فرضی سرٹی فکیٹ گھپلہ، کرناٹک کاویاپم بن سکتاہے، ہزاروں نوجوانوں نے فرضی اسناد دے کر نوکریاں حاصل کی ہیں 

Source: S.O. News Service | By Jafar Sadique Nooruddin | Published on 18th May 2017, 12:26 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو:17/مئی(ایس او نیوز) حال ہی میں ریاستی پولیس کی طرف سے بے نقاب کئے گئے فرضی مارکس کارڈ گینگ کی سرگرمیاں ریاست میں ایک بہت بڑے گھپلے کا سبب بنتی نظر آرہی ہیں۔ شہر کی سٹی کرائم برانچ پولیس نے فرضی مارکس کارڈ تیار کرنے والی ٹولی کے پانچ یا چھ افراد کو گرفتار کرکے ان سے یہ اگلوایا کہ ملک بھر میں اس ٹولی کے 180 ایجنٹ فرضی مارکس کارڈ کی فراہمی میں لگے ہوئے ہیں۔ تحقیقات کے ذریعہ یہ بات سامنے آئی ہے کہ ایس ایس ایل سی، پی یو سی، گریجویشن، پوسٹ گریجویشن سمیت مختلف زمروں کی ڈگریاں اس ٹولی نے ہزاروں نوجوانوں کو مہیا کرائی ہیں۔ پولیس نے ابتدائی جانچ کے ذریعہ یہ پتہ لگایا ہے کہ شہر بنگلور اور ریاست کے مختلف مقامات پر نجی اور سرکاری شعبوں میں ہزاروں نوکریاں انہی سرٹی فکیٹس کی بنیاد پر حاصل کی گئی ہیں۔ ایک اندازہ کے مطابق فی سرٹی فکیٹ 1.6 لاکھ میں فروخت کی گئی ہے۔ اور ایسی 400 فرضی سرٹی فکیٹ دے کر امیدواروں نے سرکاری ملازمتیں حاصل کی ہیں۔ ان تمام کی نشاندہی پولیس کافی تیزی سے کررہی ہے۔ بتایاجاتاہے کہ ہزاروں امیدواروں نے شہر کی مختلف آئی ٹی بی ٹی کمپنیوں میں روزگار اور ترقی حاصل کرنے کیلئے ان فرضی سرٹی فکیٹوں کا سہارا لیا ہے۔ملزمین کے ای میل، واٹس اپ، ٹیلی فون ریکارڈ کے علاوہ کرناٹک، دہلی، اترپردیش، مدھیہ پردیش، پنجاب، ہریانہ اور بہار میں ان کے روابط کی جانچ سے یہ بات سامنے آئی ہے کہ پندرہ سے زیادہ ریاستوں میں یہ ٹولی فرضی سرٹی فکیٹ کا دھند ہ چلارہی ہے۔ چند برس قبل مدھیہ پردیش میں ہوئے ویاپم گھپلے سے اس ٹولی کو مشابہ قرار دیاجارہاہے۔ اور پولیس افسران نے بتایاکہ جانچ کے نتائج سامنے آنے کے بعد بنگلور کے ہزاروں نوجوانوں کو اپنی نوکریاں گنوانی پڑ سکتی ہیں۔ سوشیل میڈیا کے ذریعہ اس ٹولی نے بہت سارے امیر امیدواروں کو بھی رابطہ کرکے انہیں فرضی سرٹی فکیٹ مہیا کرائے ہیں اور ان سے رقم آن لائن حاصل کی ہے۔ بعض امیدواروں کو 75،85 اور90 فیصد مارکس کے فرضی سرٹی فکیٹ بھی مہیاکرائے گئے ہیں۔منظم طور پر جاری اس دھندہ کیلئے رقم کی ادائیگی نہ صرف آن لائن بلکہ حوالہ کے ذریعہ بھی کروائی گئیں۔ سی سی بی نے اپنی جانچ سے یہ بھی پتہ لگایا ہے کہ اس گھپلے میں بنگلور اور دہلی کی چند معروف آئی ٹی بی ٹی کمپنیوں کے سینئر سافٹ ویر انجینئر بھی شامل ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

رکن کونسل بائرتی سریش کی امیر شریعت سے ملاقات

سینئر کانگریس لیڈر اور رکن کونسل بائرتی سریش نے دارالعلوم سبیل الرشاد پہنچ کرامیر شریعت مفتی محمد اشرف علی سے ملاقات کی اور ان سے دعائیں لیں، پچھلے اسمبلی ضمنی انتخابات میں ہبال اسمبلی انتخاب میں کانگریس کی ٹکٹ کیلئے کوشش کرنے والے بائرتی سریش بحیثیت رکن کونسل اپنے حلقہ کے ...

فروغ ہنر سے استفادہ کرنے انجینئروں کو آواز

وشویشوریا ٹیکنیکل یونیورسٹی کی طرف سے دو سو کروڑ روپیوں کی لاگت پر فروغ ہنر مرکز قائم کیاگیا ہے ،جہاں ڈگری یافتہ انجینئرس مختلف فنون کی تربیت کا استفادہ کرسکتے ہیں اور اپنی تعلیم کے ساتھ منتخب ہنر میں غیر معمولی مہارت حاصل کرسکتے ہیں۔ یہ بات آج اس فروغ ہنر سنٹر کے وائس چانسلر ...

بی بی ایم پی کی طرف سے اندراکینٹین کی بروقت شروعات مشکوک

ریاستی حکومت کی طرف سے برہت بنگلور مہانگر پالیکے کی حدود میں یوم آزادی کے موقع پر بڑے پیمانے پر اندرا کینٹین کی شروعات کرکے یہاں پر پانچ روپیوں میں ناشتہ اور دس روپیوں میں دوپہر اور شام کا کھانا مہیا کرانے کا اعلان کیا گیا ہے ، ایسا نہیں لگتا کہ وہ یوم آزادی تک جامۂ حقیقت پہن ...

بی بی ایم پی کے اگلے میئر کے انتخاب کی تیاریاں

برہت بنگلور مہانگر پالیکے کی موجودہ میئر جی پدماوتی کی میعاد 10ستمبر کو پوری ہوجائے گی۔اس کے ساتھ ہی شہر کے اگلے میئر کی تلاش بھی زور پکڑ چکی ہے۔ آنے والی میعاد میں جو بھی میئر بنے گا اس پر انتخابی سال کا دباؤ کافی زیادہ رہے گا۔ جنتادل (ایس) اور آزاد اراکین کے ساتھ کی بدولت پچھلے ...

لنگایت فرقہ کو الگ مذہب کا درجہ دینے کی مانگ، بی جے پی اور آر ایس ایس کے پیروں تلے زمین کھسکنے لگی

ریاست میں لنگایت طبقے کو الگ مذہب کا درجہ دینے کے مطالبے سے پریشان آر ایس ایس نے مطالبہ کیا ہے کہ اس تنازعہ کو سلجھانے کیلئے ایک غیر سیاسی کمیٹی تشکیل دی جائے۔ آر ایس ایس کی طرف سے ریاستی حکومت کے موقف کی نکتہ چینی کرتے ہوئے کہاگیا ہے کہ لنگایت طبقہ کو علیحدہ مذہب کا درجہ دینے ...

کرناٹک کو بی جے پی سے پاک ریاست بنایا جائے گا: سدرامیا

وزیر اعلیٰ سدرامیا نے آج یہ بات دہرائی کہ ریاست میں انتخابات کے بعد ایک بار پھر کانگریس حکومت ہی برسر اقتدار آئے گی اور کرناٹک میں بی جے پی کو پنپنے نہیں دیا جائے گا۔ ہاویری میں سرکاری پروگراموں میں شرکت کیلئے روانگی سے قبل ہبلی میں اخباری نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے سدرامیا ...