رافیل اور ایس -400 میزائل سے فضائیہ کی صلاحیت بڑھے گی:ایر چیف مارشل دھنووا

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 13th September 2018, 11:30 AM | ملکی خبریں |

نئی دہلی13؍ستمبر (یو این آئی) رافیل جنگی طیارے کے سودے پراپوزیشن کی طرف سے جاری ہنگامہ کے درمیان فضائیہ کے سربراہ ایر چیف مارشل بی ایس دھنووا نے آج کہا کہ ہندوستان کوجس طرح کے ’سنگین خطرے ‘کا سامنا ہے ، اسے دیکھتے ہوئے فضائیہ کو رافیل جیسے طیارے اور روسی سکیورٹی سسٹم ایس -400 کی ضرورت ہے ۔ ایر چیف مارشل نے چہارشنبہ کے روز یہاں ایک سمینار میں کہا کہ دنیا میں صرف دو ممالک جنوبی کوریا اور اسرائیل ہی اپنے اپنے علاقوں میں ہندوستان جیسے خطرے کا سامنا کر رہے ہیں لیکن ان دونوں نے ہی اپنی فضائیہ کو انتہائی مضبوط بنا لیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ملک میں ہی تیار تیجس طیارے اس کمی کو پورا نہیں کر سکتے ، جس کا سامنا فضائیہ کر رہی ہے ۔ اس کمی کو پورا کرنے کے لئے رافیل جیسے جدید ٹیکنالوجی سے لیس طیارے کی ضرورت ہے ۔انہوں نے کہا کہ وقت کا تقاضا ہے کہ ہندوستانی فضائیہ کو پڑوسی ممالک کی بڑھتی طاقت کو دیکھتے ہوئے مضبوط بنایا جانا چاہئے ۔ پاکستان اور چین کی فضائی طاقت کا ذکر کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ہندوستانی فضائیہ کو 42 اسکویڈرن کی ضرورت ہے لیکن اس کے پاس صرف 31 ؍اسکویڈرن ہیں۔ پاکستان مسلسل اپنی طاقت بڑھا رہا ہے اور اس کے پاس جنگجوؤں کے 20 سے زائدا سکویڈرن ہیں جن کے پاس اعلیٰ درجے کے ایف -16 بھی ہیں اور وہ چین سے بڑی تعداد میں جے -17 طیارے حاصل کر رہا ہے ۔ چین کے پاس 1700 سے زیادہ جنگی طیارے ہیں ۔

ایر چیف مارشل دھنووا نے مزید کہا کہ اگر ہندوستان کے پاس جنگی طیاروں کے 42 ؍اسکویڈرن بھی ہو جاتے ہیں تو بھی وہ دونوں کی طاقت کا مقابلہ نہیں کر سکتا۔ اگرچہ فضائیہ اس سے پہلے کئی بار کہہ چکا ہے کہ وہ ایک ساتھ دو محاذوں پر ہنگامی صورتحال سے نمٹنے کے قابل ہے۔فرانس سے رافیل طیاروں کے صرف دو ا سکویڈرن خریدے جانے پر انہوں نے کہا کہ یہ ایئر فورس کی فوری ضروریات کو پورا کرنے کے لئے ہے اور اس سے پہلے بھی طیاروں کے دو اسکویڈرن خریدے گئے ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

 گجرات:  ٹھاکر کمیونٹی کادقیانوسی قانون،لڑکیوں کے موبائل کے استعما ل پر مکمل پابندی، بھاگ کر شادی کرنے پر اہل خانہ کو بھرنا ہوگا جرمانہ 

گجرات کے بناس کا ٹھا میں ٹھا کر کمیونٹی کی طرف سے 12 دیہات میں عجیب و غریب اور دقیانوسی قوانین بنائے گئے ہیں۔ اس میں ایک اصول ایسا ہے کہ لڑکیاں اپنے پاس موبائل نہیں رکھ پائیں گی۔

 اب تمام علاقائی زبانوں میں ہون گے ڈاک محکمہ کے امتحانات، راجیہ سبھا میں ہنگامہ کے بعد حکومت نے منسوخ کیا پیپر 

ڈاک محکمہ کی گزشتہ ہفتے ہوئے ایک امتحان کا ذریعہ صرف ہندی اور انگریزی رکھنے کی مخالفت میں منگل کو راجیہ سبھا میں کئی جماعتوں کے ارکان کے ہنگامے کی وجہ سے کاروائی کئی بار روکنا پڑی۔

پاکستانی جیل میں قید سابق ہندوستانی افسر کلبھوشن پر بین الاقوامی عدالت کا فیصلہ آج

پاکستان کی جیل میں بند ہندوستانی بحریہ کے سابق فوجی افسر کلبھوشن جادھو کے معاملے میں بدھ کو ہیگ واقع بین الاقوامی عدالت (آئی سی جے) اپنا فیصلہ سنائے گی۔ ’دی ہیگ‘ کے پیس پیلس میں 17 جولائی کو ہندوستانی وقت کے مطابق شام ساڑھے چھ بجے کھلی سماعت ہوگی جس کے بعد چیف جسٹس عبدالقوی ...