کی بنیاد پر انتخابات اور ضروری فنکشن کی اجازت دی گئی ہے۔ رضا اکیڈمی کے جنرل سیکریٹری سعید نوری نے کہا کہ ایس او پیز کی بنیاد پر ماہِ رمضان میں عبادت گاہوں میں عبادات و اعمال کی خصوصی اجازت ملنا ضروری ہے۔

امام بارگاہین بھی نئی گائیڈ لائن کی منتظر: ممبئی کے معروف شیعہ امام باڑہ مغل مسجد کے ٹرسٹی علی نمازی نے کہا کہ ریاستی حکومت اور انتظامیہ کی جانب سے دو روز میں جاری کردہ گائیڈ لائن میں کس طرح کی نرمی آتی ہے۔ اس کے بعد ہی حکومت اور انتظامیہ سے رابطے کی کوشیش کی جائیگی۔

وفد کو راجیش ٹوپے کی یقین دہانی: ماہِ مقدس رمضان میں عبادات کی اجازت کے معاملے میں سرکردہ مسلم شخصیات اور سماج وادی پارٹی لیڈر ابوعاصم اعظمی نے گزشتہ دنوں وزیر صحت راجیش ٹوپے سے ممبئی میں ملاقات کی تھی اور گائیڈ لائن اور سماجی فاصلے کے تحت مساجد میں عبادت کی اجازت کی طلب کی تھی۔ وفد کے مطالبات کو سنتے ہوئے راجیش ٹوپے نے ماہ رمضان میں عبادت پر پابندیوں کو لے کر مسلم سماج میں پھیلی ناراضگی سے وزیراعلیٰ کو آگاہ کروانے کا یقین دلایا تھا۔

ایک نظر اس پر بھی

شعبہ اردوجامعہ ملیہ اسلامیہ کی جانب سے ممتاز ادیب و شعرا سلطان اختر، انجم عثمانی، مشرف عالم ذوقی، مناظر عاشق ہرگانوی اور سید نورالہدیٰ کے سانحہ ارتحال پر تعزیتی جلسے کا انعقاد

شعبہ اردوجامعہ ملیہ اسلامیہ کی جانب سے عظیم آباد پٹنہ میں مقیم بزرگ و ممتاز شاعر سلطان اختر، عہد حاضر کے معروف فکشن نگار اور صحافی انجم عثمانی، دور حاضر کے ممتاز ناول نگار اور بے باک صحافی مشرف عالم ذوقی، کثیرالتصانیف مصنف پروفیسر مناظر عاشق ہرگانوی اور اردو میں تاریخی، ...

فضول ہے یہ بحث کہ لاک ڈاؤن کب لگنا چاہئے! حالات انتہائی خراب

سمجھ نہیں آ رہا کہ کورونا وباکو روکنے کے لئے کس بات کو مانا جائے اور کس کو نہیں! کبھی اس وبا کو روکنے کے لئے لاک ڈاؤن اتنا ضروری ہو جاتا ہے کہ اگر ملک میں چند سو کیسز بھی ہوں تو لاک ڈاؤن نافذ کر دیا جاتا ہے اور اس بات کا بھی خیال نہیں کیا جاتا کہ مہاجر مزدوروں کا کیا حال ہوگا؟ ان ...

دہلی میں لاک ڈاؤن کے اعلان کے بعد مہاجر مزدوروں میں ایک بار پھر افراتفری ، وزیر اعلیٰ اروند کیجریوال کی عوام سے اپیل ، کہا ؛ دہلی چھوڑ کر نہ جائیں ، یہ لاک ڈاؤن مختصر وقفے کیلئے ہے

دہلی میں لاک ڈاؤن کا اعلان ہوتے ہی ایک بار پھر دہلی کے مہا جر مزدوروں کو وہ پرانے دن یاد آگئے جب گزشتہ سال اچانک ملک بھر میں لاک ڈاؤن لگا دیا گیا تھا۔

حکومت ٹیکہ بنانے والی کمپنیوں کو 4500 کروڑ روپئے پیشگی دے گی ، ٹیکوں کا پروڈکشن بڑھانے اور ٹیکہ کاری کو رفتار دینے کیلئے اہم فیصلہ ، وزیر اعظم کی کمپنیوں کے ذمہ داروں سے میٹنگ

مودی حکومت نے کورونا کے سبب ملک میں پھیلی ابتری پر اب سنجیدگی کا مظاہرہ کرتے ہوۓ ٹیکہ بنانے والی کمپنیوں سے ان کا پروڈکشن بڑھانے کی اپیل کی ہے۔ ساتھ ہی اس معاملے میں 45 سوکروڑ روپئے  پیشگی  کے طور پرادا کرنے کا فیصلہ کیا ہے تا کہ یہ کمپنیاں اپنے ٹیکوں کے پروڈکشن میں اضافہ ...

مہاراشٹر میں مکمل لاک ڈاؤن کی دستک ، نئی پابندیاں ، دکانیں صبح 7 سے 11 بجے تک ہی کھلی رہی گی

مہاراشٹر میں جنتا کرفیو کے نفاذ کے ایک ہفتہ بعد بھی حالات میں سدھار نہ آنے اور کورونا کے نئے معاملات میں مسلسل اضافے کو دیکھتے ہوئے ریاست میں مکمل لاک ڈاؤن کی دستک سنائی دینے لگی ہے جس کے تعلق سے وزیراعلیٰ اُ دھوٹھا کرے بدھ کو حتمی  اعلان کر سکتے ہیں۔ لاک ڈاؤن کے امکان کو تقویت ...

ہندوستان میں گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 259170 نئے کورونا کے معاملے، ایک دن میں سب سے زیادہ اموات

 کورونا وائرس کے معاملوں میں اضافہ کا سلسلہ لگاتار جاری ہے۔ مرکزی وزارت صحت کی طرف سے جاری اعدادوشمار کے مطابق منگل کے روز ملک میں ایک بار پھر ڈھائی لاکھ سے زیادہ کیسز کی تصدیق کی گئی۔ یہ لگاتار چوتھا دن ہے جب ملک میں ڈھائی لاکھ سے زہادہ کیسز کی تصدیق کی گئی۔