بنگلوروکے اندر آنے اور باہر جانے پر پابندی، وزراء کو اضلاع میں رہنے کی ہدایت

Source: S.O. News Service | Published on 25th March 2020, 1:04 PM | ریاستی خبریں |

27؍مارچ کو کابینہ میٹنگ کے دوران تمام اضلاع کی صورتحال کا جائزہ لیا جائے گا: وزیر اعلیٰ یڈیورپا

بنگلورو، 25؍مارچ (ایس او نیوز) ریاست بھر میں کورونا وائرس سے نپٹنے کے لئے حکومت نے راجدھانی بنگلورو کو چہارشنبہ سے مکمل طورپر لاک ڈاؤن کو اور سخت انداز میں کرنےکا فیصلہ لیا۔

وزیر اعلیٰ یڈیورپا نے منگل کے روز اعلان کیا کہ شہر بنگلوروسے آنے جانے والے لوگوں کے لئے منگل کا آخری دن ہوگا کہ وہ یا تو بنگلورو کے اندر آجائیں یا بنگلورو سے باہر چلے جائیں اس کے بعد کسی کو بنگلورو سے باہر جانے یا باہر والوں کو اندر آنے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔

انہوں نے کہا کہ کورونا وائرس کے خدشہ میں اب تک بنگلورو سمیت ریاست کے مختلف مقامات پر 12029 لوگوں کو کوارنٹائن کیا گیا ہے۔ 179 لوگوں کو آئسولیشن کیا گیا ہے۔ اب تک کورونا وائرس کے 43 تصدیق شدہ معاملوں کی نشاندہی کی گئی ہے۔ اس لئے حکومت نے احتیاطی طور پر ریاست بھر میں مکمل لاک ڈاؤن کردینے کا فیصلہ لیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ بنگلورو میں منگل کے روزہ ایک ہی دن بنگلورو میں آنے اور یہاں سے جانے کی اجازت ہو گی۔ اس کے بعد کوئی بھی شہر کے اندر یا شہر کے باہر نہیں جاسکتا۔ اس دوران وزیر اعلیٰ نے ریاستی اسمبلی اجلاس ختم ہونے کے فوراً بعد تمام اراکین اسمبلی او وزراء سے کہا کہ وہ اپنے اضلاع اور حلقوں میں رہ کر عوام کی فکر کریں۔راجد دھانی میں ان کے رہنے کی کوئی ضرورت نہیں ۔ انہوں نے کہا کہ کورونا وائرس اور اس کے سنگین اثرات کے بارے میں عوامی بیداری لائی جائے۔

بتایا جاتا ہے کہ 27؍مارچ کو وزیر اعلیٰ نے ریاستی کابینہ کا ایک اجلاس طلب کیا ہے جس میں کورونا وائرس سے نپٹنے کے لئے درکار اقدامات کے بارے میں ضروری قدم اٹھائے جائیں گے۔

اس قبل سے اضلاع کے انچارج وزراء سے کہا گیا ہے کہ وہ اپنے اپنے اضلاع کے بارے میں معلومات یکجا کر کے کابینہ اجلاس میں پیش کریں تا کہ ان تفصیلات کے متعلق اضلاع میں احتیاطی تدابیر کے بارے میں فیصلہ لیا جاسکے۔

وارروم کا معائنہ: وزیر اعلیٰ ایس یڈیورپا نے ریاستی وزراء آر اشوک ، سدھا کر، بسوراج بومئی ، شہر کے میئر گوتم کمار اور دیگر کے ساتھ کورونا وائرس سے نپٹنے کے لئے  حکومت کی طرف سے قائم وار روم کا معائنہ کیا۔ بی بی ایم پی کی طرف سے یہ نئی وار روم قائم کی گئی ہے۔ وزیر اعلیٰ کو اس موقع پر بتایا گیا کہ اس وار روم میں ریاست کے مختلف طبی ماہرین کو مدعو کر کے کورونا وائرس سے نپٹنے کے سلسلے میں ان کی ہدایت کے مطابق لائحہ عمل تیار کیا جائے گا۔

سدھا کر کووڈ۔19 کے وزیر: اس دوران ریاست میں کورونا وائرس سے جڑے معاملات سے نپٹنے کے لئے کووڈ۔19 کے امور کا قلمدان بنایا گیا ہے اور اس قلمدان کی ذمہ داری جو منگل تک دو وزراء بی سری راملو اور ڈاکٹر سدھاکر میں تقسیم کی گئی تھا اس کو اب ایک ہی وزیر کے سپرد کردیا گیاہے۔ سری راملو سے کووڈ۔19 کا قلمدان واپس لے کر اسے سدھا کر کے حوالے کردیا ہے۔ کووڈ۔ 19 کی جگہ اب سری راملو کو پسماندہ طبقات کے امور کی افزود ذمہ داری سونپی گئی ہے۔ بتایا جاتا ہے کہ کورونا وائرس کے انتہائی حساس قلمدان کے بارے میں سری راملو کے غیر معتبر بیانات اور اعداد و شمار کے بارے میں ان کے اور سدھا کر کے بیانات میں واضح تضاد کی شکایتوں کے ساتھ ساتھ دونوں وزراء کے درمیان تال میل میں کمی کو دیکھتے ہوئے وزیر اعلیٰ کے کورونا وائرس کے تمام امور کی ذمہ داری سدھاکر کو دے دی ہے۔ 

ایک نظر اس پر بھی

کیرالہ میں پیش آیا چٹان کھسکنے کا خطرناک حادثہ۔ 15ہلاک اور60سے زائدافراد ہوگئے لاپتہ۔ ملبے میں دب گئیں 30جیپ گاڑیاں 

کیرالہ کے مشہور تفریحی مقام ’مونار‘ سے قریب ’ایڈوکی‘ میں چٹان کھسکنے کا ایک خطرناک حادثہ پیش آیا جس میں تاحال 15افراد ہلاک ہونے اور 60سے زیادہ لوگ لاپتہ ہونے کے علاوہ 30جیپ گاڑیاں چٹان کے ملبے میں دب کر رہ جانے کی خبر ہے۔

کورونا کی وبا اور دعوت رجوع الی اللہ، اس عنوان کے تحت جماعت اسلامی ہند، کرناٹک کی 15 روزہ مہم کا آغاز

  کورونا کی وبا سے اس وقت پوری انسانیت پریشان ہے۔ اس مرض کا مقابلہ کرنے کیلئے حفاظتی اور احتیاطی تدابیر اختیار کرتے ہوئے لوگ اپنے رب سے رجوع ہوں۔ کورونا جیسی بیماریوں پر قابو پانے کیلئے طبی علاج کے ساتھ روحانی اور اخلاقی طاقت کا ہونا بھی ضروری ہے۔

کرناٹک سے 40 امیدوار سیول سرویسز امتحان میں کامیاب

کرناٹک سے زائداز 40 امیدواروں نے 2019 کے یونین پبلک سرویس کمیشن (یو پی ایس سی ) سیول سرویس امتحان میں کامیابی حاصل کی اور اب آئی اے ایس ، آئی ایف ایس اور آئی پی ایس اور دیگر میں ملازمت حاصل کریں گے۔