سرکاری ملازمین کی تنخواہوں پر نظر ثانی جنوری کے بعد: سدرامیا

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 15th November 2017, 12:09 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو،14؍نومبر(ایس اونیوز؍عبدالحلیم منصور) ریاستی کے سرکاری ملازمین کی تنخواہوں پر نظر ثانی کرنے کیلئے حکومت نے چھٹواں پے کمیشن تشکیل دیا ہے۔کمیشن کی رپورٹ موصول ہونے کے بعد حکومت ملازمین کی تنخواہوں پر نظر ثانی کا فیصلہ کرے گی۔یہ اعلان آج وزیر اعلیٰ سدر امیا نے ریاستی اسمبلی میں کیا۔ مرکزی حکومت اور ریاستی ملازمین کی تنخواہوں میں امتیاز کو دور کرنے کے مقصد کے تحت ہی حکومت نے وظیفہ یاب آئی اے ایس آفیسر سرینواس مورتی کی قیادت میں یکم جون 2017 کو چھٹواں پے کمیشن تشکیل دیاہے۔اس کمیشن نے رپورٹ پیش کرنے کیلئے 31جنوری تک کی مہلت طلب کی ہے، جسے منظور کرتے ہوئے کمیشن کی میعاد بڑھائی گئی ہے۔ وزیر اعلیٰ نے بات بی جے پی کے رکن دریودھن مہالنگپا کے سوال کے جواب میں بتائی۔ انہوں نے کہاکہ چھٹویں پے کمیشن کی رپورٹ پیش ہونے سے قبل ملازمین کوعبوری راحت رسانی کا کوئی منصوبہ حکومت کے سامنے نہیں ہے۔ پولیسوالوں کی تنخواہوں پر نظر ثانی کے متعلق سدرامیا نے کہاکہ اس کیلئے اعلیٰ افسران پر مشتمل کمیٹی قائم کی گئی تھی، اس کمیٹی نے اپنی رپورٹ حکومت کو پیش کردی ہے۔ اور اس کی سفارشات کے مطابق تنخواہوں میں اضافہ بھی ہوچکا ہے، پولیس والوں کوسالانہ 21سو روپیوں کی تنخواہ میں اضافہ منظور کیاگیاہ ے۔ گزشتہ 20 سال سے پولیس جوانوں کو ترقی نہیں دی گئی تھی۔ حکومت نے ہر بارہ سال میں ایک بار پولیس جوانوں کو ترقی دینے کا ضابطہ لاگو کیا ہے اس کے مطابق بارہ سال سے زیادہ کی مدت سے کام کرنے والے ہیڈکانسٹبلوں کواز خود اسسٹنٹ سب انسپکٹر کا درجہ مل جائے گا اور اسسٹنٹ سب انسپکٹرس سب انسپکٹرس بن جائیں گے۔ انہوں نے کہاکہ پولیس نظام کے تحت آرڈرلی کے رواج کو ختم کرنے کا حکم جاری کیاگیاہے، اس حکوم کی روسے کسی بھی اعلیٰ سرکاری آفیسر کے گھر پر کوئی پولیس جوان ملازم بن کر نہیں رہ سکتا۔ 

ایک نظر اس پر بھی

منگلورو:آر ایس ایس پرچارک تربیتی کیمپ میں امیت شاہ کی شرکت۔ سرخ دہشت گردی ، رام مندر، سبریملا اور انتخابات پر ہوئی خاص بات چیت

ملک کی مختلف ریاستوں میں اسمبلی انتخابات کی مصروفیت کے باوجود بی جے پی کے صدر امیت شاہ نے منگلورو میں آر ایس ایس ’ پرچارکوں‘ کے لئے منعقدہ 6 روزہ تربیتی کیمپ کے اختتام سے ایک دن پہلے ’سنگھ نکیتن‘ میں پہنچ نے کے لئے وقت نکالااور تربیتی کیمپ کے شرکاء سے خطاب کیا۔

مشاعروں کو با مقصد بنا کر نفرت کے ماحول کو پیار اور محبت میں بدلا جاسکتا ہے : سید شفیع اللہ

مشاعرے اردو زبان اور ادب کی تہذیب کے ساتھ ساتھ امن اور اتحاد کو فروغ دینے کا ذریعہ بھی ہیں۔ ملک اور سماج کے موجودہ حالات کو بہتر بنانے کیلئے زیادہ سے زیادہ مشاعروں کا انعقاد کیا جائے۔ بنگلورو میں بزم شاہین کے کل ہند مشاعرے میں ان خیالات کا اظہار کیا گیا۔

ٹیپوجینتی منسوخ کرنے کی کوئی تجویز نہیں ہے جواہر لال نہروکی جنم دن تقریب سے وزیراعلیٰ کااظہار خیال

کسانوں کی طرف سے حاصل کردہ زرعی قرضہ معاف کئے جانے کے سلسلہ میں شکوک وشبہات کا شکار نہ ہوں۔ قرضہ وصولی کیلئے کسانو ں کوغیر ضروری طور پر اذیت دی گئی تو بینک منیجرکو بھی گرفتار کیا جاسکتا ہے ۔