راہل گاندھی کے خلاف عرضی دائر کرنے والے وکیل کو جسٹس گوائی کی پھٹکار

Source: S.O. News Service | Published on 10th July 2024, 5:07 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی، 10/جولائی (ایس او نیوز /ایجنسی) کانگریس لیڈر راہل گاندھی کی لوک سبھا رکنیت کی بحالی کو چیلنج کرتے ہوئے عرضی داخل کرنے والے لکھنؤ کے وکیل اشوک پانڈے کو سپریم کورٹ نے سخت پھٹکار لگائی ہے۔ عدالت عظمیٰ نے ان پر عائد جرمانہ واپس لینے سے بھی انکار کر دیا ہے۔ سپریم کورٹ کے جسٹس بی آر گوائی نے وکیل اشوک پانڈے کی سرزنش کی اور انہیں کمرہ عدالت سے باہر جانے کو بھی کہا۔ جسٹس کو وکیل کو یہاں تک دھمکی دینی پڑی کہ اگر وہ باہر نہیں گئے تو انہیں مارشل کے ذریعے باہر نکالا جائے گا۔

خیال رہے کہ سپریم کورٹ نے وکیل پانڈے کی درخواست کو مسترد کرتے ہوئے ان پر ایک لاکھ روپے کا جرمانہ عائد کیا تھا۔ اس کے بعد انہوں نے دوبارہ عدالت سے رجوع کیا اور جرمانہ واپس لینے کی درخواست کی۔ سپریم کورٹ میں منگل (9 جولائی) کو اس معاملے کی سماعت ہوئی۔ اس دوران جسٹس گوائی نے نہ صرف جرمانہ واپس لینے سے انکار کر دیا بلکہ وکیل اشوک پانڈے کو سخت پھٹکار بھی لگائی۔

سماعت کے دوران کمرہ عدالت کا ماحول اتنا کشیدہ ہو گیا کہ جسٹس نے وکیل کو تنبیہ بھی کر دی۔ جب وکیل اشوک پانڈے اپنے دلائل پیش کر رہے تھے تو جسٹس گوائی ناراض ہو گئے۔ انہوں نے کہا، ’’اگر آپ نے ایک لفظ بھی کہا تو ہم آپ کے خلاف توہین عدالت کا مقدمہ درج کریں گے۔ آپ کو اتنی درخواستیں دائر کرنے سے پہلے 100 بار سوچنا چاہیے تھا۔‘‘

جسٹس گوائی نے وکیل اشوک پانڈے سے پوچھا کہ آپ نے اب تک کتنی درخواستیں دائر کی ہیں اور عدالت نے آپ پر کتنا جرمانہ عائد کیا ہے۔ جج کے سوال کے جواب میں وکیل پانڈے نے کہا، "میں نے 200 پی آئی ایل دائر کی ہیں۔ مجھے آئینی بنچ کے فیصلے پر بھروسہ ہے۔ براہ کرم جرمانہ واپس لے لیں۔‘‘

یہ سنتے ہی جسٹس گوائی برہم ہو گئے۔ انہوں نے کہا، ’’اگر آپ پوڈیم نہیں چھوڑیں گے تو آپ کو شرمندہ ہونا پڑے گا۔ آپ توہین عدالت کا نوٹس قبول کر رہے ہیں یا کمرہ عدالت سے نکل رہے ہیں؟‘‘ اس کے بعد بھی جب وکیل اشوک پانڈے کمرہ عدالت سے باہر جانے کو تیار نہیں ہوئے تو جسٹس بہت ناراض ہو گئے۔ انہوں نے کہا، ’’آپ جاتے ہیں یا پھر میں کورٹ مارشل کر بلاؤں!‘‘ تاہم وکیل عدالت سے جرمانہ واپس لینے کی اپیل کرتے رہے۔

دراصل، اس سال جنوری کے مہینے میں سپریم کورٹ نے راہل گاندھی کی لوک سبھا رکنیت کی بحالی کو چیلنج کرنے والی عرضی کو مسترد کر دیا تھا۔ اس کے ساتھ ہی عدالت نے درخواست گزار اشوک پانڈے پر ایک لاکھ روپے کا جرمانہ بھی عائد کیا تھا۔ اس کیس کی سماعت کرتے ہوئے جسٹس بی آر گوائی اور جسٹس سندیپ مہتا کی بنچ نے کہا تھا کہ یہ عرضی قانون کے عمل کا غلط استعمال ہے۔ رکنیت کی بحالی کو چیلنج کرنے والی پانڈے کی درخواست پر سماعت کرتے ہوئے عدالت نے ان کے ارادوں پر بھی سوالات اٹھائے تھے۔

ایک نظر اس پر بھی

کووڈ میں شرح اموات ظاہر کرنے والی رپورٹس غیر مصدقہ اور گمراہ کن

صحت اور خاندانی بہبود کی مرکزی وزارت نے کہا ہے کہ سائنس جریدے سائنس ایڈوانسز میں شائع مطالعہ سے کووڈ کی مدت کے دوران 2020 میں سب سے زیادہ اموات کو ظاہر کرنے والی رپورٹ غیر مصدقہ اور ناقابل قبول اندازوں پر مبنی ہیں۔

علاقائی سیاسی پارٹیوں کمائی اور خرچ کی رپورٹ جاری

ایسوسی ایشن فار ڈیموکریٹک ریفارمز نے اپنی حالیہ جاری کردہ رپورٹ میں ملک کی 57 علاقائی جماعتوں میں سے 39 علاقائی جماعتوں کی آمدنی اور اخراجات کی رپورٹ جاری کی ہے۔ رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ سال 2022-23 کی آمدنی اور اخراجات کے لحاظ سے کون سی پارٹی اوپر اور نیچے ہے۔ کس نے کتنا عطیہ وصول ...

جیتن سہنی قتل کے سلسلے میں مزید 3 ملزمان گرفتار، ایس ایس پی کے مطابق جائے وقوعہ سے اہم دستاویزات برآمد

  وکاسشیل انسان پارٹی (وی آئی پی) کے سربراہ مکیش سہنی کے والد کے قتل کیس میں پولیس نے مزید 3 ملزمان کو گرفتار کیا ہے۔ یہ گرفتاری کلیدی ملزم کاظم انصاری کی نشان دہی پر کی گئی ہے۔ دربھنگہ کے سینئر سپرنٹنڈنٹ آف پولیس جگوناتھ ریڈی نے یہ اطلاع دی۔

آئی اے ایس پوجا کھیڈکر تنازعہ کے درمیان یو پی ایس سی کے چیئرمین منوج سونی عہدے سے مستعفی

  یونین پبلک سروس کمیشن (یو پی ایس سی) کے چیئرمین منوج سونی نے اپنے عہدے سے استعفیٰ دے دیا ہے۔ دلچسپ بات یہ ہے کہ انہوں نے اپنی مدت ملازمت پوری ہونے سے قبل ہی اپنا استعفی صدر کو ارسال کر دیا ہے۔

کیجریوال جان بوجھ کر کم کیلوری والا کھانا لے رہے ہیں، ایل جی کا الزام، عآپ کا شدید ردعمل

عام آدمی پارٹی کے رکن پارلیمنٹ سنجے سنگھ نے دہلی کے وزیر اعلی اروند کیجریوال کی صحت سے متعلق لیفٹیننٹ گورنر ونے سکسینہ کے چیف سکریٹری کو لکھے گئے خط پر ردعمل ظاہر کیا ہے۔ ایل جی کو نشانہ بناتے ہوئے سنجے سنگھ نے کہا کہ ایل جی یہ کیا مذاق کر رہے ہیں؟ کیا کوئی آدمی رات کو شوگر کم ...

نیٹ پر سپریم کورٹ کے حکم کے بعد این ٹی اے نے آن لائن اپ لوڈ کئے مرکز اور شہر وار نتائج

نیٹ پر سپریم کورٹ کے حکم کے بعد این ٹی اے نے نیٹ یو جی طلباء کے مرکز اور شہر وار نتائج کو آن لائن اپ لوڈ کر دیا ہے۔ نتائج اپلوڈ کرنے کے لئے ہفتہ کی دوپہر 12 بجے تک کا وقت دیا گیا تھا۔ تاہم، سی جے آئی ڈی وائی چندرچوڑ، جسٹس جے بی پاردیوالا اور جسٹس منوج مشرا کی بنچ نے واضح کیا تھا کہ ان ...