ووٹر لسٹ سے نام بغیر نوٹس کے ہٹادینا غیر قانونی جو بھی لسٹوں سے نام غائب کرنے کے ذمہ دار ہیں ان پر کارروائی کی جائے: سدارامیا

Source: S.O. News Service | Published on 26th November 2022, 12:25 PM | ریاستی خبریں |

بنگلورو، 26؍نومبر (ایس او  نیوز)سابق وزیر اعلیٰ اور ریاستی اسمبلی کے اپوزیشن لیڈر سدارامیا نے کہا ہے کہ بنگلورو کے ووٹر لسٹوں سے لاکھوں کی تعداد میں نام بغیر نوٹس دئیے نکال دئیے گئے ہیں، اس لئے الیکشن کمیشن کی طرف سے جو ڈرافٹ ووٹر لسٹ جاری کی گئی ہے، اسے فوری طور پر منسوخ کر دیا جائے اور ووٹر لسٹوں سے ناموں کو ہٹانے کے معاملہ میں شامل این جی او کے ساتھ ساتھ اس کو بڑھاوا دینے والے وزیر اعلیٰ اور دیگر وزراء کے خلاف قانونی کارروائی کی جائے۔

اپنے ایک اخباری بیان میں انہوں نے کہا کہ چیلومے نامی این جی او کو ووٹر لسٹوں پر نظر ثانی کی ذمہ داری دینے کے پیچھے بی بی ایم پی اور ریاستی لیکشن کمیشن کے افسر بھی شامل ہیں۔ الیکشن کمیشن کو اس کی اطلاع پہلے ہی سے تھی اور اس کی طرف سے بی بی ایم پی کو ایک مکتوب بھی روانہ کیا گیا۔کمیشن کی تنبیہ کے باوجود بھی چیلومے کو کام جاری رکھنے کا موقع فراہم کیاگیا۔ انہوں نے کہا کہ ووٹر لسٹوں پر نظر ثانی کے کام کے لئے ایک ایک نوجوان کو 25 تا30ہزار روپے کی تنخواہ پر مقرر کیا گیا۔ اس کے لئے فنڈس کہاں سے آئے، اس کی جانچ ہونی چاہئے۔ اس بات کی جانچ بھی ہونی چاہئے کہ ہزاروں نوجوانوں کو اچھی تنخواہ پر رکھ کر ووٹر لسٹوں میں چھیڑ چھاڑ کسے فائدہ پہنچانے کے لئے کروائی گئی اور اس کمپنی کو کس ذریعہ سے پیسے ادا کئے گئے اور کیوں؟۔

انہوں نے کہا کہ ووٹر لسٹوں میں نام حذف کرنے کا اتنا بڑا گھپلہ بے نقاب ہونے کے باوجود اب تک بی بی ایم پی کے کسی بڑے افسر کے خلاف کارروائی کا نہ ہونا اس بات کا ثبوت ہے کہ اس معاملہ میں شامل وزیر اعلیٰ، وزراء اور اوراراکین اسمبلی و کونسل کو بچانے کی کوشش کی جا رہی ہے۔ سارے معاملہ میں ان بے روزگار نوجوانوں کو نشانہ بنایا جا رہا ہے جو تنخواہ کے عوض میدان میں اتر کر کام کر رہے تھے۔ یہ خبر ملی تھی کہ چیلومے کے دفتر میں ایک وزیر کے لیٹر ہیڈ برآمد کئے گئے تو پھر اب تک اس پر کوئی کارروائی کیوں نہیں کی گئی۔ سدارامیا نے کہا کہ کسی طرح کے فارم داخل کئے بغیر ووٹر لسٹ میں ناموں کا اندراج اور اخراج ممکن ہی نہیں ہے، ایسے میں بغیر فارم کے کس کے کہنے پر ووٹر لسٹوں میں ناموں کی شمولیت اور اخراج کیا گیا،اس کی حقیقت سامنے لانے کی ضرورت ہے۔ سدارامیا نے کہا کہ الیکشن کمیشن کی یہ ذمہ داری ہے کہ جو دھاندلی ہوئی، اس کے بارے میں حقائق عوام کے سامنے لایاجائے۔ جن جن لوگوں نے ووٹر لسٹوں میں چھیڑ چھاڑ کی ہے،ا ن کی نشاندہی ہو چکی ہے، اب ان کو جیل بھیجنے کا کام ہو نا چاہئے۔

ایک نظر اس پر بھی

پاکستان زندہ با د نعرہ کا معاملہ؛ بی جے پی شکست کی مایوسی میں توڑ مروڑ کر پیش کر رہی ہے: ڈی کے شیو کمار

ریاستی نائب وزیر اعلیٰ ڈی کے شیو کمار نے کہا کہ ودھان سودھا میں کسی نے پاکستان زندہ باد کا نعرہ نہیں لگایا۔ اگر وہ پاکستان کی حمایت میں نعرہ بازی کرتے ہوئے چیختے ہیں تو پولیس انہیں لات مار کر اندر ڈال دے گی۔

سائنسی طور پر تصدیق ہوئی تو مجرم کے خلاف قانونی کارروائی کی جائے گی، پاکستان ، یانصیرصاب زندہ باد: ایف ایس ایل سے تحقیق: پرمیشور

ریاستی وزیر داخلہ جی پرمیشور نے کہا کہ ودھان سودھا میں پاکستان زندہ بعد نعرہ بازی کے معاملہ میں پولیس نے از خود شکایت درج کرتے ہوئے کارروائی کی ہے۔ایف ایس ایل کی جانب سے سائنسی بنیاد پر تفتیش کی جارہی ہے۔

ملک کے نازک حالات میں مسلمان پاکستان زندہ کا نعرہ لگانے کی جرأت نہیں کرسکتا!یہ سب گودی میڈیا کی کارستانی ہے،دونوں ایوانوں میں ہنگامے

راجیہ سبھا انتخاب کا نتیجہ ظاہر ہونے کے بعد و دھان سودھا کے لاؤنج میں راجیہ سبھا کے لئے منتخب ہونے والے کانگریس امیدوار ڈاکٹر سید نصیر حسین کے حامیوں نے جشن منایا۔

یلاپور ایم ایل اے ہیبار نے دیا بی جے پی کو شاک ؛ کیا ہیبّار کانگریس میں شامل ہوں گے ؟

پچھلے کچھ دنوں سے یلاپور حلقہ کے ایم ایل اے شیو رام ہیبار کے تعلق سے افواہیں چل رہی تھیں کہ وہ بی جے پی سے واپس کانگریس میں لوٹنے کے لئے پر تول رہے ہیں ۔ اب شیورام ہیبار نے راجیہ سبھا کے لئے اراکین کے انتخاب کے موقع پر اسمبلی سے غیر حاضر رہتے ہوئے بی جے پی کو براہ راست شاک دے دیا ہے ...

ٹمکور ومیں سرجری کے بعد تین خواتین کی موت کا معاملہ ۔ گائنا کالوجسٹ سمیت تین افراد ملازمت سے برطرف

علاج میں کو تاہی کی پاداش میں محکمہ صحت کی کارروائی بروز منگل ایک گائنا کالوجسٹ اور عملے کے دو ارکان کو پاؤ گڑھ ٹاؤن کے ماں اور بچے کے اسپتال میں زیر علاج تین زچہ خواتین کی موت کے معاملہ میں ملازمت سے برخاست کرنے کا حکم دیا گیا۔