کمار اسوامی کی سدارامیا پر تنقید ، کانگریس کے مسلم قائدین کی ’’سیاسی نسل کشی ‘‘ کا الزام

Source: S.O. News Service | Published on 17th October 2021, 11:46 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو، 17؍اکتوبر (ایس او نیوز ) جے ڈی ایس کے قائد اور سابق چیف منسٹر ایچ ڈی کماراسوامی نے در پردہ نشانہ لگاتے ہوئے کرناٹک کانگریس میں مسلم قائدین کی ’’ سیاسی نسل کشی‘‘ کے لیے اپوزیشن قائد سدارامیا کومورد الزام ٹھہرایا۔ کنڑا زبان میں اپنے سلسلہ وارٹوئٹس میں کمارا سوامی نے سدارامیا کا نام لیے بغیر کہا کہ ان کے پاس ایسے مسلم قائدین کی طویل فہرست موجود ہیں جو سازشی نظریہ ساز (سدارامیا)  کی سیاست کا شکار ہوئے  جواقتدار کے لیے کچھ بھی کر سکتا ہے ۔‘‘ انہوں نے کہا کہ عوام کو جاننا چاہیے کہ کانگریس میں اقلیتی قائدین کی سیاسی نسل کشی کے لیے کون ذمہ دار ہے ۔ واضح رہے کہ یہ سلسلہ وار ٹوئٹس ایک ایسے وقت سامنے آئے  جب سدارامیا نے حال ہی میں جے ڈی ایس پرسند گی اور ہنگل  کے ضمنی انتخابات میں مسلم امیدوار کھڑا کر کے بی جے پی کو کامیاب کرنے میں مدد کرنے کا الزام عائد کیا ۔ کماراسوامی نے الزام عائد کیا کہ 2012 کے قانون ساز کونسل کے انتخابات میں کانگریس کے سینئر لیڈر ملکارجن کھرگے کے حمایتی کانگریس کے سرکاری امید وار اقبال احمد سردگی کی شکست کے لیے سدارامیا ذمہ دار ہیں ۔سردگی کے حریف بائراتی سریش جنہوں نے بحیثیت آزاد امیدوار مقابلہ کیا  وہ سدارامیا کے دوست تھے اور الیکشن میں کامیابی حاصل کی تھی ۔ ایک اور ٹوئٹ میں کماراسوامی نے 2016ءکے ہبال اسمبلی حلقہ کے ضمنی انتخاب میں کانگریس کے سرکاری امیدوار اور آنجہانی سی کے جعفر شریف کے پوتے سی کے عبدالرحمن کو شکست دینے سدارامیا پر بائراتی کے ساتھ خفیہ طور پر کام کرنے کا الزام عائد کیا۔انہوں نے پارٹی سے روشن بیگ کے اخراج کے لیے سدارامیا کو ذمہ دار ٹھہرایا۔ اس کی واحد وجہ یہ تھی کہ انہوں نے گزشتہ لوک سبھا انتخابات میں ریاستی قیادت کے ناقص مظاہرہ پر سوال اٹھایا تھا۔‘‘ خود  روشن بیگ کانگریس سے اپنی معطلی کے لیے سدارامیا کومورد الزام ٹھہرا چکے ہیں ۔ کما را سوامی نے تنویر سیٹھ کی توہین کرنے کے لیے بھی سدارامیا کو لتاڑا جوسیکولر طاقتوں کو بااختیار بنانے کی کوشش کر رہے تھے۔ تنویر سیٹھ کے حامیوں نے سدارامیا کے خلاف اس وقت احتجاج کیا تھا جب انہوں نے رواں سال فروری میں میسور کے میئر انتخاب کے لیے جے ڈی ایس سے اتحاد کی کوشش پر ان کے قائد کو قانونی نوٹس بھیجا تھا۔ کماراسوامی نے ایم اے سلیم کی چھ سالہ معطلی کے لیے بھی سدارامیا کو ذمہ دار ٹھہرایا جنہوں نے کے پی سی سی صدرڈی کے شیو کمار کا تعلق آبپاشی اسکام سے جوڑا تھا اور ساتھ ہی وی ایس اگر پا کا دفاع کیا جنہوں نے ان کی گفتگو سنی تھی ۔ کماراسوامی نے کہا کہ مسلمان ان کی بدنام زمانہ بادشاہت کو جان چکے ہیں جو بڑے پیارسے سے جھولا دیتا ہے، بچے کا گلا گھونٹتا ہے اور ممکن ہوا تو بچے کا گلا کاٹ دیتا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

میسورو: محبت کی راہ میں ملازمت رکاوٹ بن گئی ، نوکری نہ ملنے سے دلبرداشتہ دوپریمی پھانسی کے پھندے سے لٹک گئے

دو پیار کرنے والوں کی زندگی کے درمیان نوکری رکاوٹ بن گئی۔نوکری نہ ملنے سے دلبرداشتہ چامراج نگرضلع کے گنڈل پیٹ تعلقہ کے بوملاپورگرام کے رہنے والے پریمیوں نے میسورمیں انتہائی قدم اٹھاتے ہوئے خودکشی کرلی۔

اسمبلی چناؤ میں جے ڈی ایس اور پارلیمانی الیکشن میں بی جے پی کی تائید کرنے والے مطلب پرست: ریاستی وزیر ڈاکٹر سدھاکر

کولار چکبالاپورحلقہ سے اسی ماہ 10دسمبر کو ہونے جارہے کونسل چناؤ کی انتخابی مہم چلانے کیلئے آئے ہوئے ریاستی وزراء چکبالاپور کے نگران کار وزیر اور ریاستی وزیر برائے ہیلتھ ڈاکٹر سدھاکر کولار ضلع نگراں کار وزیر منی رتنا اور پارٹی لیڈروں نے آج کولار کے پریس بھون میں ایک اخباری ...

بنگلورو کے آنیکل میں کووڈ کے معا ملات میں اضافہ ، اسکول اور نرسنگ کالج کے12طلبہ سمیت27افراد کو کورونا

بنگلورو کے آنیکل تعلقہ میں کووڈ کے نئے معا ملات درج ہو نے سے مقامی لوگوں میں دہشت کا ماحول پایا جا رہا ہے۔ وہاں کے ایک اسکول اور نرسنگ کالج کے12طلبہ سمیت جملہ27افراد کو کووڈ کی تصدیق ہو ئی ہے۔

بنگلورو میں ویکسین کے دونوں ٹیکے لینے والوں کو ہی داخلہ کی اجازت ، کووڈ ضوابط کے خلاف ورزی پر سخت کارروائی،مالس،شاپنگ اور کمرشیل کامپلکس کے مالکان کو بی بی ایم پی کا انتباہ

بنگلورو  شہر میں کووڈ کی نئی قسم اومیکرون کے معا ملات کا پتا لگنے کے بعد ریاستی حکومت اور بروہت بنگلورو مہا نگر پالیکے(بی بی ایم پی) نے احتیاطی اقدامات کئے ہیں۔ اس کے پیش نظر شہر کے تمام کمرشیل کامپلکس،مالس،سنیما گھروں اور عوامی تقریبات میں شرکت کرنے والے افراد کا کووڈ کے ...