احتیاطی تدابیر پرعمل کرنے سے کورونا کی یہ لہر ایک دو ماہ میں تھم سکتی ہے: ڈاکٹر ربانی طارق

Source: S.O. News Service | Published on 11th May 2021, 3:30 PM | ملکی خبریں |

سری نگر، 10؍مئی (ایس او نیوز؍ایجنسی)  کمیونٹی میڈیسن اسپیشلسٹ ڈاکٹر ربانی طارق کا کہنا ہے کہ احتیاطی تدابیر پر سختی سے عمل کرنے کی صورت میں ہی کورونا کی یہ دوسری لہر ایک دو ماہ میں تھم سکتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ کورونا گائیڈ لائنز پر عمل کرنے میں کوتاہی ہی کورونا کی دوسری لہر تیز ہونے کی ایک بڑی وجہ ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ لوگوں کو پریشان ہونے کے بجائے محتاط رہنے کی ضرورت ہے۔ موصوف نے ان باتوں کا اظہار محکمہ اطلاعات و تعلقات عامہ کے ہفتہ وار خصوصی ویڈیو پروگرام ’سکون‘ میں کیا۔

ربانی طارق نے کہا کہ ’جموں وکشمیر میں بھی مثبت کیسز بڑھ رہے ہیں اور اموات بھی ہو رہی ہیں، کورونا کی اس دوسری لہر کی کئی وجوہات ہیں لیکن کورونا گائیڈ لائنز سے چشم پوشی بہت بڑی وجہ ہے‘۔ ان کا کہنا ہے کہ اگر احتیاطی تدابیر پر سختی سے عمل کیا جائے گا تو یہ لہر ایک دو ماہ میں تھم سکتی ہے۔

موصوف ڈاکٹر نے کہا کہ کورونا میں مبتلا 70 سے80 فیصد مریضوں کو کسی خاص علاج کی ضرورت نہیں ہوتی ہے، وہ کچھ وقت کے بعد سپورٹیو علاج سے ہی صحتیاب ہوتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ہر کسی مریض کو کووڈ سے متعلق ادویات جیسے ریمڈیسیور دینے کی ضرورت نہیں ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ ڈاکٹر کے مشورے کے بغیر مریض کو کوئی بھی دوائی نہیں لینی چاہیے۔

ڈاکٹر ربانی طارق نے کہا کہ صرف ڈاکٹروں اور طبی ماہرین کے مشوروں پر ہی عمل کرنا چاہیے جو اس شعبے سے وابستہ نہیں ہیں انہیں مشورے دینے بھی نہیں چاہیے اور لوگوں کو ان پر عمل بھی نہیں کرنا چاہیے۔ انہوں نے کہا کہ لگ بھگ سبھی لوگوں کو کورونا ویکسین لگوانا چاہیے جو موذی بیماریوں میں مبتلا مریض ہیں انہیں بھی لگوانا چاہیے۔

ایک نظر اس پر بھی

 جموں و کشمیر کے راجوری میں گئو رکشکوں کے ذریعے 20 سالہ نوجوان کا پیٹ پیٹ کر قتل! محبوبہ مفتی نے متاثرہ کنبہ کے حق میں اٹھائی آواز

جموں و کشمیر کے راجوری ضلع میں ایک 20 سالہ نوجوان اعجاز ڈار کو کچھ نامعلوم افراد نے اس وقت قتل کر دیا جب وہ اپنی بھینس لے کر جا رہے تھے۔ یہ واقعہ مراد نگر گاؤں کے نزیک پیر کے روز پیش آیا۔

وجے مالیا، نیرو مودی اور میہل چوکسی کے ضبط شدہ 9371 کروڑ روپے سرکاری بینکوں کو منتقل

سرکاری بنیکوں سے اربوں روپے کے قرض لیکر فرار کاروباریوں وجے مالیا، نیرو مودی اور میہول چوکسی کے ملک و بیرون ملک میں ضبط 18170.02 کروڑ روپے اور املاک میں 9317.17 کرور روپے بینکوں اور حکومت کو منتقل کر دیئے گئے ہیں۔