کونسل کیلئے سی ایم لنگپا کا نام دوبارہ پیش ہوگا

Source: S.O. News Service | By Jafar Sadique Nooruddin | Published on 19th May 2017, 2:13 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو:18/مئی(ایس او نیوز) ریاستی لیجسلیٹیو کونسل کی رکنیت کیلئے رام نگرم کے سابق رکن اسمبلی سی ایم لنگپا کے نام کو منظوری دینے سے گورنر واجو بھائی والا کے انکار کے بعد ریاستی حکومت ایک بار پھر ان کے نام کی سفارش کرنے پر سنجیدگی سے غور کررہی ہے۔کل گورنرنے ریاستی حکومت کی طرف سے تجویز کئے گئے دو ناموں کو منظور کرتے ہوئے سی ایم لنگپا کے نام کو تعلیمی زمرہ کیلئے ناقابل غور قرار دیتے ہوئے مسترد کردیا۔ گورنر کے اس فیصلے کے بعد آج ریاستی حکومت کی طرف سے ایک بار پھر یہ کوشش تیز ہوگئی کہ دوبارہ ایوان بالا کی رکنیت کیلئے سی ایم لنگپا کے نام کی سفارش کی جائے۔ یاد رہے کہ اس پہلے بی جے پی کے دور اقتدار میں اس وقت کے ایچ آر بھردواج نے کونسل کی رکنیت کیلئے تعلیمی زمرے سے وی سومنا کے نام کو مسترد کردیاتھا۔ اسی طریقہئ کار کو اپناتے ہوئے موجودہ گورنر نے رام نگرم کے سابق رکن اسمبلی سی ایم لنگپا کے نام کی سفارش کو ماننے سے انکار کیا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

چنتامنی میں پی ڈی او گرام پنچایت صدر پر لاپرواہی کا الزام ؛ دلت سنگھرش سمیتی کا احتجاجی مظاہرہ 

دلت طبقہ کے علاقوں کو بنیادی سہولت و سرکاری سہولتوں کو فراہم کرنے میں کوتاہی و من مانی کرنے والے پی ڈی او آفیسر و گرام پنچایتی صدر کی مخالفت کرناٹکا دلت سنگھرش سمیتی کے کارکنان تعلقہ کے چلکنرپور گرام پنچایتی دفتر کو تالا لگاکر زبردست احتجاج کیا۔

کانگریس کے کا ہل اراکین اسمبلی کو پارٹی ٹکٹ ملنا مشکوک بے کار اور بے عمل لجسلیٹرس کی فہرست تیارکرنے ریاستی قیادت کو راہل گاندھی کی ہدایت

پچھلے ساڑھے 4؍سال سے سرکاری اسکیموں سے استفادہ کرتے ہوئے اپنے حلقوں کے لوگوں کو فائدہ نہ پہنچانے والے چند اراکین اسمبلی کو آئندہ ریاستی اسمبلی کے لئے ہونے والے انتخابات میں پارٹی ٹکٹ نہ دیئے جانے کا امکان ہے۔

ممتاز قو می رہنماقمرالاسلام کا جسد خاکی مکمل سرکاری اعزاز کیساتھ سپرد لحد،وزیر اعلیٰ سدرامیا، اورکئی کابینی وزراآخری دیدار کرنے والوں میں شامل

ممتاز قومی رہنما الحاج قمرالاسلام کو 19ستمبر کی رات مکمل سرکاری اعزاز کے ساتھ سپرد لحد کیا گیا۔کے سی ٹی گراؤنڈ میں تقدس مآب الحاج ڈاکٹر سید شاہ گیسودراز خسرو حسینی صاحب قبلہ سجادہ نشین بارگاہ بندہ نوازؒ نے مرحوم قمرالاسلام کی نماز جنازہ پڑھائی اور دعائے مغفرت فرمائی۔