یلاپور ایم ایل اے ہیبار نے دیا بی جے پی کو شاک ؛ کیا ہیبّار کانگریس میں شامل ہوں گے ؟

Source: S.O. News Service | Published on 28th February 2024, 8:39 PM | ساحلی خبریں | ریاستی خبریں |

یلاپور 28 / فروری (ایس او نیوز) پچھلے کچھ دنوں سے یلاپور حلقہ کے ایم ایل اے شیو رام ہیبار کے تعلق سے افواہیں چل رہی تھیں کہ وہ بی جے پی سے واپس کانگریس میں لوٹنے کے لئے پر تول رہے ہیں ۔ اب شیورام ہیبار نے راجیہ سبھا کے لئے اراکین کے انتخاب کے موقع پر اسمبلی سے غیر حاضر رہتے ہوئے بی جے پی کو براہ راست شاک دے دیا ہے ۔
    
خیال رہے کہ اسمبلی سے راجیہ سبھا کو اراکین منتخب کرنے کا عمل کل جب اسمبلی میں پورا کیا گیا تو الیکشن کے وقت تمام اراکین اسمبلی میں موجود رہنے اور پارٹی کے امیدوار کو ووٹ دینے کی تاکیدی ہدایت بی جے پی کی طرف سے جاری کی  گئی تھی مگر بی جے پی کے رکن اسمبلی ایس ٹی سوم شیکھر نے پارٹی وہپ کی خلاف ورزی کرتے ہوئے کانگریسی امیدوار کو اپنا ووٹ دیا جبکہ شیو رام ہیبار نے اسمبلی سیشن سے غیر حاضر رہنے کو ترجیح دی ۔ اس طرح ان دونوں اراکین اسمبلی نے بی جے پی سے دور ہونے کے امکانات کا اشارہ کر دیا ۔
    
اسمبلی سے راجیہ سبھا کے لئے چار اراکین کو منتخب کرنا تھا جس میں کانگریس کے تین امیدوار پارٹی کی اسمبلی میں قوت کے بل پر جیت سے ہمکنار ہوئے ۔ کانگریسی خیمے سے ووٹ گھسیٹنے اور ووٹوں کے حساب و کتاب کو الٹ پلٹ کرنے کے لئے جنتا دل ایس نے بی جے پی کے ساتھ مل کر ایک چال چلی تھی اور اپنا پانچواں امیدوار میدان میں اتارا تھا ۔ لیکن یہ چالاکی کام نہیں آئی بلکہ الٹے بی جے پی کے خیمے میں ہی کانگریس نے دراڑیں ڈال دیں ۔
    
توقع کی جا رہی ہے کہ شیورام ہیبار اور ایس ٹی سوم شیکھر  لوک سبھا الیکشن کے موقع پر باضابطہ طور پر کانگریس میں شامل ہو جائیں گے ۔ شیورام ہیبار کے بارے میں سمجھا جا رہا ہے کہ خود انہیں یا ان کے بیٹے کو  کانگریس کی طرف سے کینرا حلقہ سے پارلیمانی الیکشن میں امیدوار بنائے جانے کے بھی امکانات ہیں۔ 
    
شیورام ہیبار کے لاپتہ ہونے کی شکایت :یلاپور پٹن پنچایت کے رکن سومیشور نائک نے یلاپور پولیس اسٹیشن میں شکایت درج کروائی ہے کہ منگل کے دن جب راجیہ سبھا الیکشن ہوا تو  اس دن صبح سے شیورام لاپتہ ہوگئے ہیں ۔ منگل کے دن صبح ان کا فون سوئچ آف چل رہا ہے اور کسی سے ان کا رابطہ نہیں ہو رہا ہے  اس لئے پولیس انہیں تلاش کرے ۔ 
    
سومیشور نائک نے اخباری نمائندوں سے بات کرتے ہوئے  کہا کہ بھارتیہ جنتا پارٹی کے نشان پر الیکشن جیتے ہوئے شیورام ہیبار کو اسمبلی میں راجیہ سبھا کے لئے پارٹی امیدوار کے حق میں ووٹ دینا چاہیے تھا ، لیکن انہوں نے اپنا ووٹ پارٹی امیدوار کے حق میں استعمال نہ کرتے ہوئے اپنے حلقے کے عوام سے دھوکا کیا ہے ۔

ایک نظر اس پر بھی

ماہی گیر تنظیموں کا متفقہ فیصلہ - کاسرکوڈ میں تجارتی بندرگاہ کے خلاف ہوگی قانونی جد و جہد

) شہر کے سینٹ جوزیف ہال میں ماہی گیر تنظیموں کی جوائنٹ ایکشن کمیٹی اور کراولی ماہی گیر مزدوروں کی تنظیم کا مشترکہ اجلاس منعقد ہوا جس میں کاسرکوڈ میں مجوزہ نجی تجارتی بندرگاہ کی تعمیر کے خلاف تنظیمی اور قانونی طریقے سے جد وجہد کرنے کا فیصلہ کیا گیا ۔

بھٹکل میں ووٹر بیداری مہم؛ سرکاری افسران نے طلبہ کے ساتھ نکالی ریلی؛ سو فیصد ووٹنگ کویقینی بنانے کی کوششیں

بھٹکل میں  صد فیصد ووٹنگ کا ٹارگٹ لے کر   اُترکنڑاضلعی انتظامیہ،  ضلع پنچایت، بھٹکل تعلقہ انتظامیہ اور تعلقہ پنچایت کے زیراہتمام  بھٹکل کے سرکاری آفسران  نے کالج طلبہ کو ساتھ لے کر  ووٹنگ بیداری مہم  کے تحت شاندار ریلی نکالی اور عوام پر زور دیا کہ وہ  کسی بھی صورت میں اپنی ...

بھٹکل میں مسلم رپورٹروں کی طرف سے غیر مسلم رپورٹروں کوپیش کی گئی عید الفطر کی مٹھائیاں

ورکنگ جرنلسٹ اسوسی ایشن   بھٹکل  کے مسلم رپورٹروں کی طرف سے بھٹکل کے غیر مسلم رپورٹروں کو عید الفطر کی مناسبت سے مٹھائیاں تقسیم کی گئیں اور اُنہیں عید کے تعلق سے  معلومات فراہم کی گئیں۔

بی جے پی نے کانگریس ایم ایل اے کو 50 کروڑ روپے کی پیشکش کی؛ سدارامیا کا الزام

کرناٹک کے وزیر اعلی سدارامیا نے ہفتہ کو بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) پر الزام لگایا کہ وہ کانگریس کے اراکین اسمبلی کو وفاداری تبدیل کرنے کے لیے 50 کروڑ روپے کی پیشکش کرکے 'آپریشن لوٹس' کے ذریعے انکی حکومت کو غیر مستحکم کرنے کی کوششوں میں ملوث ہے۔

لوک سبھا انتخاب 2024: کرناٹک میں کانگریس کو حاصل کرنے کے لیے بہت کچھ ہے

کیا بی جے پی اس مرتبہ اپنی 2019 لوک سبھا انتخاب والی کارکردگی دہرا سکتی ہے؟ لگتا تو نہیں ہے۔ اس کی دو بڑی وجوہات ہیں۔ اول، ریاست میں کانگریس کی حکومت ہے، اور دوئم بی جے پی اندرونی لڑائی سے نبرد آزما ہے۔ اس کے مقابلے میں کانگریس زیادہ متحد اور پرعزم نظر آ رہی ہے اور اسے بھروسہ ہے ...

تعلیمی میدان میں سرفہرست دکشن کنڑا اور اُڈپی ضلع کی کامیابی کا راز کیا ہے؟

ریاست میں جب پی یوسی اور ایس ایس ایل سی کے نتائج کا اعلان کیاجاتا ہے تو ساحلی اضلاع جیسےدکشن کنڑا  اور اُ ڈ پی ضلع سر فہرست ہوتے ہیں۔ کیا وجہ ہے کہ ساحلی ضلع جسے دانشوروں کا ضلع کہا جاتا ہے نے ریاست میں بہترین تعلیمی کارکردگی حاصل کی ہے۔

این ڈی اے کو نہیں ملے گی جیت، انڈیا بلاک کو واضح اکثریت حاصل ہوگی: وزیر اعلیٰ سدارمیا

کرناٹک کے وزیر اعلیٰ سدارمیا نے ہفتہ کے روز اپنے بیان میں کہا کہ لوک سبھا انتخاب میں این ڈی اے کو اکثریت نہیں ملنے والی اور بی جے پی کا ’ابکی بار 400 پار‘ نعرہ صرف سیاسی اسٹریٹجی ہے۔ میسور میں صحافیوں سے بات کرتے ہوئے سدارمیا نے یہ اظہار خیال کیا۔ ساتھ ہی انھوں نے کہا کہ ...