ضلع پنچایت ، تعلقہ پنچایت انتخابات کیلئے حد بندی اور ریزرویشن 12 ہفتوں میں مکمل کیا جائے : کرناٹک ہائی کورٹ

Source: S.O. News Service | Published on 25th May 2022, 5:18 PM | ریاستی خبریں |

بنگلورو، 25؍ مئی (ایس او نیوز) کرناٹک ہائی کورٹ نے ریاستی حکومت کو ہدایت دی ہے کہ ضلع پنچایت تعلق پنچایت انتخابات کیلئے ریزرویشن اور حلقوں کی از سرنوحد بندی کا کام 12 ہفتوں میں مکمل کرلیا جائے ۔ حکومت نے اس کام کیلئے 12 ہفتوں کی مہلت طلب کی تھی جسے ہائی کورٹ نے منظور کر لیا۔ ضلع پنچایت اور تعلق پنچایت انتخابات جلد کرائے  جانے کیلئے سپریم کورٹ کے حالیہ احکام کے بعد ریاستی الیکشن کمیشن (ایس ای سی) نے ہائی کورٹ سے رجوع کیا تھا۔ ہائی کورٹ نے حکومت کو ہدایت دی ہے کہ ضلع پنچایت و تعلقہ  پنچایت حلقوں کی از  سرنوحد بندی اور پسماندہ طبقات کیلئے ریزرویشن والے حلقوں کی نشاندہی 12 ہفتوں کے اندر مکمل  کر لی جائے ۔

ہائی  کورٹ کو بتایا گیا کہ ریاستی حکومت نے حد بندی کمیٹی بنائی تھی اور ایک وظیفہ یاب  جج کی قیادت میں پسماندہ طبقات کمیشن بھی بنایا تھا۔ الیکشن کمیشن نے 12 ہفتوں کے اندر مذکورہ بالا کارروائی مکمل کرنے کی ریاستی حکومت کی طرف سے دی گئی یقین دہانی کو قبول کر لیا ہے۔ ہائی کورٹ نے حکومت سے کہا ہے کہ وہ اب اس کام کیلئے مزید مہلت طلب نہیں کرسکتی۔

دوسری طرف ہائی کورٹ نے ریاستی الیکشن کمیشن کو ہدایت دی ہے کہ ریاستی حکومت کی طرف سے حلقوں کی از سرنو حد بندی اور ریزرویشن کا کام عمل کرنے کے بعد ایک ہفتے کے اندر ضلع پنچایت اورتعلقہ پنچایت انتخابات کرانے کی تاریخوں کا اعلان کر دے۔

واضح رہے کہ ریاستی بی جے پی حکومت نے ضلع پنچایت اور تعلقہ  پنچایت انتخابات طویل عرصے سے ملتوی رکھے تھے۔ اپوزیشن نے الزام لگایا تھا کہ حکومت کو ان انتخابات میں ہار جانے کا خوف ہے اس لئے وہ انتخابات کرنانہیں چاہتی ۔ضلع پنچایت اور تعلقہ  پنچایت حلقوں کی از سرنو حد بندی اور ریزرویشن کا کام بھی خود حکومت نے اپنے ذمہ لے لیا تھا۔ اس کے خلاف الیکشن کمیشن نے پہلے ہائی کورٹ اور بعدازاں سپریم کورٹ سے رجوع کیا تھا۔

ایک نظر اس پر بھی

بنگلور میں کانگریس لیڈر ضمیراحمد خان کے مکان اور دفتر پر اے سی بی کے دھاوے؛ کانگریس نے کہا؛ سب انسپکٹرس بھرتی اسکیم سے عوام کی توجہ ہٹانے کی کوشش

کرناٹک اینٹی کرپشن بیوروکے عہدیداروں نے منگل کے دن غیرمتناسب اثاثوں کی انفورسمنٹ ڈائرکٹوریٹ(ای ڈی) رپورٹ پر کانگریس رکن اسمبلی بی زیڈ ضمیر احمد خان کے 5 مقامات پر بہ یک وقت دھاوے کئے۔

بھٹکل: ساحلی کرناٹکا کے علاوہ دیگر 6 اضلاع میں بھی موسلا دھار بارش  -طالبہ سمیت 2 ہلاک ۔ ندیاں پار کر گئیں خطرے کا نشان ؛ کاروار کے قریب انموڈ گھاٹ پر چٹان کھسک گئی

ریاست کے ساحلی علاقہ کے شمالی کینرا، اُڈپی اور  جنوبی کینرا کے علاوہ کوڈاگو، چکمگلورو اور شیموگہ جیسے اضلاع  زبردست بارش کی زد میں آ گئے ہیں ۔  جس کے نتیجے میں کئی علاقوں سے نقصانات کی خبریں بھی موصول ہورہی ہیں، جبکہ  بارش کے نتیجے میں اب تک  دو لوگوں کی موت واقع ہوئی ہے۔

کولار میں شانِ رسالتؐ میں گستاخی اور قرآن شریف کی بے حرمتی کے واقعے پر بھٹکل تنظیم کی سخت مذمت؛ خاطیوں کے خلاف سخت کاروائی کا مطالبہ

کولار میں  جمعہ کے روز اُدے پور واقعے  کو لے کر منعقدہ  احتجاج  میں  ہندو تنظیموں کی طرف سے  پھر  ایک بار شان رسالتؐ میں گستاخی اور قرآن شریف کی کھلے عام بے حرمتی کا معاملہ سامنے آنے پر مجلس اصلاح و تنظیم بھٹکل نے سخت تشویش کا اظہار کیا ہے اور نوپور شرما  کی حمایت کرتے ہوئے  کی ...