گنیش پوجا کے ساتھ ساورکر کی تصویر گنیش کی مورتی کے ساتھ رکھ کر کیا ہندوتوا گروپ فرقہ وارانہ آگ سے کھیلنا چاہتے ہیں ؟

Source: S.O. News Service | Published on 29th August 2022, 1:50 PM | ریاستی خبریں |

بنگلورو،29؍اگست (ایس او نیوز؍ایجنسی)  کرناٹک میں برسراقتدار بی جے پی اور ہندوتوا طاقتیں ساورکر کو ہیرو بنا کر فرقہ وارانہ آگ  سے کھیلنے کی تیاریوں میں نظر آرہی ہیں ،  حالانکہ  حکومت کو اس بات کا علم ہے کہ  ریاست میں اس مسئلہ نے فرقہ وارانہ موڑ لے لیا تھا اور چھرا گھونپنے کے  واقعات بھی  پیش آئے تھے۔

انڈین ایکسپریس  میں شائع  رپورٹ کی مانیں تو  ہندوتوا گروپس نے اِس بار گنیش اتسو کے دوران ساورکر کی تصویر گنیش کی مورتی کے ساتھ رکھنے کا فیصلہ کیا ہے۔ اس بات کو لے کر حکام پریشان ہیں اور انہیں ڈر ہے کہ کہیں نظم و ضبط کا مسئلہ نہ پیدا ہوجائے۔

اپوزیشن لیڈر سدارامیا نے بی جے پی سے سوال کیا  ہے کہ وہ ٹیپو سلطان کو مجاہد آزادی  کیوں نہیں مانتے اور ویر ساورکر کی تشہیر  پر کیوں  زور دے رہے ہیں ؟ کرناٹک کانگریس کے صدر ڈی کے شیوکمار نے بھی  سوال  اُٹھایا ہے کہ  "ویر ساورکر اور بھگوان گنیش کے درمیان کیا تعلق ہے؟"

کہا جارہا ہے کہ ساورکر ، جس  پر  مہاتماگاندھی کے قتل     کا الزام تھا، اسے اب ہیرو بنانے  بی جے پی  اور  ہندوتوا طاقتیں  اپنا پورا زور ا لگارہی ہیں  ۔ عوام کا کہنا ہے کہ  عام آدمی کے لئے کچھ نہ کرنے والی بی جے پی، آج  مذہب اور سیاست کی بات کررہی ہے۔

بتاتے چلیں کہ  15 اگست کو  75ویں یوم آزادی کی تقریبات کے موقع پر  حکمران بی جے پی  نے تمام مسلم مجاہد آزادی کے ناموں کو ہٹاکر ویرساورکر کی تشہیر میں لگ گئی تھی،  یہاں تک کہ  حکومت کی طرف سے جاری کئے گئے اخباری اشتہار اور حکومت کی جانب سے جاری کئے گئے پوسٹر سے ملک کے پہلے وزیراعظم جواہر لال نہرو کی تصویر  کو بھی ہٹایا گیا  اور پہلی بار   ویر ساورکر کی تصویر لگادی گئی تھی جس نے ملک بھر میں توجہ حاصل کی تھی۔

ایک نظر اس پر بھی

بجٹ 2023: ’کوئی امید نہیں، بجٹ ایک بار پھر ادھورے وعدوں سے بھرا ہوگا‘، سدارمیا کا اظہارِ خیال

یکم فروری کو مرکز کی مودی حکومت رواں مدت کار کا آخری مکمل بجٹ پیش کرنے والی ہے۔ مرکزی وزیر مالیات نرملا سیتارمن کے ذریعہ بجٹ پیش کیے جانے سے قبل بجٹ 2023 کو لے کر کانگریس کے کچھ لیڈران نے اپنے خیالات ظاہر کیے ہیں۔

کرناٹک ہائی کورٹ کی وارننگ، کہا: چیف سکریٹری دو ہفتوں میں لاگو کرائیں حکم

کرناٹک ہائی کورٹ نے منگل کو انتباہ دیا کہ اگر ریاستی حکومت دو ہفتوں کے اندر سبھی گاؤں اور قصبوں میں قبرستان کے لئے زمین فراہم کرانے کے اس کے حکم پر عمل درآمد کرنے میں ناکام رہتی ہے تو وہ چیف سکریٹری کے خلاف توہین عدالت کی کارروائی شروع کرنے پر مجبور ہوجائے گا ۔

منگلورو: محمد فاضل قتل میں ہندوتوا عناصر ملوث ہونے کا دعویٰ - اپوزیشن پارٹیوں نےکیا کیس کی دوبارہ جانچ کامطالبہ 

بی جے پی یووا مورچہ لیڈر پروین نیٹارو قتل کے بدلے میں عناصر کی طرف سے سورتکل میں محمد فاضل کو قتل کرنے کا کھلے عام دعویٰ کرنے والے وی ایچ پی اور بجرنگ دل لیڈر شرن پمپ ویل کے خلاف کانگریس ، جے ڈی ایس اور ایس ڈی پی آئی جیسی اپوزیشن پارٹیوں نے اس قتل کیس کی ازسر نو جانچ کا مطالبہ کیا ...

ٹمکورو میں اشتعال انگیز بیان دینے والے شرن پمپ ویل سمیت دیگر ہندوتوا لیڈروں کے خلاف قانونی کارروائی کا مطالبہ لے کر اے پی سی آر نے ایس پی کو دیا میمورنڈم

حال ہی میں ریاست کرناٹک کے  ٹمکور میں  منعقدہ شوریہ یاترا کے دوران وی ایچ پی لیڈر شرن پمپ ویل نے جو متنازع اور اشتعال انگیز بیان دیا  تھا ، اس پر کٹھن کارروائی کرتے ہوئے اسے گرفتارکرنے کا مطالبہ لے کر  ایسوسی ایشن فار پروٹیکشن آف سوِل رائٹس (اے پی سی آر) کے  ایک وفد نے ٹمکورو ...