پاٹیداروں کے ریزرویشن کے لئے کمیشن تشکیل دیاجائے:دیوے گوڈا

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 5th September 2018, 12:16 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو04 ستمبر(یواین آئی) سابق وزیر اعظم وجے ڈی ایس سربراہ ایچ ڈی دیوے گوڈا نے او بی سی کے تحت پاٹیداروں کے لئے ریزرویشن کے مطالبے پر وزیر اعظم مودی سے کمیشن کے تشکیل دینے کی اپیل کی ہے ۔دیوے گوڈا نے پاٹیدار لیڈر ہاردک پٹیل کی بھوک ہڑتال ختم کرانے کے لئے وزیر اعظم سے مداخلت کی اپیل کی ہے ۔

قابل ذکربات یہ ہے کہ ہاردک پٹیل گزشتہ گیارہ دنوں سے بھوک ہڑتال پر ہیں ۔انہوں نے کہا کہ یہ ایک نازک معاملہ ہے ،میں آپ سے درخواست کرتا ہوں کہ آپ اس معاملے میں فوراً مداخلت کریں اور پسماندہ طبقات کے مفاد کے پیش نظر نوجوان لیڈر ہاردک کی زندگی کو بچایا جائے۔مسٹر دیوے گوڈا نے یاد دلایا کہ ان کے وزیر اعظم رہنے کے دوران راجستھان میں جاٹ سماج کے مطالبے کے پیش نظر ایک کمیشن تشکیل دیا گیا تھا۔جو معاشی پچھڑے پن اور کمزور درجات کے تحت ریزرویشن کا مطالبہ کر رہے تھے اور رپورٹ کے تحت راجستھان کے جاٹ او بی سی کی مرکزی فہرست میں شامل ہوئے تھے ۔

سابق وزیر اعظم نے ہاردک پٹیل بھی کو ایک خط لکھا ہے جس میں انہوں نے ان کو بھوک ہڑتال ختم کرنے کی صلاح دی ہے ۔ خیال رہے کہ بھوک ہڑتال کی وجہ سے انکی صحت دن بدن گرتی جا رہی ہے ۔انہوں نے لکھاآپ نوجوان ہیں اور اچھے کاموں کی لڑائی کے لئے آپ کی خدمات کی ضرورت ہے ،آپ اپنی بھوک ہڑتال ختم کر دیں اور اس کے بعد آپ حکومت سے اپنے مطالبے کو منوانے کے لئے اپنا احتجاج جاری رکھیں۔

ایک نظر اس پر بھی

کرناٹک: بی ایس پی ارکان اسمبلی کمارسوامی کے حق میں ووٹ کریں گے:مایاوتی

کرناٹک میں کانگریس اورجے ڈی ایس کی مخلوط حکومت رہے گی یا جائے گی اس کا فیصلہ آج ہو جائے گا ۔ برسر اقتدار اتحاد کے ارکان اسمبلی کو بی جے پی ٹوڑنے کی کوشش کر رہی ہے لیکن اس بیچ بی ایس پی سپریموں نے کہا ہے کہ اس کی پارٹی کے ارکان اسمبلی کمارسوامی حکومت کے حق میں ہی ووٹ ڈالیں گے ۔ یہ ...

مخلوط حکومت کی بقا کا سسپنس برقرار آج بھی اسمبلی میں تحریک اعتماد پر ووٹنگ کا امکان،باغیوں کو واپس لانے کیلئے سدارامیا کو وزیر اعلیٰ بنانے کی پیش کش

ریاست میں کانگریس جے ڈی ایس مخلوط حکومت کوبچانے کے لئے اتحادی جماعتوں کے قائدین کی کوششوں کا سلسلہ جاری ہے تو دوسری طرف اپوزیشن بی جے پی اس کوشش میں ہے کہ کسی طرح پیر کے روزتحریک اعتماد پر اسمبلی میں ووٹنگ ہو جائے لیکن خدشات ظاہر کئے جارہے ہیں