کرناٹک میں ہندی دیو س منانے کو لے کر تنازعہ چھڑ گیا

Source: S.O. News Service | Published on 14th September 2022, 12:05 PM | ریاستی خبریں |

بنگلورو، 14؍ستمبر (ایس او نیوز؍ایجنسی) چہارشنبہ کے روم منائے جانے والے ہندی دیو س کو لے کرکرناٹک میں ایک تنازعہ کھڑا ہوگیاہے‘ جے ڈی (یس) اور بی جے پی ایک دوسرے کے مدمقابل اگئے ہیں۔سابق چیف منسٹر ایچ ڈی کمارا سوامی نے چیف منسٹر بسوراج بومیائی کو مکتوب تحریر کیاکہ ہندی دیوس منانے اس سرزمین کے ساتھ انصافی کے مترادف ہوگا۔

مذکورہ بی جے پی نے ان کے مکتوب کو مسترد کرتے ہوئے لکھا کہ کرناٹک کی عوام سیاسی مقصد کو سمجھنے کے لئے کافی ہوشیار ہیں اور انہیں کوئی پرواہ نہیں ہے۔ تاہم پولیس کوئی موقع دینا نہیں چاہا رہی ہے اور فیصلہ کیاہے کہ ریاست بھر بالخصوص بنگلورو میں سخت چوکسی اختیار کی جائے گی۔

کمارا سوامی نے اب بھی یہی کہہ رہے ہیں کہ ملک ہزاروں زبانوں اور علاقائی بولیوں پر مشتمل ہے اور یہ 500صوبوں کا ایک عظیم وفاق ہے جس میں مختلف سماجی اور ثقافتی ادارے اکٹھا ہوئے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ ”اس سرزمین پر ایک زبان کے ساتھ ترجیحی رویہ اس سرزمین کی توہین ہے۔

ستمبر14کے روز مرکز کے اسپانسر کردہ ہندی دیوس کو کرناٹک میں زبردستی منایاجارہا ہے‘ جو برسراقتدار بی جے پی کی جانب سے کنڈیوں کے ساتھ دغابازی ہے“۔

انہوں نے بومائی پر زوردیا کہ وہ کنڈا عوام کے پیسوں پر ہندی دیوس نہ منائیں۔ اس مکتوب پر سخت ردعمل پیش کرتے ہوئے ریاستی وزیربرائے تعلیم بی سی ناگیشونے کہاکہ کنڈاکی عوام ان کی اعلان پر توجہہ نہیں دی گی اور مزیدکہاکہ 1949سے ہندی دیوس منایاجاتا آرہا ہے۔

ناگیش نے کہاکہ یہ سیاسی فائدے کے لئے اٹھایاجانا والا مسئلہ ہے‘ او رمزیدکہاکہ کمارا سوامی ہر چیز پر فائدہ اٹھانے او رسیاست کرنا چاہتے ہیں۔ اگر ان کا نظریہ ایسا ہوتا تو انہوں نے کہاکہ ان کے والد سابق وزیراعظم ایچ ڈی دیو ی گوڑا ان تقاریبات کو نکال دیتے تھے۔

ناگیش نے یہ کہنا چاہا کہ ہندی دیوس وزیراعظم نریندر مودی نے متعارف نہیں کروایاہے‘ یہ 1949سے منایاجانے والاجشن ہے۔

انہوں نے کہاکہ ”مذکورہ بی جے پی حکومت ہندوستان کی علاقائی زبانوں کی ترقی کے لئے سنجیدہ ہے“۔

ایک نظر اس پر بھی

بجٹ 2023: ’کوئی امید نہیں، بجٹ ایک بار پھر ادھورے وعدوں سے بھرا ہوگا‘، سدارمیا کا اظہارِ خیال

یکم فروری کو مرکز کی مودی حکومت رواں مدت کار کا آخری مکمل بجٹ پیش کرنے والی ہے۔ مرکزی وزیر مالیات نرملا سیتارمن کے ذریعہ بجٹ پیش کیے جانے سے قبل بجٹ 2023 کو لے کر کانگریس کے کچھ لیڈران نے اپنے خیالات ظاہر کیے ہیں۔

کرناٹک ہائی کورٹ کی وارننگ، کہا: چیف سکریٹری دو ہفتوں میں لاگو کرائیں حکم

کرناٹک ہائی کورٹ نے منگل کو انتباہ دیا کہ اگر ریاستی حکومت دو ہفتوں کے اندر سبھی گاؤں اور قصبوں میں قبرستان کے لئے زمین فراہم کرانے کے اس کے حکم پر عمل درآمد کرنے میں ناکام رہتی ہے تو وہ چیف سکریٹری کے خلاف توہین عدالت کی کارروائی شروع کرنے پر مجبور ہوجائے گا ۔

منگلورو: محمد فاضل قتل میں ہندوتوا عناصر ملوث ہونے کا دعویٰ - اپوزیشن پارٹیوں نےکیا کیس کی دوبارہ جانچ کامطالبہ 

بی جے پی یووا مورچہ لیڈر پروین نیٹارو قتل کے بدلے میں عناصر کی طرف سے سورتکل میں محمد فاضل کو قتل کرنے کا کھلے عام دعویٰ کرنے والے وی ایچ پی اور بجرنگ دل لیڈر شرن پمپ ویل کے خلاف کانگریس ، جے ڈی ایس اور ایس ڈی پی آئی جیسی اپوزیشن پارٹیوں نے اس قتل کیس کی ازسر نو جانچ کا مطالبہ کیا ...

ٹمکورو میں اشتعال انگیز بیان دینے والے شرن پمپ ویل سمیت دیگر ہندوتوا لیڈروں کے خلاف قانونی کارروائی کا مطالبہ لے کر اے پی سی آر نے ایس پی کو دیا میمورنڈم

حال ہی میں ریاست کرناٹک کے  ٹمکور میں  منعقدہ شوریہ یاترا کے دوران وی ایچ پی لیڈر شرن پمپ ویل نے جو متنازع اور اشتعال انگیز بیان دیا  تھا ، اس پر کٹھن کارروائی کرتے ہوئے اسے گرفتارکرنے کا مطالبہ لے کر  ایسوسی ایشن فار پروٹیکشن آف سوِل رائٹس (اے پی سی آر) کے  ایک وفد نے ٹمکورو ...