کرناٹک سے روزانہ 2100کلو بیف گوا کو سپلائی ہوتاہے : وزیر اعلیٰ پرمود ساونت

Source: S.O. News Service | Published on 20th October 2021, 9:35 PM | ریاستی خبریں |

پنجی(گوا):20؍ اکتوبر(ایس اؤ نیوز)بی جے پی کی اقتدار والی ریاست کرناٹک سے روزانہ 2000کلوگرام سے زائد جانور اور بھینس کا گوشت (بیف)گوا کو رفت کیا جاتا ہے، اس بات کی جانکاری بی جے پی اقتدار والی ریاست گوا کے وزیرا علیٰ پرمود ساونت نے دی۔ وہ گوا ودھان سبھا کو تحریری جواب دیتےہوئے جانکاری دے رہے تھے۔۔

گوا ودھان سبھا کے دو روزہ اجلاس کے دوران کانگریس کے رکن اسمبلی الکسو ریجنالڈو کے پوچھے گئے سوال پر وزیر اعلیٰ پرمود ساونت نے تحریری جواب میں کہا کہ کرناٹک سے گذشتہ 6مہینوں میں 388ٹن جانور اور بھینس کاگوشت گوا کو سپلائی کیاگیا ۔کرناٹک سے روزانہ 2120 کلو جانوروں کا گوشت گوا کو سپلائی ہوتا ہے اور یہ جانکاری ٹیکس دستاویزات سے معلوم ہوئی ہے۔

کرناٹکا میں انسداد گائے ذبیحہ قانون 2020جاری ہونے کے بعد گوا میں چند مہینوں کےلئے بیف کی کافی کمی ہوگئی تھی۔ مہاراشٹرا میں ایسا ہی قانون پاس ہوا تو ریاست گوا کےلئے بیف سپلائی کرنے والی کرناٹک واحد ریاست بن گئی۔ ریاست گوا کی کل آبادی میں سے 30فی صدسے زائد  لوگ جانور اور بھینسوں کا گوشت تناول کرتےہیں ۔ ریاست گوا گوشت کے لئے کرناٹک اور مہاراشٹرا پر انحصار کرتی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

جے ڈی ایس امیدواروں کی جیت کے ذریعے پارٹی کارکن اپنی طاقت کا مظاہرہ کریں: انیتاکمارسوامی

بنگلورو دیہی لوکل باڈیز حلقے سے ریاستی قانون ساز کونسل کیلئے ہورہے انتخابات کو جے ڈی ایس پارٹی نے سنجیدگی سے لیاہے اور اس انتخابات میں پارٹی امیدواروں کوکامیاب کرکے پارٹی کارکنوں کو اپنی طاقت کا مظاہرہ کرناہوگا۔یہ بات رکن اسمبلی انیتاکمار سوامی نے کہی۔

منگلورو : طلبہ کے درمیان گروہی تصادم - کئی طلبہ ہوئے زخمی -  پولیس نے مارا ہاسٹل پر چھاپہ - 6 طالب علم گرفتار ۔ مقامی لوگوں کا احتجاج ۔ ہاسٹل خالی کروانے کا مطالبہ  

شہر کے ایک ڈگری کالج میں زیر تعلیم اور گوجرکیرے علاقے میں واقع ہاسٹل میں قیام پزیر طلبہ کے دو گروہ آپس میں لڑ پڑے جس کے نتیجے میں بعض طلبہ زخمی بھی ہوگئے ۔ مار پیٹ اور تصادم کی اطلاع ملنے پر پولیس نے دیر رات ہاسٹل پر چھاپہ مار کر کئی طالب علموں کو گرفتار کر لیا ۔

چامنڈی پہاڑ پر زمین کھسکنے کے واقعات: نندی مجسمے کے راستے کو پیدل چلنے والے راستہ میں تبدیل کرنے اپیل

گزشتہ چند دنوں سے میسورو ضلع میں مسلسل بارشوں کی وجہ سے میسور کے قریب واقع چامنڈی پہاڑ پر زمین کھسکنے کے واقعات پیش آرہے ہیں جس کی وجہ سے پہاڑ پر واقع چامنڈیشوری دیوی کے درشن کو پہنچنے والے زائرین کو کافی پریشانیوں کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔