بھٹکل میں گیریج کا شٹر توڑ کرانجام دی گئی ڈکیتی - نقدی اورموبائل پر چوروں نے کیا ہاتھ صاف

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 3rd December 2023, 4:32 PM | ساحلی خبریں |

بھٹکل 3 / دسمبر (ایس او نیوز) نیشنل ہائی وے 66 پرواقع شیوانندا گیریج میں ڈکیتی کی واردات انجام دی گئی ہے جس میں نقاب پوش چوروں نے ایک لاکھ چالیس ہزار روپے نقد اور موبائل فون پر ہاتھ صاف کردیا ہے۔

بھٹکل ٹاون پولیس تھانے میں  درج کی گئی شکایت کے مطابق منکولی کے شنکر نائک کی ملکیت والے گیریج میں  رات کے وقت شٹر کا تالا توڑ کر اندر داخل ہونے والے دو نقاب پوش چوروں نے یہ واردات انجام دی ہے اور یہ پوری کارستانی سی سی  ٹی وی کیمرے میں قید ہوئی ہے۔

بتایا جاتا ہے کہ دونوں میں سے ایک چور نے اپنے چہرے پر پلاسٹک سے بنا نقلی چہرے کا ماسک استعمال کیا تھا جبکہ دوسرے نے کالا نقاب چڑھایا تھا۔

صبح کے وقت گیریج کھولنے کے لئے پہنچنے پر مالک کو اس واردات کا پتہ چلا اور پولیس کو خبر دی گئی ۔ پولیس ٹیم نے جائے واردات پر پہنچ کر معائنہ کیا اور شکایت درج کرلینے کے ساتھ  دوپہر کے وقت ڈاگ اسکواڈ کو بھی طلب کرکے جانچ کی کارروائی شروع کی گئی ہے ۔ 

ایک نظر اس پر بھی

کاروار کے سمندر میں لگا ہوا 'رڈار' بھی چوروں کے ہاتھ سے بچ نہ سکا !

زمین پر سے قیمتی مشینیں چرانے والوں نے اب سمندر میں اپنے ہاتھ کی صفائی دکھانا شروع کیا ہے جس کی تازہ ترین مثال ماحولیاتی تبدیلیوں کے سگنل فراہم کرنے کے لئے کاروار کے علاقے میں بحیرہ عرب میں لگائے گئے 'رڈار' کی چوری ہے ۔

کمٹہ کے سمندر میں چینی جہاز کا معاملہ - کوسٹ گارڈ نے کہا : ہندوستانی حدود کی خلاف ورزی نہیں ہوئی

دو دن قبل کمٹہ کے قریب ہندوستانی سمندری سرحد میں چینی جہاز کی موجودگی اور اس سے ساحلی سیکیوریٹی کو درپیش خطرے کے تعلق سے جو خبریں عام ہوئی تھیں اس پر کوسٹ گارڈ نے بتایا ہے کہ یہ ایک جھوٹی خبر تھی اور چینی جہاز ہندوستانی سرحد میں داخل نہیں ہوا تھا ۔

ہوناور کاسرکوڈ میں ماہی گیروں پر زیادتیوں کے خلاف حقوق انسانی کمیشن سے کی گئی شکایت

ہوناور کے کاسرکوڈ ٹونکا میں مجوزہ تجارتی بندرگاہ کی تعمیر کے خلاف احتجاج کرنے والے مقامی ماہی گیروں  پر پولیس کی طرف سے لاٹھی، خواتین سمیت کئی لوگوں کی گرفتاریاں ، جھوٹے مقدمات کی شکل میں جو زیادتیاں ہوئی تھیں، اس کے تعلق سے حقوق انسانی کمیشن سے شکایت کی گئی ہے ۔

بھٹکل میں 'ریت مافیا' کا دربار - تعلقہ انتظامیہ خاموش - عوام بے بس اور لاچار

بھٹکل میں تعلقہ انتظامیہ کی خاموشی کی وجہ سے تعلقہ کے گورٹے، بیلکے، جالی، مُنڈلی نستار، بئیلور جیسے علاقوں میں ساحل سے ریت جیسی سمندری دولت لوٹنے کا کام 'ریت مافیا' کی طرف سے بلا روک ٹوک جاری ہے اور مقامی عوام پریشانی اور بے بسی و لاچاری سے یہ سب دیکھنے پر مجبور ہوگئے ہیں ۔