ملک کو زعفرانی رنگ دینے بی جے پی کا خواب پورا ہونے نہیں دیں گے،زعفر انی جماعت پر تکثیری معاشرہ ،ہم آہنگی کو نقصان پہونچانے اور فرقہ پرستی پھیلانے ڈی ایم کے کا الزام

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 9th September 2018, 12:09 PM | ملکی خبریں |

چینائی،9ستمبر (ایس او نیوز)  ڈی ایم کے نے بی جے پی کے زیرقیادت مرکزی حکومت کو آج سخت ترین تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے اس پر انتخابی ڈکٹیٹر شپ چلانے کا الزام عائد کیا اور ملک کے نظام کو زعفر انی رنگ دینے اس قومی جماعت کے خوابوں کو شکست دینے کا عہد کیا ۔

ڈی ایم کے کے ڈسٹرکٹ سکریٹریز ، ارکان پارلیمنٹ اور ارکان اسمبلی کا ایک اجلاس اس پارٹی کے صدر ایم کے اسٹالن کی صدارت میں منعقد ہوا ۔ جس میں نوٹ بندی ، رافیل معاملت ، نیٹ جیسے اہم مسائل اور ملک کی موجودہ معاشی صورتحال کیلئے مرکز پر غلط فیصلوں کا نتیجہ قرار دیا ۔ اس اجلاس میں منظورہ ایک قرارداد میں کہا گیا کہ ’’بی جے پی حکومت ٹاملناڈو کے مفادات نظرانداز کررہی ہے ۔ تکثیر و تنوع کو متاثر کرتے ہوئے فرقہ پرستی کو فروغ دے رہی ہے ۔ بی جے پی کی مخالفت کرنے والے سماجی کارکنوں اور تمام دوسروں کو ملک دشمن قرار دیا جارہا ہے ‘‘۔ بی جے پی کے زعفر انی خوابوں کو مستر د کریں گے ‘‘ کے زیرعنوان قرارداد میں الزام عائد کیا گیا کہ بی جے پی کی مذمت کرنے والے میڈیا کو ڈرایا یا دھمکایا جارہا ہے ۔ اقلیتوں او ر دلتوں کو کئی مقامات پر نشانہ بنایا جارہا ہے ۔ چنانچہ ایک غیر معلنہ ایمرجنسی نافذ ہے ‘‘ ۔ اس دراوڑی جماعت نے یہ الزام بھی عائد کیا کہ ’ بی جے پی نے ایک انتخابی ڈکٹیٹر شپ مسلط کردی ہے جو پارلیمانی جمہوریت کو چیلنج کررہی ہے ۔

ڈی ایم کے نے یہ الزام عائد کیا کہ الیکشن کمیشن ، محکمہ آئی ٹی اور سی بی آئی جیسے اداروں پر بھی بی جے پی اپنا کنٹرول قائم کرچکی ہے حتی کہ عدلیہ میں بھی بحران پیدا ہوا ہے ۔ اس ضمن میں ڈی ایم کے نے رواں سال کی ابتداء میںسپریم کور ٹ کے چار سینئر ججوں کی طرف سے ظاہر کردہ اعلانیہ برہمی کا حوالہ دیا ۔ قرارداد نے مزید کہا کہ ڈی ایم کے اپنی ریاست میں بی جے پی کے فرقہ پرستی پر مبنی عزائم و منصوبوں کو بروئے کار لانے کی کبھی بھی اجازت نہیں دے گی ۔ نیز دستور کے دیباچہ میں کئے گئے عہد کی پاسداری کے لئے ہر قیمت ادا کرے گی ۔ ڈی ایم کے نے اپنی کٹر حریف اناڈی ایم کے کی زیرقیادت ریاستی حکومت کی تنقیدوں کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ مواخرالذکر ’رشوت کا محور و منبع بن گئی ہے اور اس کو بیدخل کرنے کے عہد بھی کیا ریاستی حکومت کے خلاف /18 ستمبر کو ریاست گیر احتجاج منظم کرنے کا فیصلہ بھی کیا گیا ۔

ایک نظر اس پر بھی

چھتیس گڑھ کے لوگوں کی آنکھوں میں دھول جھونک رہی ہے کانگریس :مودی

کانگریس پر چھتیس گڑھ کے لوگوں کی آنکھوں میں دھول جھونکنے اور جھوٹے وعدے کرنے کا الزام لگاتے ہوئے وزیر اعظم نریندر مودی نے اتوار کو کہا کہ کانگریس کے ایک ہی خاندان کی چار نسلوں نے ملک پر حکومت کی، جس کا انہیں تو فائدہ ملا لیکن ملک کو کوئی فائدہ نہیں ہوا۔ چھتیس گڑھ کے مہاس منڈ میں ...

ٹکٹ کی تقسیم میں مذہب کی بنیاد پر کوئی کوٹہ سسٹم نہیں ہونا چاہئے، راجستھان میں ایک بھی مسلم کوٹکٹ نہیں دئے جانے کے سوال پرراجے وردھن راٹھورکاجواب

مرکزی وزیر راجے وردھن سنگھ راٹھور نے کہا کہ ٹکٹ کی تقسیم میں مذہب کی بنیاد پر کوئی کوٹہ سسٹم نہیں ہونا چاہئے۔راٹھور نے راجستھان میں سات دسمبر کو ہونے والے اسمبلی انتخابات کے لیے بی جے پی کی طرف سے ایک بھی مسلم امیدوار کو ٹکٹ نہیں دئے جانے کے سوال کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ ٹکٹوں ...

امرتسربم دھماکہ: وزیراعلیٰ امریندر سنگھ کی ایمرجنسی میٹنگ، عوام سے امن کی اپیل، مہلوکین کو5-5 لا کھ معاوضہ کا اعلان

پنجاب کے امرتسرمیں نرنکاری سگاگم میں ہوئے گرینیڈ حملے کے بعد وزیراعلیٰ کیپٹن امریندرسنگھ نے چنڈی گڑھ  میں ایمرجنسی میٹنگ بلائی ہے۔ کیپٹن امریندرسنگھ اعلیٰ سطح کے سیکورٹی افسران کے ساتھ میٹنگ کررہے ہیں۔

چھتیس گڑھ میں سرکار بنی تو دس دن میں کسانوں کا قرضہ معاف ؛وجئے مالیا ‘ نیرو مودی اور انیل امبانی سے وصول کریں گے قرض کی رقم؛ راہل گاندھی کا اعلان

کانگریس صدر راہول گاندھی نے آج وعدہ کیا کہ چھتیس گڑھ میں کانگریس پارٹی کو اقتدار ملنے پر اندرون 10 یوم کسانوں کے زرعی قرض معاف کردئے جائیں گے اور انہوں نے کہا کہ قرض معافی کیلئے رقومات وجئے مالیا ‘ نیرو مودی اور انیل امبانی جیسے لوگوں سے آئیگی ۔

حج 2019: درخواست فارم کی تاریخ میں 25 روزکی توسیع، 12 دسمبرتک جمع کئے جاسکتے ہیں فارم

حج 2019 کے لئے درخواست فارم داخل کرنے کی آخری تاریخ میں توسیع کردی گئی ہے۔ اب 12 دسمبر تک حج فارم جمع کئے جاسکتے ہیں۔ مرکزی حج کمیٹی نے آج ممبئی کے حج ہاوس میں منعقدہ میٹنگ میں مزید 25 روز کے اضافے کا اعلان کیا ہے۔