کورونا کی دوسری لہر نے بھی ملک میں لاکھوں ملازمتیں چھین لیں 75 لاکھ سے زیادہ لوگ ہوئے بے روزگار

Source: S.O. News Service | Published on 5th May 2021, 6:40 AM | ملکی خبریں |

ممبئی، 5/مئی(ایس او نیوز/ایجنسی) کورونا مہاماری کی دوسری لہر اور اس کی روک تھام کے لئے مقامی سطح پر لگائے گئے لاک ڈاؤن اور دیگر پابندیوں کی وجہ سے 75 لاکھ سے زیادہ افراد نوکریوں سے محروم ہوگئے، اس سے بے روزگاری کی شرح چار ماہ کی اعلیٰ سطح آٹھ فیصد پرپہنچ گئی ہے۔ سینٹر فار مانیٹرنگ انڈین اکونومی (سی ایم آئی ای) نے یہ اطلاع دی۔

سی ایم آئی ای کے منیجنگ ڈائریکٹر اور چیف ایگزیکٹو آفیسر (سی ای او) مہیش ویاس نے کہا کہ آنے والے وقت میں روزگار کے محاذ پر صورتحال چیلنجنگ ہونے کا امکان ہے۔ انہوں نے کہا کہ مارچ کے مقابلہ میں ہم نے اپریل کے مہینے میں 75 لاکھ ملازمتیں ضائع کیں۔ اس کی وجہ سے بیروزگاری کی شرح میں اضافہ ہوا ہے۔

مرکزی حکومت کے اعدادوشمار کے مطابق قومی بے روزگاری کی شرح 7.97 فیصد ہوگئی ہے۔ شہری علاقوں میں بے روزگاری کی شرح 9.13 فیصد ہے جبکہ دیہی علاقوں میں یہ شرح 7.13 فیصد ہے۔ اس سے قبل مارچ میں قومی بے روزگاری کی شرح 6.50 فیصد تھی اور دیہی و شہری دونوں علاقوں میں یہ شرح نسبتا ً کم تھی۔کورونا مہاماری بڑھنے کے ساتھ بہت سی ریاستوں نے لاک ڈاؤن سمیت دیگر پابندیاں عائد کردی ہیں۔ اس نے معاشی سرگرمیوں کو بری طرح متاثر کیاہے اور اس کے نتیجے میں ملازمتیں بھی متاثر ہوئیں۔

ایک نظر اس پر بھی

کورونا کا خاتمہ جولائی تک نہیں ہوگا: ایکسپرٹ

جس طرح کورونا کے نئے معاملوں کی تعداد میں کمی درج ہو رہی ہے اس سے یہ امید بنی ہے کہ ہندوستان میں کورونا کی دوسری لہر کا خاتمہ جلد ہو جائے گا لیکن وبائی بیماریوں کے ماہر شاہد جمیل کا کہنا ہے کہ بھلے ہی ابھی کچھ ریاستوں میں کورونا کے کیس کم ہوتے نظر آ رہے ہوں لیکن دوسری لہر کا ...

سادگی کے ساتھ عید منائیں اور چھوٹی جماعت کے ساتھ عید کی نماز ادا کریں ، سرکردہ مسلم رہنماوں کی مسلمانوں سے اپیل

آل انڈیا مسلم پرسنل لاء بورڈ کے صدر مولانا رابع حسنی ندوی ۔ جمعیت علماءہند کے صدر مولانا ارشد مدنی ۔ جماعت اسلامی ہند کے امیر سید سعادت اللہ حسینی سمیت دیگر سرکردہ علماء اور مسلم قائدین مسلمانوں نے اپیل کی ہے کہ وہ کرونا کے بڑھتے خطرات کے پیش نظر احتیاط کریں اور مختصر جماعت ...

لاک ڈاؤن پر ہو سختی سے عمل: اشوک گہلوت

راجستھان میں عالمی وبا کورونا کی دوسری لہر کی چین توڑنے کے لئے آج صبح 5بجے سے لے کر 24 مئی تک سخت لاک ڈاؤن نافذ ہوگیا ہے۔ اس مدت کے دوران، ہنگامی اور ضروری خدمات، میڈیکل، دودھ اور دیگر ضروری خدمات کے لئے رعایت رہے گی۔