چنتامنی میں پینے کے پانی کا مسئلہ کو لے کرخواتین نے رُکن اسمبلی کا کیا گھیراؤ 

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 13th August 2017, 1:31 AM | ریاستی خبریں |

 چنتامنی:12 /اگست(سید اسلم پاشاہ/ایس او نیوز)رُکن اسمبلی جے کے کرشناریڈی نے آج تعلقہ کے بوڈن ماری،ایرگمپلی قریوں میں تار کول سڑک بچھانے کے لئے ”نما گراما نمارستے“منصوبے کے تحت 14کروڈ لاگت فنڈسے  سنگ بنیاد رکھنے پہنچتے ہی قریوں کی خواتین رُکن اسمبلی کا گھیراؤ کرلیااور شکایتوں کے ڈھیڑ لگاتے ہوئے کہا کہ قریوں میں پچھلے کئی دنوں سے پانی کی سپلائی بالکل نہیں ہوپارہی ہےگرام پنچایتوں کے  افسروں کو ہدایت دی گئی ہے کہ جن قریوں میں پانی کی شدید قلت ہے وہاں ٹینکروں کے ذریعہ پانی سپلائی کیاجائے لیکن گرام پنچایتی پی۔ڈی۔او۔اور سکریٹری کی من مانی اور لاپروائی سے قریوں کو ٹینکروں سے پانی سپلائی نہیں کیا جارہا ہے۔ خوتین اس بات کا بھی الزام لگایا کہ پانی کے ٹینکر سربراہی کرنے کے نقلی بل تیار کرکے متعلقہ افسران پانی کے فنڈ کو خوب ہڑپ کررہے ہیں اس کی فوری تحقیقات کرتے ہوئے  اُن کے خلاف  کارروائی کی جائے۔

 رُکن اسمبلی جے کے کرشناریڈی نے پی۔ڈی۔او رینوکہ کو طلب کرکہ خوب آڑے ہاتھوں لیا اور کہا قریوں کو پانی سربراہی کرنے میں لاپروائی برتنے والے افسروں کو معطل کیا جائے ایسے افسروں کو حلقے میں رہ کر ملازمت کرنے کی ہرگیز ہی ضرورت نہیں ہے کرشناریڈی نے پی ڈی او کو وارننگ دیتے ہوئے کہا کہ فوراََ قریوں میں پانی کے مسائل کو حل کرنے کی کوشش نہیں کی گئی تو پی ڈی اوز کانام بلاک لسٹ میں شامل کرکے حکومت سے شکایت کی جائیگی۔

رُکن اسمبلی کرشناریڈی نے گھیراؤ کی ہوئی خواتین کو پانی کا مسئلہ جلد سے جلد نپٹنانے کا یقین دلانے کے بعدد نما گراما نمارستے منصوبے کے لئے سنگ بنیاد رکھا بعد میں اخباری نمائندوں سے بات کرتے ہوئے بتایا کہ پچھلے دو ہفتوں سے حلقے کے مختلف گرام پنچایتوں میں نماگراما نمارستے منصوبے کے تحت راستوں کو خوبصورت بنانے کی کوشش کی جارہی ہے اسمبلی انتخابات کا اعلان ہونے سے پہلے ترقیاتی کاموں کو مکمل کرنے کی ہدایت ٹھیکداروں کو دی گئی ہے اس موقع پر ضلع پنچایتی سابق رُکن شرنیواس ستیہ نارائن ریڈی سمیت گرام پنچایتی کے صدر و نائب صدر وغیرہ موجود رہے۔

ایک نظر اس پر بھی

ریاستی حکومت نے ٹو وہیلر بائیک پر ڈبل سواری کو روک لگانے کا فیصلہ کیا 

کرناٹک حکومت جلدہی ایک فیصلہ کرنے جارہی ہے جسے میں ریاست کے دوپہیوں والے سوار کی زندگی میں تبدیلی آسکتی ہے۔ریاستی حکومت 100سی سی یا اس سے کم انجن کی صلاحیت والے دو پہیوں کی موٹر گاڑیوں پر دو لوگوں کی سواری کرنے پر روک لگانے جارہی ہے ۔

ہبلی :پٹاخوں سے گھر میں لگی آگ ، کئی اشیاء جل کر خاک : کوئی جانی نقصان نہیں

دیوالی کے موقع پر پٹاخوں کو پھوڑنے کو لےکر سرکاری و غیر سرکاری طورپر احتیاطی تدابیر اختیار کرنےکے سلسلےمیں کئی احکامات جاری کئے جاتےہیں اور رہنمائی کی جاتی ہے لیکن اس کے باوجو د ہر سال پٹاخوں سے جانیں تلف ہونے  بچوں کی بینانی متاثر ہونے   پر سماجی ذمہ داران تشویش کا اظہار ...

وزیر اعلیٰ عہدے کے امیدوار کا اعلان نہ ہونے کی کانگریس کی انتخابی امید پر کوئی اثر نہیں ہوگا: جی پرمیشور

کرناٹک ریاستی کانگریس نے آج یہاں کہا کہ اسمبلی انتخابوں سے پہلے ریاست میں وزیر اعلیٰ عہدہ کے امید وار کے نام کا اعلان نہیں کئے جانے سے پارٹی کی امیدوں پر اس کاکوئی اثرنہیں پڑے گا۔