ہانگ کانگ میں مظاہرہ پُر تشدد،29لوگ حراست میں

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 26th August 2019, 11:53 AM | عالمی خبریں |

ہانگ کانگ،26؍اگست(ایس او نیوز؍ایجنسی) ہانگ کانگ میں جمہوریت کے حامی مظاہرین اور پولیس کے درمیان ہوئی جھڑپوں کے بعد حکومت کے خلاف مظاہرے کرنے والے کم ازکم 29لوگوں کو گرفتار کرلیاگیا ۔ہفتہ وار اخبار ساؤتھ چائنا مارننگ پوسٹ نے اتوار کو اپنی ایک رپورٹ میں یہ اطلاع دی۔اخبار کے مطابق جمہوریت کے حامی مظاہرے اس وقت پُرتشدد ہوگئے جب مظاہرین نے ہفتے کو پولیس پر پٹرول بم پھینکے ۔مظاہرین نے کثیر آبادی والے کن ٹونگ صنعتی علاقے میں پولیس کے اوپر پٹرول بم اور اینٹیں پھینکیں۔مظاہرین کی وجہ سے ایم ٹی آر کے چار سب وے اسٹیشنوں کو بند کردیا گیاتھا۔پولیس نے مظاہرین کو تتربتر کرنے کے لئے آنسو گیس کے گولے چھوڑے ۔کچھ مظاہرین نے نگرانی کرنے کے لئے لگے ہوئے کیمروں کو نقصان پہنچانے کی کوششیں کیں۔دیگر مظاہرین نے سڑک راستوں کو روکنے کی کوشش کی۔یہ پہلی بار ہے جب پُرانب طریقے سے ہونے والے مظاہروں کے دوران آنسو گیس کا استعمال کیاگیا ہے ۔احتجاجی مظاہرے پُرامن طریقے سے شروع ہوا جہاں جمہوریت کے حامی مظاہرین نے لیمپ پوسٹ ہٹانے کامطالبہ کیا۔مظاہرین کے مطابق چینی افسران نے نگرانی کرنے کے لئے ان میں اعلی ٹیکنولوجی والے کیمرے اور چہرہ پہچاننے والے سافٹ ویئر لگائے ہوئے ہیں۔واضح رہے کہ یہ مظاہرے جون میں ایک حوالگی سے متعلق بل کو واپس لینے کے سلسلے میں شروع ہوئے تھے ،جس کے تحت ہانگ کانگ کے شہریوں کو مقدمے کے لئے چین بھیجا جاسکتا تھا۔فی الحال اس بل پر پابندی لگادی گئی ہے ۔

ایک نظر اس پر بھی