بریکنگ نیوز

ریاستی درجے کی بحالی جموں وکشمیر کا سب سے بڑا مسئلہ ہے،باہر کے لوگ یہاں سارے امور چلا رہے ہیں: راہل گاندھی

Source: S.O. News Service | Published on 24th January 2023, 11:10 AM | ملکی خبریں |

جموں ، 24؍جنوری(ایس او نیوز؍یواین آئی)کانگریس لیڈر راہل گاندھی کا کہنا ہے کہ ریاستی درجے کی بحالی جموں و کشمیر کا سب سے بڑا مسئلہ ہے اور کانگریس اس کی بحالی کیلئے تمام تر وسائل بروئے کار لائے گی-انہوں نے کہا کہ جموں وکشمیر میں بے روزگاری کی شرح سب سے زیادہ ہے -موصوف لیڈر نے ان باتوں کا اظہار پیر کے روز یہاں ستوری چوک میں لوگوں کے ایک ہجوم سے خطاب کے دوران کیا-انہوں نے کہاکہ کانگریس پارٹی آپ اور آپ کے ریاستی درجے کے مطالبے کو بھر پور سپورٹ کرے گی،ان کا کہنا تھا کہ کانگریس جموں کشمیر کے ریاستی کے درجے کی بحالی کیلئے تمام تر وسائل بروئے کار لائے گی-

ریاستی درجے جیسا کوئی بڑا مسئلہ نہیں ہے آپ کا حق چھینا گیا ہے،انہوں نے کہاکہ لوگوں نے مجھے بتایا کہ انتظامیہ ان کی طرف توجہ نہیں دیتی ہے باہر کے لوگ یہاں کے سارے امور چلا رہے ہیں جبکہ مقامی لوگ مجبور ہو کر دیکھ رہے ہیں -موصوف لیڈر نے کہا کہ ملک میں سب سے زیادہ بے روزگاری جموں وکشمیر میں ہے -نوجوان ڈاکٹر، انجینئر، وکیل بننا چاہتے ہیں کہ لیکن انہیں ایسا لگتا ہے کہ وہ ایسا نہیں کرسکیں گے - پہلے بے روزگاری کو دور کرنے کا ایک ذریعہ تھا اور وہ فوج کے ساتھ تھا لیکن اب اس کو بھی اگنی ویر اسکیم کے ذریعے بند کر دیا گیا ہے -

کشمیری پنڈتوں کے بارے میں راہل گاندھی نے کہاکہ موجودہ ایل جی انتظامیہ اُن کے مسائل حل کرنے میں پوری طرح سے ناکام ثابت ہو گئی ہے -ایل جی منوج سنہا کو کشمیری پنڈتوں سے معافی مانگنی چاہئے کیونکہ جموں وکشمیر کے لوگوں کی جان و مال کا تحفظ حکومت کوکرنا ہے تاہم وہ اس میں ناکام ثابت ہوئے ہیں -اُن کے مطابق پچھلے چھ ماہ سے کشمیری پنڈت مسلسل احتجاج پر بیٹھے ہوئے لیکن حکومت اُن کی اور کوئی توجہ مبذول نہیں کر رہی جو حیران کن ہے -کشمیری پنڈتوں کے ساتھ نا انصافی ہو رہی ہے -

انہوں نے ایل جی منوج سنہا سے مخاطب ہوتے ہوئے کہاکہ کشمیری پنڈت اپنا حق مانگ رہے ہیں جو اُن کو ملنا ہی چاہئے -کانگریس لیڈر نے مزید کہاکہ جموں وکشمیر کے موجودہ حالات سب کے سامنے عیاں ہیں یہاں لوگوں کو طرح طرح کی مشکلات کا سامنا ہے -جموں وکشمیر میں ملک میں واحد ریاست ہے جہاں بے روزگاری کی شرح کافی زیادہ ہے -اُن کے مطابق موجودہ انتظامیہ بے روزگارتعلیم یافتہ نوجوان کو نوکریاں اور روزگار فراہم کرنے میں فی الحال ناکام ثابت ہو گئی ہے -راہل گاندھی نے مزید بتایا کہ یو پی اے کے دور میں جموں وکشمیر کی اور خصوصی توجہ دی گئی لیکن موجودہ انتظامیہ لوگوں کی فلاح و بہبودی کے حوالے سے کچھ نہیں کرپا رہی ہے کیونکہ یہاں کے سبھی امور باہر کے لوگ چلا رہے ہیں -

ایک نظر اس پر بھی

گھرسے ماں اور  اس کے دوبچوں کی جلی ہوئی نعشیں برآمد : بیوی ، بیٹا اور بیٹی ہلاک

ریاست تمل ناڈو کے کُنّم کولم کے پنّیتا ڈمنلی میں ماں اور اس کے دو بچوں کی  گھر میں نعشیں پائی گئیں ۔ صبح سویرے  نعشیں جلی ہوئی  حالت میں پتہ چلیں۔ مہلوکین کی شناخت حارث کی بیوی شفینہ ، تین سالہ اجوہ اور ڈیڑھ سالہ امن کے طورپر کی گئی ہے۔ واقعے کے وقت گھر میں صرف حارث کی ماں ہونے کی ...

دہلی میں بی بی سی دفتر کے سامنے ہندو سینا کا احتجاج

ہندوسینا کارکنوں نے نئی دہلی میں کستورباگاندھی مارگ پر واقع بی بی سی دفتر کے سامنے پلے کارڈس رکھے۔ وہ 2002ء کے گجرات فسادات پر بی بی سی سیریز کے خلاف احتجاج کررہے تھے۔بی بی سی کا صدر دفتر برطانیہ میں ہے۔

بینک ملازمین کی 30 اور 31 جنوری کی ہڑتال ملتوی

 یونائیٹڈ فورم آف بینک یونینز (یو ایف بی یو) نے ممبئی میں ہونے والی مفاہمت کی میٹنگ میں طے پانے والے معاہدے کے بعد 30 اور31 جنوری کو ہونے والی دو روزہ ملک گیر بینک ہڑتال کو ملتوی کر دیا ہے۔

کانگریس کے سینئر رہنما  رندیپ سنگھ سرجے والا کا بی جے پی پر حملہ، کہا؛ ملک میں نہ نفرت چلے گی نہ تقسیم

کانگریس کے سینئر رہنما  رندیپ سنگھ سرجے والا نے کہا کہ وزیر اعظم مودی اپنے دل  کے چور کو دیکھیں، تب انہیں پتہ چلے گا کہ ملک میں نفرت کون پھیلا رہا ہے اور  ملک کو تقسیم کون کر رہا ہے۔

بھارت جوڑو یاترا اپنے آخری پڑاؤ پر،پلوامہ پہنچ گئی

بھارت جوڑو یاترا  جو کشمیر میں اپنے آخری پڑائو میں پلوامہ پہنچ گئی ہے سنیچر کو دوبارہ شروع ہوئی۔ کانگریس کے رکن پارلیمنٹ راہل گاندھی نے اونتی پورہ سے  یاترا کا آغاز کیا۔ اس دوران پی ڈی پی سربراہ محبوبہ مفتی  اور پرینکا گاندھی بھی یاترا میں شامل  ہوئیں۔ یاترا کے دوران راہل ...