لوک سبھا حلقوں کے ضمنی انتخاب زیادتی : ڈی کے شیوکمار

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 10th October 2018, 12:30 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو،9؍اکتوبر(ایس او نیوز) ریاستی وزیر برائے آبی وسائل ومیڈیکل ایجوکیشن ڈی کے شیوکمار نے الیکشن کمیشن کی طرف سے ریاست کے تین لوک سبھا حلقوں کے لئے ضمنی انتخاب کرانے کے فیصلے پر سخت اعتراض کیا ہے۔ اخباری نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ ان اراکین پارلیمان اسمبلی کے لئے منتخب ہونے کے بعد پارلیمان سے مستعفی ہوچکے ہیں۔ اسی طرح پڑوسی ریاست آندھرا پردیش میں بھی اراکین پارلیمان نے استعفیٰ دیا ہے، لیکن کرناٹک کے تین حلقوں کے لئے ضمنی انتخاب کا اعلان کردیا گیا ہے، انہوں نے کہا کہ الیکشن کمیشن اس طرح کے فیصلوں سے امتیازی سلوک کا ثبوت دے چکا ہے۔ الیکشن کمیشن کو چاہئے کہ فوراً ان تین پارلیمانی حلقوں کے ضمنی انتخابات کو رد کرے اور تینوں حلقوں کے لئے انتخاب عام انتخابات کے ساتھ ہی کروائے جائیں۔ انہوں نے کہاکہ ایسا نہیں کہ کانگریس لوک سبھا انتخابات کا سامنا کرنے تیار نہیں ہے، الیکشن کمیشن اگر چاہے تو فوری طور پر لوک سبھا کے عام انتخابات کا اعلان کردے تاکہ فیصلہ ہوجائے کہ ملک کا اقتدار کس کے ہاتھوں میں جائے گا، ایسا کرنے کی بجائے ایسے مرحلے میں لوک سبھا حلقوں کاضمنی چناؤ کرانا جبکہ ایوان کی مدت صرف تین ماہ رہ گئی ہے زیادتی ہے۔ 

ایک نظر اس پر بھی

کاسرگوڈ میں جانور لے جانے کے الزام میں دو لوگوں پر حملہ؛ بجرنگ دل کارکنوں کے خلاف معاملات درج کرنے پر مینگلور کے قریب وٹلا اور بنٹوال میں بسوں پر پتھراو

پڑوسی ریاست کیرالہ کے  کاسرگوڈ میں جانور لے جانے کے الزام میں دو لوگوں پر حملہ اور لوٹ مار کی وارداتوں کے بعد پولس نے جب  بجرنگ دل کارکنوں کے خلاف معاملات درج کئے  تو  مینگلور کے قریب  وٹلا اور بنٹوال  میں  بسوں پر پتھراو اور توڑ پھوڑ کی واردات پیش آئی ہے۔ پتھراو میں   نو ...