وزیر اعلیٰ کی جانب سے دہشت گردی کے الزامات پر بی جے پی چراغ پا پارٹی ریاست بھر میں جیل بھرو تحریک شروع کرے گی: شوبھا کرندلاجے

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 12th January 2018, 8:21 PM | ریاستی خبریں |

بنگلورو،12؍جنوری(ایس او نیوز) رکن پارلیمان وبھارتیہ جنتاپارٹی( بی جے پی) کی جنرل سکریٹری شوبھا کرندلاجے نے بتایا کہ ریاستی وزیر اعلیٰ سدارامیا کی جانب سے آر ایس ایس اور بی جے پی کو دہشت گرد تنظیمیں اور اس کے کارکنوں کو دہشت گرد قرار دیئے جانے کے خلاف ریاستی بی جے پی 12 جنوری سے ریاست بھر میں ’’ جیل بھرو تحریک‘‘ شروع کرے گی۔

یہاں اخباری کانفرنس سے بات کرتے ہوئے کرندلاجے نے چیلنج کیا کہ اگر حکومت کو طاقت ہے تو بی جے پی کارکنوں کو گرفتار کرے، کیونکہ بقول وزیر اعلیٰ سدارامیا بی جے پی اور آر ایس ایس کارکن دہشت گرد ہیں،اور انہیں گرفتار کیا جائے۔کرندلاجے نے الزام لگایا کہ ریاستی کانگریس رہنما اور وزیر اعلیٰ سدارامیا کے بے جا بیانات سے ریاست میں نظم نسق کی صورتحال پر سوالیہ نشان لگ گیا ہے، اور اس کے لئے ذمہ دار ریاستی کانگریس کے نگران کارکے سی وینو گوپال ہیں،انہوں نے کہا کہ کئی دہوں سے ملک کی خدمت میں مصروف آر ایس ایس تنظیم محب وطن ہے، اور واجپائی جیسے عظیم رہنماؤں پر مشتمل بی جے پی کو دہشت گرد اور جہادی کہنا کانگریس کی بے وقوفی ہے، انہوں نے الزام لگایا کہ آج ملک میں دہشت گردی کے لئے کانگریس ہی ذمہ دار ہے، جموں وکشمیر کی موجودہ صورتحال کے لئے بھی کانگریس ہی ذمہ دار ہے، قتل وغارت گری کا آغاز پنجاب سے ہوا، جہاں کانگریس نے علاحدہ خالصتان تحریک کی حمایت کی اور کانگریس نے شمالی مشرقی ریاستوں میں علاحدگی پسندوں کو بڑھاوا دیا، انہوں نے کہا کہ ایل ٹی ٹی ای کے سربراہ پربھاکرن کی مالی امداد کی، جس کی وجہ سے ملک کو سابق وزیر اعظم راجیو گاندھی سے محروم ہونا پڑا، شوبھا کرندلاجے نے کہا کہ کانگریس کی گندی سیاست کی وجہ سے اندرا گاندھی اور راجیو گاندھی کو قیمت چکانی پڑی، اب کانگریس کو آر ایس ایس اور بی جے پی کے خلاف بات کرنے کا کوئی حق نہیں ہے، کرندلاجے نے بتایا کہ وینو گوپال نے کیرلا کی خونی سیاست پی ایف آئی، ایس ڈی پی آئی کے ذریعہ کرناٹک میں لائی ہے، اور کانگریس نے پی ایف آئی اور ایس ڈی پی آئی کے ساتھ خفیہ معاہدہ کرلیا ہے، انہوں نے بتایا کہ میسور میں بم دھماکہ کرنے والے علاحدگی پسندوں نے2015 میں ہی ریاستی چیف سکریٹری کو مکتوب روانہ کیا تھا، لیکن اسے سنجیدگی سے نہیں لیا گیا،جس کی وجہ سے میسور میں عدالت کے روبرو دھماکہ ہوا، کرندلاجے نے کہاکہ آر ایس ایس یا بی جے پی والوں نے کبھی تلوار، چاقو، چھرا نہیں تھاما، کانگریس ووٹ بینک کی خاطر تلوا اور چاقو تھامنے والوں کی حمایت کررہی ہے، وزیر اعلیٰ سدارامیا کو اقتدار کا نشہ چڑھ گیا ہے، لیکن عوام انہیں مناسب سبق سکھائیں گے، اخباری کانفرنس کے دوران بی جے پی مہیلا مورچہ کی صدر بھارتی شٹی انورمانپاڈے، اشوتھ نارائن موجود رہے۔

ایک نظر اس پر بھی

گلبرگہ میں پچاس لاکھ روپئے لاگت کے شادی محل کی جگہ پرتعمیر ہوا صرف ایک ڈھانچہ ؛آر ٹی آئی کارکن نے اُٹھایا معاملہ

  کرناٹکا انفارمیشن کمیشن بنگلور کی ہدایت پر معروف آر ٹی آئی کارکن اور  اے پی سی آر کے ریاستی کوآرڈی نیٹر شیخ شفیع احمد نے تعلقہ آفسر اسماعیل صاب کے ساتھ  جب ایک شادی محل کا جائزہ لینے پہنچے تو اُنہیں حیرت کا ایک جھٹکا لگا کیونکہ وہاں کوئی محل موجود نہیں تھا بلکہ  ایک ...

بیلگام کے ایک اسکول میں مڈ ڈے میل کھانے سے 60 بچے بیمار؛ اسپتال میں والدین نے کیا ٹیچروں کا گھیرائو

ضلع بیلگام کے رام دُرگ تعلقہ کے  لکنائکن کوپّا کے ایک پرائمری اسکول میں دوپہر کا کھانا کھانے کے بعد اسکول کے 60 بچے بیمار پڑ گئے جنہیں فوری طور پر قریبی اسپتال لے جایا گیا ہے۔  واردات بدھ کی دوپہر کو پیش آئی ہے۔ 

اُڈپی میں مویشیوں کے بیوپاری حُسین ابّا کے قتل کے معاملے میں گرفتار تین ملزموں کو ملی ضمانت؛ آٹھ کی ضمانت نامنظور

مویشیوں کے بیوپاری حُسین ابا کے قتل کے معاملے میں گرفتار دو لوگوں  پولس ہیڈ کونسٹیبل  موہن کوتوال اور بجرنگ دل لیڈر پرساد کونڈاڈی کی ضمانت عرضی کو    اُڈپی سیشن کورٹ نے  منظور کرلیا ہے اسی طرح ایک اورفرار شدہ بجرنگ دل کارکن  توکارام  کی  پیشگی ضمانت بھی منطور کرلی ہے۔

گوری لنکیش کی طرح دیگر ادیبوں کے قتل کی سازش کا انکشاف 4روشن خیال مفکروں کو سکیورٹی فراہمی زیر غور

ریاستی حکومت روشن خیال مفکرین کو سیکورٹی فراہم کرنے پر سنجیدگی سے غور کر رہی ہے۔ ہندو مخالف نظریات کے حامل دانشوروں کی ہٹ لسٹ تیا ر کرتے ہوئے موت کی نیند سلائے جانے کی سازش کا انکشاف ہونے کے بعد روشن خیال مفکرین میں شامل گنان پیٹھ ایوارڈ یافتہ گریش کرناڈ، معروف قلمکاراور ...

پی یو سی سالِ دوم سائنس طلباء کے لیے مفت کوچنگ

ڈسٹرکٹ کوآرڈینیٹر اے سی سی پی ایل آرگنائزیشن بیدر کے پریس نوٹ کے بموجب بیدر ضلع کے مسلم طلباء جو پی یو سی سالِ دوم سائنس طلباء کو جولائی 2018ء تا جنوری2019تک اے سی سی پی ایل کی جانب سے مفت کوچنگ دی جائے گی۔