آسام: زبیدہ بیگم کے پاس15دستاویزات موجود شہریت ثابت کرنے میں پھر بھی ناکام!

Source: S.O. News Service | Published on 20th February 2020, 11:15 AM | ملکی خبریں |

نئی دہلی،20/فروری(ایس او نیوز/ایجنسی) پورے ہندوستان میں این آر سی لگائے جانے اور اس کے اثرات پر بحث جاری ہے- آسام میں این آر سی سے پیدا مشکلات کو سامنے رکھ کر لوگ پورے ملک میں این آر سی لگائے جانے کی مخالفت کر رہے ہیں - آسام میں کئی معاملے سامنے آ چکے ہیں جس میں برسوں سے وہاں رہ رہے لوگوں کو شہریت ثابت کرنے میں مشکل پیش آ رہی ہے- تازہ معاملہ زبیدہ بیگم نامی خاتون کا ہے جو اپنی اور اپنے شوہر کی شہریت ثابت کرنے کے لیے 15 طرح کی دستاویزات لے کر فارنرس ٹریبونل پہنچی، لیکن انھیں شکست ہاتھ لگی- خاتون نے جب اس معاملے کو ہائی کورٹ میں چیلنج کیا تو وہاں بھی مایوسی کا سامنا کرنا پڑا-

ہائی کورٹ نے خاتون کی عرضی کو خارج کرتے ہوئے کہا کہ ”بینک اکاؤنٹس کی تفصیلات، پین کارڈ اور اراضی کی رسید جیسی دستاویزوں کا استعمال شہریت ثابت کرنے کے لیے نہیں کیا جا سکتا ہے-“ جب کہ آسام انتظامیہ کے ذریعہ قابل قبول دستاویزوں کی فہرست میں اراضی اور بینک اکاؤنٹس سے جڑی دستاویزات کو شامل رکھا گیا ہے-

این ڈی ٹی وی پر شائع رپورٹ کے مطابق آسام میں رہنے والی 50 سالہ زبیدہ بڑی مشقتوں والی زندگی گزار رہی ہے اور کسی طرح اپنے کنبہ کی پرورش کر رہی ہے- وہ خود کو ہندوستانی شہری ثابت کرنے کی لڑائی تنہا لڑ رہی ہے- مفلسی کی زندگی گزار رہی زبیدہ کے لیے سپریم کورٹ کا دروازہ کھٹکھٹانا بہت مشکل ہے، کیونکہ وہ قانونی لڑائی نہیں لڑ سکتی- بتایا جاتا ہے کہ زبیدہ گوہاٹی سے تقریباً 100 کلو میٹر دور بکسا ضلع میں رہتی ہے-

زبیدہ بیگم نے میڈیا سے اپنی پریشانی بیان کرتے ہوئے کہا کہ ”میں اپنی فیملی کی واحد کمانے والی رکن ہوں - شوہر کافی وقت سے بیمار ہیں -3 بیٹیاں تھیں جن میں سے ایک کی حادثے میں موت ہو چکی ہے- ایک بیٹی لاپتہ ہو گئی ہے جس کی جانکاری نہیں مل پا رہی ہے- سب سے چھوٹی بیٹی پانچویں درجہ میں پڑھ رہی ہے- میں اس کے مستقبل کو لے کر بہت پریشان ہوں -“ زبیدہ مزید کہتی ہیں کہ ”میری کمائی کا تقریباً پورا حصہ قانونی لڑائی میں خرچ ہو گیا ہے- ایسے میں بیٹی کو کئی رات بھوکے ہی سونا پڑا- مجھے فکر ہے کہ میرے بعد اس کا کیا ہوگا؟ میں خود کے لیے امید کھو چکی ہوں -“

ایک نظر اس پر بھی

کورونا وائرس کے مشتبہ افراد کی زیادہ سے زیادہ تشخیص ضروری: سیتا رام یچوری

 مارکسی کمیونسٹ پارٹی (سی پی ایم) کے جنرل سکریٹری سیتا رام یچوری نے کورونا وائرس (کووڈ -19) سے لڑنے کے لئے حکومت کے سامنے سات سوال اٹھاتے ہوئے کورونا وائرس کے مشتبہ مریضوں کی زیادہ سے زیادہ جانچ کرانے پر زور دیا ہے تاکہ ہم بروقت اس کا حل نکال سکیں۔