بنگلورو: مانسون کے دوران ڈینگی کے کیسز میں مسلسل اضافہ

Source: S.O. News Service | Published on 12th September 2021, 1:03 PM | ریاستی خبریں |

بنگلور،12؍ ستمبر (ایس او نیوز)مانسون   کے دوران بنگلور میں ڈینگی کے مریضوں کی تعداد میں مسلسل اضافہ ہو رہا ہے۔ مئی کے مہینے میں یہاں ڈینگی کے 102 کیس رپورٹ ہوئے جبکہ مانسون    کے آغاز کے بعد اگست تک ان کی تعداد بڑھ کر 1304 ہو گئی ہے۔ صرف اگست کے مہینے میں یہاں ڈینگی کے 677 نئے کیس رپورٹ ہوئے ہیں جو کہ مئی کے مقابلے میں چھ گنا زیادہ ہیں۔ تاہم بنگلور میونسپل کارپوریشن (بی بی ایم پی) کے عہدیداروں کے مطابق فی الحال ڈینگی کی وجہ سے زیادہ خطرہ نہیں ہے اور صورتحال کنٹرول میں ہے۔بی بی ایم پی کے مطابق مئی سے اگست تک ڈینگی کے 12203 نمونوں کی جانچ کی گئی۔ جن میں سے 1304 کیسز میں ڈینگی کی تصدیق ہوئی۔ مئی میں یہاں ڈینگی کے 102 کیس رپورٹ ہوئے۔ اسی دوران جون میں ڈینگی کے 174 کیسز پائے گئے۔ تاہم مون سون کے آغاز کے بعد ایک بار پھر یہاں ڈینگی کے کیسز میں اضافہ ہوا ہے۔ جولائی کے مہینے میں یہاں 351 کیس رپورٹ ہوئے جبکہ اگست کے مہینے میں ڈینگی کے 677 کیسز کی تصدیق ہوئی ہے۔ اگر ہم بی بی ایم پی کے آٹھ زونوں کی بات کریں تو مشرقی زون میں سب سے زیادہ 438 ڈینگی کیس رپورٹ ہوئے ہیں، جنوبی زون 319 کیسز کے ساتھ دوسرے نمبر پر ہے۔بی بی ایم پی کے چیف ہیلتھ آفیسر بی کے وجیندر کے مطابق اس میں کوئی شک نہیں کہ یہاں ڈینگی کے کیسز میں اضافہ ہوا ہے۔ تاہم اس وقت صورتحال تشویشناک نہیں ہے اور صورتحال مکمل طور پر کنٹرول میں ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

کرناٹک سے روزانہ 2100کلو بیف گوا کو سپلائی ہوتاہے : وزیر اعلیٰ پرمود ساونت

بی جے پی کی اقتدار والی ریاست کرناٹک سے روزانہ 2000کلوگرام سے زائد جانور اور بھینس کا گوشت (بیف)گوا کو رفت ہونےکی جانکاری بی جے پی اقتدار والی ریاست گوا کے وزیرا علیٰ پرمود ساونت نے دی۔ وہ گوا ودھان سبھا کو تحریری جواب دیتےہوئے اس بات کی جانکاری دی ۔

کرناٹک کے داونگیرے میں ایک لڑکی نے والدین سمیت 4 افرادکو سلایا موت کی نیند؛ کیا ہے پورا واقعہ

کرناٹک میں ایک لڑکی نے امتیازی سلوک سے تنگ آکر اپنے پورے خاندان کو زہر دے کر ہلاک کردیا۔ جب فارنسک رپورٹ منظر عام پر آئی تو انکشاف ہوا کہ اس خاندان کی موت رات کے کھانے میں پائے جانے والے زہر سے ہوئی۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق داونگیر میں ایک 17 سالہ لڑکی کو کچھ عرصے سے اپنے خاندان ...

ہبلی میں مبینہ تبدیلی مذہب کی مخالفت کرتے ہوئے شدت پسند ہندو تنظیموں کے کارکنوں نے چرچ کے اندر گھس کر گایا بھجن

ہبلی میں تبدیلی مذہب کی مخالفت کرتے ہوئے ہندو شدت پسند تنظیموں کے کارکنوں نے ایک چرچ کے اندر گھس کر بھجن گانا شروع کردیا جس کی وائرل ہونے والی ویڈیو میں درجنوں مرد و خواتین کو دیکھا گیا ہے کہ وہ کس طرح ہبلی کے بیری ڈیوارکوپا چرچ کے اندر بیٹھے ہاتھ جوڑ کر بھجن گارہے ہیں۔

ایڈی یورپاکی عوامی تحریکوں میں کروبا طبقے کاتعاون اہم رہاہے:راگھویندرا

تعلقہ میں بی ایس ایڈی یورپاکے تمام عوامی وفلاحی تحریکوں میں کروبا طبقہ کا تعاون اہم رہاہے،اس کے بدلے میں ایڈی یورپانے بھی اپنے دور اقتدار میں طبقے کی ترقی کیلئے جتنابھی ممکن ہوسکے کام کیا اور ہر طرح سے امداد فراہم کی۔یہ بات رکن پارلیمان بی وائی راگھویندرانے کہی۔