فرقہ پرستی کیخلاف ملک کو بیدار کرے گی جمعیت علماء: مولانا محمودمد نی

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 13th September 2017, 10:36 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی،13؍ستمبر(ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا)اس وقت ملک کی تکثیریت اور فرقہ وارانہ ہم آہنگی کو سبوتاژ کرنے والی طاقتیں سرگرم ہیں ۔جمعیۃ علماء ہند اپنی روایت کے مطابق ہمیشہ محبت اور امن کی بنیاد پر مبنی فضاء قائم کرنے کی جد وجہد کرتی رہی ہے، ساتھ ہی اس بات کی بھی ضرورت ہے کہ ملت اسلامیہ کو درپیش مسائل پر بحث و تمحیص کرکے ایک مضبوط اور مستحکم لائحہ عمل طے کیا جائے ۔ ان اہم ترین احساسات کے ساتھ جمعےۃ علما ء ہند کے جنرل سکریٹری مولانا محمود مدنی نے یہاں نئی دہلی میں اعلان کیا کہ جمعےۃ علماء ہند کی سب سے بڑی دستوری جنرل باڈی ’’مجلس منتظمہ ‘‘کا اہم اجلا س 27,28اکتوبر کو لکھنؤ میں منعقد ہوگا اوراسی موقع پر 29اکتوبر امن ایکتا سمیلن‘‘کا انعقاد بھی عمل میں آئے گا،جس میں مختلف عقائد سے وابستہ مذہبی رہنماؤں اور دانشوروں کو مدعو کیا جائے گا ، اس سمیلن میں اسلام کے عالم گیر پیغا م اخوت کی روشنی میں سبھی طبقات کے ساتھ محبت بانٹنے کے نکات پر توجہ مرکوز ہو گی ۔ واضح ہو کہ دہلی کے اندرا گاندھی اسٹیڈیم میں اسی ماہ (21ستمبر) کو ہونے والی کانفرنس موخر کردی گئی تھی،اب اس کی نئی تاریخ جمعےۃ علماء ہند کے مرکزی دفتر میں 11؍ستمبر ( پیر ) کو امیر الہند مولانا قاری سید محمد عثمان منصورپوری( صدر جمعےۃ علماء ہند ) کے زیر صدارت منعقد ورکنگ گروپ میٹنگ میں طے پائی ہے ، میٹنگ میں اجلاس مجلس عاملہ ، مجلس منتظمہ وغیرہ سے متعلق بھی لائحہ عمل طے ہوا ۔ 27؍اکتوبر کو اجلاس مجلس عاملہ اور28کو اجلاس مرکزی مجلس منتظمہ منعقد ہو گا۔ مولانا مدنی نے کہا کہ اجلاس مجلس منتظمہ ، تنظیم کے دستوری تقاضوں کی تکمیل کے لیے بھی منعقد ہوتا ہے ، جس میں تنظیم سے متعلق فیصلے لیے جاتے ہیں، اس کے علاوہ ہمارے سامنے کئی اہم مسائل ہیں جن میں خاص طو رسے قومی یکجہتی کے فروغ اور فرقہ پرستی کی روک تھام سے متعلق لائحۂ عمل،فرقہ وارانہ فسادات کی روک تھام کے لیے قانون سازی ،مسلمانو ں کے لیے ریزرویشن اور اس میں ہونے والی پیش رفت ،دہشت گردی کے انسداداور بے قصور افراد کی رہائی کے لیے موثر اقدامات ، مسلمانوں کے عائلی مسائل ،قانون شریعت کے تحفظ کے لیے جد وجہد ، ملی وقومی معاملات میں مسلکی تنازعات سے اوپر اٹھ کر باہمی اتحاد،دلت مسلم اتحاد سے متعلق لائحہ عمل ،عالم اسلام بالخصوص یمن و فلسطین اور بالخصوص روہنگیا کے مسلمانوں کے خلاف نسل کشی کی روک تھام جیسے کئی بنیادی مسائل اور تقاضے ہیں، جن پر غور کرکے آگے کے اقدامات سے متعلق فیصلے کیے جائیں گے ۔اجلاس کی تیاری کے سلسلے میں جمعےۃ علماء اترپردیش کے صدر مولانا متین الحق اسامہ نے کہا کہ صوبہ کی تمام یونٹوں خصوصا لکھنؤ و اطراف کے ضلعی ذمہ داروں سے کو متوجہ کیا گیا ہے وہ اجلاس کوکامیاب بنانے کے لیے اپنے حصہ کی ذمہ داری نبھائیں ۔

ایک نظر اس پر بھی

سہراب الدین انکاؤنٹر معاملہ : تین سال پہلے ہوئی جج کی موت پر اب اُٹھے سوال ؛ کیا ان کا قتل ہوا تھا ؟

سہراب الدین کے مبینہ فرضی انکاؤنٹر کی شنوائی کر رہے سی بی آئی جج برج گوپال ہرکشن لویا ، جن کی یکم دسمبر 2014 میں موت واقع ہوئی تھی، اب تین سال بعد اُن کی موت پر سوالات اُٹھ کھڑے ہوگئے ہیں۔  انگریزی ماہنامہ کاروان نے ایک رپورٹ شائع کرتے ہوئے اس بات کا دعویٰ کیا ہے کہ  سی بی آئی جج ...

’پدماوتی‘بیرون ملک میں ریلیز ہوگی یا نہیں، 28نومبر کو سپریم کورٹ کرے گا سماعت

سپریم کورٹ میں وکیل سری لنکن شرما نے عرضی داخل کر کے کہا ہے کہ فلم پدماوتی بنانے والے پر عدالت کو گمراہ کرنے کا الزام لگایا ہے۔ہندی فلم پدماوتی ایک دسمبر کو ملک سے باہر ریلیز کرنے کا مطالبہ کر رہی نئی درخواست پر کورٹ 28نومبر کو سماعت کرے گی۔

گجرات بی جے پی کی جاگیر نہیں ہے، راہل گاندھی کے ساتھ کوئی ریلی نہیں کروں گا:ہاردک پٹیل

گجرات کے نوجوان لیڈر ہاردک پٹیل نے گرچہ اگلے ماہ ہونے جا رہے اسمبلی انتخابات میں کانگریس کا موقف لینے کی خواہش بنا لی ہو لیکن یہ بھی صاف ہے کہ وہ کانگریس نائب صدر راہل گاندھی کے ساتھ نظرنہیں آئیں گے۔

یوگی کے اُترپردیش میں لاء اینڈآرڈر کی تشویشناک صورتحال، اب ٹرین میں تین مسلم اساتذہ کی ہوئی پٹائی، رومال بہانہ مسلم نشانہ

یوپی میں لاء اینڈرآرڈرکس قدربدحال ہے۔اوراقلیتوں کے متعلق کس قدرنفرت کاماحول ہے اس کااندازہ اس سے لگایاجاسکتاہے کہ اتر پردیش کے باغپت ضلع میں چلتی ٹرین میں 6سے 7دبنگوں پر تین مسلم ٹیچروں کے ساتھ مارپیٹ کا الزام لگا ہے۔