6؍فروری کو ریاستی لیجسلیچر کا مشترکہ اجلاس،ریاستی کابینہ میں فیصلہ، 550ویٹرنری ڈاکٹروں کا تقرر اور 33 منی بسوں کی خریداری کو بھی منظوری

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 11th January 2017, 11:42 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو۔10؍جنوری(ایس او نیوز) ریاستی لیجسلیچر کا مشترکہ اجلاس 6؍ فروری کو ہوگا۔ اور سال رواں کا پہلا اجلاس 7 فروری سے 10 فروری تک چلایا جائے گا۔یہ فیصلہ آج ریاستی کابینہ کے اجلاس میں لیا گیا۔ کابینہ اجلاس کے بعد فیصلوں کی تفصیلات سے اخباری نمائندوں کو آگاہ کراتے ہوئے وزیر قانون وپارلیمانی امور ٹی بی جئے چندرا نے بتایاکہ 6؍ فروری کو گورنر واجو بھائی والا لیجسلیچر کے امشترکہ اجلاس سے خطاب کریں گے۔ انہوں نے بتایاکہ آج ریاستی کابینہ میں ریاست میں دستیاب شمسی توانائی کے وسائل کا بھرپور استعمال کرنے اور اس سے بجلی کی پیداوار کو بڑھانے کیلئے 2014تا2021 کیلئے اپنائی گئی شمسی توانائی پالیسی میں ترمیم لانے کو منظوری دی گئی۔ ریاست میں 20ہزار میگاواٹ شمسی توانائی کی پیداوار کے وسائل دستیاب ہیں۔ اس میں سے 8 فیصد تک بجلی کی پیداوار کرنے میں پالیسی کی ترمیمات معاون ہوں گی۔ انہوں نے کہاکہ گھروں کی چھتوں پر سولار پینلس لگاکر ان سے بھی بجلی کی پیداوار کرنے کی اجازت دینے میں نئی ترمیمات کافی مدد گار ثابت ہوں گی۔ جئے چندرا نے بتایاکہ کابینہ نے شیموگہ سنٹرل جیل کی سہولیات کو بہتر بنانے پر بھی منظوری دے دی۔ ساتھ ہی اس جیل کی مخلوعہ 134 اسامیوں کو بھی پر کیا جائے گا اور ساتھ ہی قیدیوں کو لانے لے جانے کیلئے گاڑیوں کی خریداری کو بھی منظوری دی گئی۔ دکشن کنڑا ضلع کے کپّور میں 300 ہیکٹر زمین پر ربر کی پیداوار کے منصوبے کی شروعات کو بھی کابینہ نے منظوری دی۔اس پر 19کروڑ روپیوں کا خرچ آئے گا۔ گدگ ضلع کے نرگند میں سرکاری انجینئرنگ کالج کی تعمیر کو بھی کابینہ نے منظورکیا۔اس پر 55کروڑ روپیوں کا خرچ آئے گا۔ کرناٹکا اسٹیٹ فائنانس کارپوریشن کے سرمایہ میں 75 کروڑ روپے لگانے کیلئے بھی کابینہ نے منظوری دی ہے۔ انہوں نے بتایاکہ 1998 تک مسلسل 39 سال کرناٹکا اسٹیٹ فائنانس کارپوریشن منافع میں رہی۔ گزشتہ سال پہلی مرتبہ اس کمپنی نے 18سال کے وقفہ کے بعد 32کروڑ روپیوں کا منافع حاصل کیا ہے۔محکمۂ مویشی پالن میں 550 ویٹرنری ڈاکٹروں کی مخلوعہ اسامیوں کو پر کرنے کی بھی آج کابینہ نے منظوری دی۔ مسٹر جئے چندرا نے بتایاکہ 100 بیاک لاگ اسامیوں سمیت ان تمام اسامیوں کو ریکروٹمنٹ کے ذر یعہ پر کیا جائے گا۔ راست بھرتیاں صرف میرٹ کی بنیاد پر کی جائیں گی۔ ریاست بھر میں دس ہزار پولیس کوارٹرس کی تعمیر کیلئے ماضی میں طے شدہ تخمینہ 1818 کروڑ روپیوں پر نظر ثانی کرتے ہوئے اس رقم کو 2272کروڑ روپے مقرر کیاگیا اور اس رقم سے کوارٹرس کی جلد از جلد تعمیر کو بھی منظوری دی گئی۔اس پراجکٹ کیلئے فنڈز اکھٹا کرنے پولیس ہاؤزنگ کارپوریشن ہڈکو اور دیگر مالیاتی اداروں سے قرضہ جات حاصل کرے گی۔اس کیلئے ریاستی حکومت کی طرف سے ضمانت دینے کی بھی کابینہ نے منظوری دی ۔ ریاست بھر کے سرکاری اور ایڈڈ ، آئی ٹی آئی میں تربیت پانے والے درج فہرست طبقات کے طلبا کو حکومت کی طرف سے شو بھاگیہ اسکیم کے تحت جوتے اور موزے مفت فراہم کرنے کی اسکیم کو بھی آج کابینہ نے منظور کیا۔ آئی ٹی آئی میں زیر تعلیم دس ہزار سے زائد ایس سی / ایس ٹی طلبا اس اسکیم سے استفادہ کرسکیں گے۔ شہر میں ٹرانسپورٹ نظام کو بہتر بنانے کیلئے 133 منی بسوں کی خریداری کو بھی آج کابینہ نے منظوری دی، ان بسوں پر 32.13 کروڑ روپیوں کی لاگت آئے گی۔ ریاستی حکومت کے خرچ کے ساتھ مرکزی حکومت امرت یوجنا کے تحت 65 فیصد اخراجات برداشت کرے گی۔

ایک نظر اس پر بھی

امسال سفر حج کیلئے کرناٹک کے خوش نصیب عازمین کا قرعہ؛ 3331 فریشر عازمین، 5 اپریل تک رقم ادا کرنے کی مہلت

ریاستی حج کمیٹی کے ذریعہ سفر حج پر روانہ ہونے والے خوش نصیب عازمین حج کا انتخاب آج ممبئی میں حج کمیٹی آف انڈیا دفتر میں بذریعہ آن لائن قرعہ عمل میں آیا۔ امسال وزیر برائے شہری ترقیات و حج آر روشن بیگ کی مسلسل جدو جہدکے ذریعہ ریاست کے حج کوٹہ میں اضافہ ہوا، جس کے تحت کرناٹک کیلئے ...

الیکٹرانک اور سوشیل میڈیا کی نگرانی کیلئے خصوصی سیل قائم: پرمیشور

الیکٹرانک میڈیا کے ذریعہ عوام کی نجی زندگی اور دیگر امور کو بہت زیادہ اچھالے جانے پر تشویش ظاہر کرتے ہوئے وزیر داخلہ ڈاکٹر جی پرمیشور نے بتایاکہ اس سلسلے پر روک لگانے اور کارروائی کرنے کیلئے کیبل ٹیلی ویژن نیٹ ورک ضوابط کے تحت ریاستی اور ضلعی سطح پر ایک نگرانی کمیٹی قائم کی ...

بے گھر درج فہرستوں کو درخواست دیتے ہی مکان: آنجنیا

ریاست بھر میں بے گھر، درج فہرست طبقات کو عرضی دیتے ہی گھر مہیا کرانے کیلئے حکومت کی طرف سے ضروری قدم اٹھائے گئے ہیں۔ یہ بات آج وزیر برائے سماجی بہبود ایچ آنجنیا نے بتائی۔ اسمبلی میں وقفہئ سوالات کے دوران ہمپنا گوڈا بادرلی کے سوال کا جواب دیتے ہوئے انہوں نے کہاکہ بے گھر درج ...

بے روزگاری کے مسئلہ کو سلجھانے فروغ ہنر مراکز کا قیام: سدرامیا

وزیر اعلیٰ سدرامیا نے کہاکہ دیہی علاقوں میں بے روزگار نوجوانوں کے مسائل کو سلجھانے کیلئے انہیں فروغ ہنر کی تربیت دینے خصوصی مراکز قائم کرکے پانچ لاکھ سے زائد افراد کو ہنر مندی کی تربیت سے آراستہ کیا جائے گا۔ ایوان بالا میں وقفہئ سوالات کے دوران کانگریس کے کے سی کونڈیا کے سوال ...

منشیا ت کی فروخت پر روک لگانے کیلئے سخت اقدامات،ٹریفک کے مسائل سلجھانے 13سو کانسٹبلوں کی بھرتی: پرمیشور

وزیر داخلہ ڈاکٹر جی پرمیشور نے کہاکہ ریاست میں منشیات کی فروخت پر روک لگانے کیلئے محکمہئ داخلہ کی طرف سے سخت قدم اٹھائے جارہے ہیں۔ ایوان بالا کے وقفہئ سوالات میں اراکین پی اے شرونا، ایم اے نارائن سوامی، لہر سنگھ وغیرہ کے سوالات کا جواب دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ شہر میں منشیات ...

اگلے تین ماہ میں تمام تعلقہ اسپتالوں میں ڈیالیسس سنٹر: رمیش کمار

وزیر صحت رمیش کمار نے آج ریاستی اسمبلی کو بتایا کہ ریاست کے تمام تعلقہ جات میں اگلے تین ماہ کے دوران ڈیالیسس سنٹرس قائم کردئے جائیں گے۔وقفہئ سوالات میں جنتادل (ایس) کے کونا ریڈی کے سوال کا جواب دیتے ہوئے انہوں نے کہاکہ نجی اور عوامی اشتراک سے یہ ڈیالیسس سنٹرس قائم کئے جارہے ...