وزیر اعلیٰ کی جانب سے دہشت گردی کے الزامات پر بی جے پی چراغ پا پارٹی ریاست بھر میں جیل بھرو تحریک شروع کرے گی: شوبھا کرندلاجے

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 12th January 2018, 8:21 PM | ریاستی خبریں |

بنگلورو،12؍جنوری(ایس او نیوز) رکن پارلیمان وبھارتیہ جنتاپارٹی( بی جے پی) کی جنرل سکریٹری شوبھا کرندلاجے نے بتایا کہ ریاستی وزیر اعلیٰ سدارامیا کی جانب سے آر ایس ایس اور بی جے پی کو دہشت گرد تنظیمیں اور اس کے کارکنوں کو دہشت گرد قرار دیئے جانے کے خلاف ریاستی بی جے پی 12 جنوری سے ریاست بھر میں ’’ جیل بھرو تحریک‘‘ شروع کرے گی۔

یہاں اخباری کانفرنس سے بات کرتے ہوئے کرندلاجے نے چیلنج کیا کہ اگر حکومت کو طاقت ہے تو بی جے پی کارکنوں کو گرفتار کرے، کیونکہ بقول وزیر اعلیٰ سدارامیا بی جے پی اور آر ایس ایس کارکن دہشت گرد ہیں،اور انہیں گرفتار کیا جائے۔کرندلاجے نے الزام لگایا کہ ریاستی کانگریس رہنما اور وزیر اعلیٰ سدارامیا کے بے جا بیانات سے ریاست میں نظم نسق کی صورتحال پر سوالیہ نشان لگ گیا ہے، اور اس کے لئے ذمہ دار ریاستی کانگریس کے نگران کارکے سی وینو گوپال ہیں،انہوں نے کہا کہ کئی دہوں سے ملک کی خدمت میں مصروف آر ایس ایس تنظیم محب وطن ہے، اور واجپائی جیسے عظیم رہنماؤں پر مشتمل بی جے پی کو دہشت گرد اور جہادی کہنا کانگریس کی بے وقوفی ہے، انہوں نے الزام لگایا کہ آج ملک میں دہشت گردی کے لئے کانگریس ہی ذمہ دار ہے، جموں وکشمیر کی موجودہ صورتحال کے لئے بھی کانگریس ہی ذمہ دار ہے، قتل وغارت گری کا آغاز پنجاب سے ہوا، جہاں کانگریس نے علاحدہ خالصتان تحریک کی حمایت کی اور کانگریس نے شمالی مشرقی ریاستوں میں علاحدگی پسندوں کو بڑھاوا دیا، انہوں نے کہا کہ ایل ٹی ٹی ای کے سربراہ پربھاکرن کی مالی امداد کی، جس کی وجہ سے ملک کو سابق وزیر اعظم راجیو گاندھی سے محروم ہونا پڑا، شوبھا کرندلاجے نے کہا کہ کانگریس کی گندی سیاست کی وجہ سے اندرا گاندھی اور راجیو گاندھی کو قیمت چکانی پڑی، اب کانگریس کو آر ایس ایس اور بی جے پی کے خلاف بات کرنے کا کوئی حق نہیں ہے، کرندلاجے نے بتایا کہ وینو گوپال نے کیرلا کی خونی سیاست پی ایف آئی، ایس ڈی پی آئی کے ذریعہ کرناٹک میں لائی ہے، اور کانگریس نے پی ایف آئی اور ایس ڈی پی آئی کے ساتھ خفیہ معاہدہ کرلیا ہے، انہوں نے بتایا کہ میسور میں بم دھماکہ کرنے والے علاحدگی پسندوں نے2015 میں ہی ریاستی چیف سکریٹری کو مکتوب روانہ کیا تھا، لیکن اسے سنجیدگی سے نہیں لیا گیا،جس کی وجہ سے میسور میں عدالت کے روبرو دھماکہ ہوا، کرندلاجے نے کہاکہ آر ایس ایس یا بی جے پی والوں نے کبھی تلوار، چاقو، چھرا نہیں تھاما، کانگریس ووٹ بینک کی خاطر تلوا اور چاقو تھامنے والوں کی حمایت کررہی ہے، وزیر اعلیٰ سدارامیا کو اقتدار کا نشہ چڑھ گیا ہے، لیکن عوام انہیں مناسب سبق سکھائیں گے، اخباری کانفرنس کے دوران بی جے پی مہیلا مورچہ کی صدر بھارتی شٹی انورمانپاڈے، اشوتھ نارائن موجود رہے۔

ایک نظر اس پر بھی

مسلم نمائیندگی کے فروغ کے لئے مسلم پولیٹیکل فورم کے عہدیداران کا کئی علاقوں کا دورہ

 حیدر آباد کرناٹک مسلم پولیٹیکل فورم کے عہدہ داران مسرز اسد علی انصاری، افضال محمود، معراج کلیان والا اور علیم احمد پر مشتمل ایک وفد نے اس پولیٹیکل فورم کی ضلعی شاخوں کی تشکیل کے لئے 14ستمبر تا 16ستمبر علاقہ حید آباد کرناٹک کے تمام اضلاع کا دورہ کیا ۔14ستمبر کو بیدر میں پولیٹیکل ...

فیڈ ریشن آف کر نا ٹکا مسلم آر گنا ئز یشن رجسٹرڈ چنگیری داونگرے وکر نا ٹکا اردو چلڈرنس اکا دمی شکا ری پو ر کر نا ٹک کا مشتر کہ مشا ورتی اجلاس 

بر وز بد ھ بتا ریخ ۱۹ ستمبر ۲۰۱۸ ؁ کو فیڈ ریشن آف کر نا ٹکا مسلم آرگنا ئز یشن چنگیری داونگرے اور کر نا ٹکا اردو چلڈرنس اکا دمی نے مشتر کہ مشا ورتی اجلا س منعقد کیا ۔ اس اجلا س میں اس با ت پر خاص تو جہ دی گئی کہ ادب اطفال کے فر وغ اور اردو زبان کی تعلیم کے استحکام اور اردو اسکولوں میں ...

تحریک ادب اسلامی کے عظیم المرتبت شاعر جناب ڈاکٹر محمد حسین فطرتؔ کا انتقال پرملال تحریر: ڈاکٹر محمد حنیف شبابؔ

دنیائے اردو ادب میں اسلامی افکار و تصورات کی ترویج و اشاعت کے لئے سرگرم قافلۂ ادب اسلامی کے عظیم المرتبت شاعر و ادیب جناب ڈاکٹر محمد حسین فطرتؔ بھٹکلی نے کچھ عرصے تک ضعف و پیرانہ سالی سے متعلقہ علالت کا شکار رہنے کے بعد 84سال کی عمر میں آج داعئ اجل کو لبیک کہا۔ بعد نماز ظہر جامعہ ...

ہانگل کے ہیرور میں گنیش تہوار کے دوران مسجدپر پتھرائو کے بعدپولس لاٹھی چارج؛ گھروں میں گھس کر خواتین پرحملہ کئے جانے کا الزام

پڑوسی ضلع  ہاویری کے ہیرور میں گنیش تہوار کے موقع پر پتھراو اور پولس لاٹھی چارج کے بعد پولس پر الزامات لگائے جارہے ہیں کہ پولس نے گھروں میں گھس کر خواتین  کی بری طرح پیٹائی کی  ہے اور ۱۵ لوگوں کو گرفتار بھی کیا  ہے، اس تعلق سے سوشیل میڈیا پر زخمی مسلمانوں کے فوٹوز وائرل ہورہے ...

مخلوط حکومت کوکوئی خطرہ نہیں ۔ صورتحال میڈیا کی پیداوار کوئی پارٹی نہیں چھوڑے گا ۔ جارکی ہولی برادران کے مسائل پر مشورہ کرنے سدارامیا دہلی جائیں گے

ریاستی مخلوط حکومت کی بقا کو لے کر پچھلے ایک ہفتہ سے چل رہا ڈرامہ ہنوز جاری ہے ۔ حالانکہ آج وزیر اعلیٰ ایچ ڈی کمار سوامی اور ان کے بھائی ریاستی وزیر برائے تعمیرات عامہ ایچ ڈی ریونا نے مخلوط حکومت کے مستقبل کیلئے خطرہ پیدا کرنے والے جارکی ہولی برادران سے یہاں شہر کے ایک ہوٹل میں ...