ڈی کے شیوکمارکوصدر اورایم بی پاٹل کو کانگریس کارگزار صدر کاعہدہ دئے جانے کی خبر

Source: S.O. News Service | Published on 17th February 2020, 11:16 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو،17/فروری (ایس او نیوز) کانگریس ہائی کمان نے کے پی سی سی کے نئے صدر کے تقرر کا معاملہ تقریباً حل کردیاہے۔ ذرائع کی مانیں تو  قوی امکان ظاہر کیا جارہا ہے  کہ اگلے ہفتہ ڈی کے شیوکمار کے پی سی سی صدر کی حیثیت سے عہدہ سنبھالنے والے ہیں اورلنگایت طبقہ کے اہم اورسینئر لیڈر شری ایم بی پاٹل کو کے پی سی سی کانیاکارگزار صدر مقررکیاجانے والا ہے۔

باوثوق ذرائع سے ملنے والی اطلاعات کے مطابق کانگریس ہائی کمان نے کرناٹک کی تین بارسوخ ذاتوں، وکلیگا،لنگایت، اور اہندا طبقہ کو اپنے ساتھ رکھنے کے لئے ایک منصوبہ بنایاہے اوراس منصوبہ کے تحت ہی کے پی سی سی کے اہم عہدے سونپے جانے والے ہیں اوران طبقات کابھرپور اعتماد حاصل کرناچاہتی ہے۔ اہندا طبقہ سے تعلق رکھنے والے سابق وزیراعلیٰ سدارامیاکواسمبلی میں اپوزیشن لیڈر کا عہدہ بحال رکھا جارہاہے اورانہیں سی ایل پی لیڈر کاعہدہ بھی سونپا جارہاہے پارٹی لیڈروں نے محسوس کیاہے کہ سدارامیا سے اگریہ عہدے چھینے جائیں گے تو ریاست میں اس سے کانگریس پارٹی کو نقصان پہنچ سکتاہے۔ بی جے پی میں لنگایت طبقہ کے لیڈر ایڈی یورپا کو وزیراعلیٰ کاعہدہ دیئے جانے پر اس طبقہ کو کانگریس ناراض نہ کرنے اوراپنے ساتھ بنائے رکھنے کے لئے لنگایت لیڈر ایم بی پاٹل کو کے پی سی سی کاکارگزار صدر نامزد کیاجانے والا اور وکلیگا طبقہ کے لیڈر ڈی کے شیوکمار کو کے پی سی سی صدر کاعہدہ دیاجارہاہے،ایشورکھنڈرے جواس وقت کارگزار صدر کے عہدہ پر ہیں انہیں پارٹی میں دوسری اہم ذمہ داریاں سونپی جانے والی ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

بھٹکل: کوروناوائرس کی روک تھام اور لاک ڈاون میں مزید سختی برتنے اب اُڑائے جائیں گے ڈرون کیمرے؛ گلی کوچوں میں آوارہ گردی کرنے والے ہوشیار

صرف کرناٹک ہی نہیں بلکہ ملک بھر میں بھٹکل کو لے کر تشویش پائی جارہی ہے کیونکہ  اتنے چھوٹے سے علاقہ میں  کورونا وائرس سے متاثرہ لوگوں کی تعداد  بڑھتی جارہی ہے۔چونکہ یہاں کے اکثر لوگ بیرون ممالک میں رہتے ہیں، اس لئے یہ وائرس دوسرے ملکوں سے یہاں آرہی ہے۔  ہمیں دہلی سے فون بھی ...

کرناٹک میں کورونا کے متاثرین کی تعداد بڑھ کر 88 ہوگئی؛ متاثرین کی تعداد میں روزبروز اضافہ سے معاملہ سنگین

کرناٹک میں کورونا وائرس کے متاثرین کی تعداد میں اضافہ مسلسل جاری ہے۔ ہفتہ کے روز جہاں ایک ہی دن میں 18نئے معاملات سامنے آئے اتوار کے روز مزید 7نئے معاملوں کے انکشاف نے اس صورتحال کی سنگینی کی طرف واضح اشارہ کیا ہے۔ 

کورونا وائرس: کرناٹک میں لاک ڈاؤن کا اثر۔ پھل اور ترکاریاں مفت تقسیم ہورہی ہیں نا ہی فروخت؟ عوام پریشانی میں مبتلا 

ہر گزرتے دن کے ساتھ پورے ملک اور خصوصاً کرناٹک میں کورونا وائرس سے متاثر ہو کر فوت ہونے اور بیمار ہونے والوں کی تعداد میں تیزی سے اضافہ ہوتا جارہا ہے اور عوام میں دہشت اور خوف بھی بڑھتا جارہا ہے۔