یو پی ایس سی 2023 سول سروسیز امتحانات کے نتائج کا اعلان، 1016 امیدواروں میں 51 مسلم کامیاب ، ٹاپ 10 میں جامعہ ملیہ کی نوشین کا نام شامل

Source: S.O. News Service | Published on 17th April 2024, 11:13 AM | ملکی خبریں |

نئی دہلی، 17/اپریل (ایس او نیوز /ایجنسی) یو پی ایس سی نے سول سروسیز امتحانات 2023کے نتائج کا اعلان کردیا ہےجس میں51مسلم امیدوار کامیاب ہوئے ہیں۔ حیرت انگیز طور پر اس سال یوپی ایس سی امتحان میں مسلم امیدواروں کی کامیابی کے فیصد میں بھی اضافہ ہوا ہے۔ کل ملاکر ایک ہزار16 امیدوار کامیاب رہے ہیں جن میں سے51 امیدوار مسلم ہیں یعنی کامیابی کا فیصد 5 رہا ہے جو گزشتہ کچھ برس کے مقابلے میں کافی بہتر ہے۔ اس سے قبل2019میں 3.5  فیصد مسلم امیدوار سول سروسیز امتحان میں کامیاب ہوئے تھے۔ 

 واضح رہے کہ یوپی ایس سی کا تحریری امتحان ستمبر 2023 میں جبکہ انٹرویو جنوری تا اپریل 2024 منعقد کئے گئے تھے۔ امسال آدتیہ سریواستو نے پہلی پوزیشن حاصل کی ہے جبکہ دوسرے اور تیسرے نمبر پر بالترتیب انیمیش پردھان اور اننیا ریڈی ہیں۔ ٹاپ 5  میں ایک مسلم امیدوار بنام روحانی بھی شامل ہیں جبکہ ٹاپ 10میں روحانی سمیت نوشین (۹؍ واں رینک) بھی ہیں۔ ٹاپ ۱۰۰؍ میں ۶؍ مسلم امیدوار ہیں۔ نوشین نےجنہوں نے نویں پوزیشن حاصل کی ہے، گورکھپور کی رہنے والی ہیں۔ انہوں نے دہلی یونیورسٹی سے گریجویشن کیا ہے۔ اس کے بعد نوشین نے جامعہ ملیہ اسلامیہ سے سوشل ورک میں پوسٹ گریجویشن کیا۔ پوسٹ گریجویشن کے بعد انہوں نے سول سروسیز کی تیاری کا فیصلہ کیا اور اس کے لئے جامعہ اکیڈمی میں داخلہ لیا۔ اپنی کامیابی پر خوشی کا اظہار کرتے ہوئے نوشین نے کہا کہ وہ بہت خوش ہیں، انہیں ایسے ہی رینک کی امید تھی۔ جامعہ کی رہائشی کوچنگ اکیڈمی نے ان کی کامیابی میں اہم کردار ادا کیا ہے۔ یوپی ایس سی میں نوشین کے علاوہ وردا خان (۱۸؍ واں رینک)، ضوفشاں حق(۳۴؍ واں رینک)، فابی رشید(۷۱؍ واں رینک)، منان بھٹ(۸۸)، عارفہ عثمانی (۱۱۱)، سید عدیل محسن (۱۵۷)، خان صائمہ سراج احمد(۱۶۵)، صائم رضا (۱۸۸)، جمعدار فرحان عرفان (۱۹۱)، فرحین زاہد(۲۴۱)، اریبہ صغیر(۲۵۳)، اہتدیٰ مفسر(۲۷۸)، نازیہ عمر انصاری (۳۱۱) سیدمحمد مصطفیٰ ہاشمی (۳۱۲)، حامد نوید(۳۲۳)، اریبہ نعمان (۳۳۹)، محمد حارث میر (۳۴۵)، محمد فرحان (۳۶۹)، محمد آفتاب عالم (۵۱۲) اور سیرت باجی (۵۱۶) نے رینک حاصل کئے ہیں۔ اس فہرست میں ان کے علاوہ بھی کچھ نام ہیں۔ 

دوسری طرف ان امتحانات کے نتائج سے یہ بات بھی سامنے آئی ہے کہ دہلی میں واقع جامعہ ملیہ اسلامیہ رہائشی کوچنگ اکیڈمی کے 31طلبہ نے اس مرتبہ یو پی ایس سی امتحان میں کامیابی حاصل کی ہے۔ واضح رہے کہ جامعہ اکیڈمی نے گزشتہ برسوں میں بھی یو پی ایس سی میں اچھے نتائج د ئیے ہیں۔ شروتی شرما نے اسی اکیڈمی میں تعلیم حاصل کی تھی جنہوں نے2021کےسول سروسیز امتحان میں ٹاپ کیا تھا۔ رواں سال جامعہ اکیڈمی کے 151طلبہ نے یو پی ایس سی امتحان میں شرکت کی۔ ان میں سے ۷۱؍ امیدوار انٹرویو تک پہنچے اور ان میں سے 31 کا انتخاب کیا گیا۔

ایک نظر اس پر بھی

انتخابات کے اعدادوشمار پر سپریم کورٹ نے الیکشن کمیشن کو جاری کیا نوٹس

ملک بھر میں انتخابی ماحول ہے۔ لوک سبھا انتخابات کے چار مراحل مکمل ہو چکے ہیں۔ اب انتخابات کا پانچواں مرحلہ 20 مئی کو ہونا ہے۔ دریں اثنا، سپریم کورٹ میں ایک درخواست دائر کی گئی جس میں پولنگ اسٹیشنوں پر ریکارڈ شدہ ووٹوں کے اکاؤنٹ کو فوری طور پر اپ لوڈ کرنے کی ہدایت کی مانگ گئی ہے۔

لوک سبھا انتخابات: انتخابی مہم کا پانچواں دور آج شام ختم ہوگا، 20 مئی کو 8 ریاستوں کی 49 سیٹوں پر ووٹنگ

  لوک سبھا انتخابات کے پانچویں دور کی انتخابی مہم آج شام ختم ہو جائے گی۔ 20 مئی کو ہونے والی ووٹنگ کے دوران 6 ریاستوں اتر پردیش، بہار، مغربی بنگال، مہاراشٹر، اڈیشہ، جھارکھنڈ اور دو مرکز کے زیر انتظام علاقوں جموں کشمیر اور لداخ کی کل 49 نشستوں پر ووٹ ڈالے جا رہے ہیں۔

کنہیا کمار پر حملہ بی جے پی کی مایوسی کا نتیجہ: کانگریس

  کانگریس نے پارٹی کے شمال مشرقی دہلی کے لوک سبھا امیدوار کنہیا کمار پر حملے کی مذمت کرتے ہوئے اسے بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کی بزدلانہ حرکت اور انتخابات میں شکست پر مایوسی قرار دیا اور کہا کہ ملک کی سب سے پرانی جماعت پر اس طرح کی حرکتوں کاکوئی اثر ہونے والا نہیں ہے۔

اروند کیجریوال کی گرفتاری کو چیلنج کرنے والی عرضداشت پر سپریم کورٹ نے فیصلہ محفوظ رکھا

سپریم کورٹ نے جمعہ (17 مئی) کو دہلی کے وزیر اعلی اروند کیجریوال کی ای ڈی کے ذریعے آبکاری پالیسی کے تحت گرفتاری کو چیلنج کرنے والی عرضداشت پر اپنا فیصلہ محفوظ رکھ لیا ہے۔ جسٹس سنجیو کھنہ اور جسٹس دیپانکر دتّہ کی بنچ نے فیصلہ محفوظ کرتے ہوئے اروند کیجریوال کو ضمانت کے لیے نچلی ...

دہلی میں بڑھتی آلودگی کی ذمہ دار مودی حکومت ہے، کانگریس کا سنگین الزام

دہلی میں بڑھتی آلودگی کے لیے کانگریس نے مرکز کی مودی حکومت کو ذمہ دارٹھہریا ہے۔ کانگریس کے جنرل سکریٹری جے رام رمیش نے آج (17 مئی) کو ایک پریس کانفرنس میں کہا ہے کہ معیار کو نظر انداز کرتے ہوئے دہلی میں تقریباً ایک درجن بجلی گھروں میں کوئلہ استعمال کیا جا رہا ہے اور مرکز کی ...

بی جے پی محکمہ پولیس میں بھی اگنی ویر اسکیم لانے کی تیاری کر رہی ہے، تیجسوی یادو کا بڑا دعویٰ

بہار کے سابق نائب وزیر اعلی تیجسوی یادو نے مرکز کی اگنی ویر اسکیم کے تعلق سے ایک بڑا دعویٰ کیا ہے۔ انہوں نے کہا ہے کہ مرکز کی بی جے پی حکومت محکمہ پولیس میں بھی فوج کی طرح اگنی ویر اسکیم لانے کی تیاری کر رہی ہے۔ ملک بھر کے نوجوانوں کا سب سے بڑا مسئلہ اگنی ویر اسکیم ہے۔ ہم نے حکام ...