میزورم میں حکمراں جماعت کے ساتھ وزیراعلیٰ خود بھی ہارگئے الیکشن

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 5th December 2023, 1:50 PM | ملکی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

نئی دہلی 5/ ڈسمبر(ایس او نیوز) مدھیہ پردیش، راجستھان، چھتیس گڑھ اور تلنگانہ میں انتخابی نتائج سامنے آنے کے اگلے روز یعنی پیر کوشمال مشرق کی ریاست میزورم میں ووٹوں کی گنتی کی گئی جس کے بعد انتخابی نتائج میں حکمراں جماعت کے ساتھ ساتھ  خود ریاست کے وزیراعلیٰ کو شکست سے دوچار ہونا پڑگیا۔

میڈیا رپورٹوں کے مطابق ریاست کی ۴۰؍ رکنی اسمبلی میں ریاستی جماعت زورم پیپلز موومنٹ نے ۲۷؍ نشستوں پر کامیابی حاصل کی جبکہ حکمراں میزو نیشنل فرنٹ (ایم این ایف) کو محض۱۰؍ سیٹوں پر اکتفا کرنا پڑا۔ بتایا گیا ہے کہ زورم پیپلز موومنٹ نئی پارٹی ہے جس کی حال ہی میں تشکیل ہوئی ہے۔ یہاں بی جے پی کو۲؍ اور کانگریس کو ایک نشست میں کامیابی ملی ہے۔

میزورم میں سب سے بڑا اُلٹ پھر یہ ہوا کہ راجدھانی آئزول( ایسٹ۔ ون )انتخابی حلقہ  سے ریاست کے  وزیر اعلیٰ زورمتھنگا خود الیکشن ہار گئے۔ انہیں زیڈ پی ایم کے لال تھن سانگا نے۲؍ ہزار سے زیادہ ووٹوں کے فرق سے شکست دی۔ زور متھنگا اُس وقت کافی سرخیوں میں آئےتھے جب انہوں نے وزیراعظم کے ساتھ اسٹیج شیئر کرنے سے انکار کردیا تھا۔ ان کا کہنا تھا کہ لوگ بی جے پی سے ناراض ہیں، ایسے میں ان کے ساتھ جانے کا مطلب بی جے پی کا ساتھ دینا ہوجائے گا۔ حالانکہ ان کی حکومت میں بی جے پی شراکت دار تھی۔

 شکست کے بعد وزیراعلیٰ نے میزورم کے گورنر ڈاکٹر ہری بابو کمبھام پتی سے ملاقات کی اور انہیں اپنا استعفیٰ سونپ دیا۔ زیڈ پی ایم کی شاندار جیت پر پارٹی لیڈر اور وزیر اعلیٰ کے دعویدار لالدوہوما نے کہا کہ میں پارٹی کی جیت سے خوش ہوں۔ مجھے اسی طرح کے نتائج کی توقع تھی۔ میں آئندہ ایک دو روز میں گورنر سے ملاقات کروں گا اور حلف برداری کیلئے وقت اور دن کا تعین کروں گا۔

 خیال رہے کہ لالدوہوما اندرا گاندھی کے سیکوریٹی انچارج اور کانگریس کے رکن پارلیمان رہ چکے ہیں۔  جورام پیپلز موومنٹ پارٹی ایک طرح سے ۶؍ علاقائی جماعتوں کا اتحاد  ہے جس میں میزورم پیپلز کانفرنس، زورم نیشنلسٹ پارٹی، زورم ایکسوڈس موومنٹ، زورم ڈی سینٹر لائزیشن فرنٹ، زورم ریفارمیشن فرنٹ اور میزورم پیپلز پارٹی شامل  ہیں۔۲۰۱۸ء میں زیڈ پی ایم نے اسی اتحاد کے ساتھ الیکشن لڑا تھا اور۸؍ سیٹیں جیتی تھیں۔ تب تک یہ پارٹی رجسٹرڈ نہیں تھی۔ اس کے بعد، الیکشن کمیشن  نے جولائی۲۰۱۹ء میں پارٹی کو باضابطہ طور پر رجسٹر کیا۔ اس کے بعد اس اتحاد کی سب سے بڑی جو اس کی  بانی بھی تھی یعنی میزورم پیپلز کانفرنس، وہ اتحاد سے باہر ہو گئی۔ بعد ازاں باقی پانچ جماعتوں نے ضم ہو کر ایک نئی پارٹی تشکیل دے دی، جس کا نام زیڈ پی ایم ہی رکھا۔ اس طرح یہ ایک نئی پارٹی کے طور پر رائے دہندگان کے سامنے آئی۔

 لالدوہوما سابق آئی پی ایس افسر ہیں۔ انہوں نے ۱۹۸۴ء میں کانگریس کے ٹکٹ پر میزورم سے لوک سبھا الیکشن لڑا تھا اور کامیابی حاصل کی تھی۔ بعد میں ان کے ریاستی کانگریس لیڈروں سے اختلافات ہو گئے، جس کے بعد انہیں نااہل قرار دے دیا گیا۔ وہ۱۹۸۸ء میں انسداد انحراف قانون کے تحت نااہل قرار پانے والے پہلے لوک سبھا رکن بنے۔

 میزورم کے اس نتیجے کی خاص بات یہ ہے کہ وہاں پر بھی رائے دہندگان نے کانگریس کو مسترد کردیا ہے۔ گزشتہ الیکشن میں اسے۳؍ سیٹیں ملی تھیں لیکن اس مرتبہ اس کے حصے میں صرف ایک سیٹ ہی آسکی۔ اس کے برعکس  بی جے پی کو ۲؍ سیٹیں ملیں جبکہ گزشتہ اسمبلی میں صرف ایک سیٹ تھی۔

ایک نظر اس پر بھی

اُترپردیش کے کاس گنج میں ٹریکٹر ٹرالی تالاب میں اُلٹ گئی؛ 24 افراد ہلاک؛ کئی شدید زخمی

اُترپردیش کے کاس گنج میں ٹریکٹر ٹرالی تالاب میں الٹنے کے نتیجے میں ٹرالی میں سوار54 تالاب میں گر گئے تھے جسمیں سے اب تک 24 لوگوں کی موت واقع ہونے کی اطلاعات ہیں جبکہ بچائے گئے دیگرلوگوں میں کئی لوگوں کی حالت نازک بنی ہوئی ہے۔

سات مطالبات لے کر ایس ڈی پی آئی کیرالہ نے کاسرگوڈ سے ترویندرم تک نکالی احتجاجی ریلی

سوشیل ڈیموکریٹک پارٹی آف انڈیا (SDPI) کیرلا کی جانب سے سات مطالبات لیکر پارٹی کے ریاستی صدر اشرف مولوی کی قیادت میں "جنا مُنیٹّا یاترا " کا آغاز گزشتہ 14فروری کو کاسر گوڈ ضلع کے اپالا شہر سے کیا گیا تھا،یہ یاترا یکم مارچ تک جاری رہے گی اورتریویندرم پہنچ کر اختتام کو پہنچے گی۔

25 لاکھ کا قلم اور 15 لاکھ کا سوٹ استعمال کرنے والے پی ایم مودی غریب ہونے کا ڈرامہ کرتے ہیں! سنجے راؤت

’’بی جے پی کے قومی صدر جے پی نڈا نے اپنے کارکنوں کو مشورہ دیا ہے کہ وہ عام لوگوں کے درمیان جاتے ہوئے سادگی اپنائیں۔ مہنگی گھڑیوں اور کاروں کا استعمال نہ کریں۔ لیکن جے پی نڈا کا یہ مشورہ وزیر اعظم مودی پر لاگو نہیں ہوتا ہے۔ پی ایم مودی اپنے جیب میں جو قلم رکھتے ہیں اس کی قیمت 25 ...

اروند کیجریوال کو ای ڈی کی جانب سے ساتواں سمن جاری، 26 فروری کو حاضر ہونے کی ہدایت

 دہلی کے وزیراعلیٰ اروند کیجریوال کو ای ڈی کی جانب سے ساتواں سمن موصول ہوا ہے۔ ای ڈی نے جمعرات 22 بائیس فروری کو انہیں سمن ارسال کرتے ہوئے پیر کو پوچھ گچھ کے لیے طلب کیا ہے۔ اس سے قبل اروند کیجریوال کو پیر 19 فروری 2024 کو ای ڈی کے سامنے پیش ہونا تھا لیکن وہ حاضر نہیں ہوئے۔ دہلی کے ...

ستیہ پال ملک کے گھر اور دفتر پر سی بی آئی کا چھاپہ، جموں و کشمیر کے بھی 30 مقامات پر چھاپہ ماری

 سی بی آئی نے جموں و کشمیر کے کیرو ہائیڈرو الیکٹرک پروجیکٹ سے متعلق بدعنوانی کے معاملے میں جمعرات کی صبح دہلی میں سابق گورنر ستیہ پال ملک کی رہائش گاہ اور دفتر کی تلاشی لی۔ نیوز پورٹل ’آج تک‘ کی رپورٹ کے مطابق مرکزی ایجنسی نے جموں و کشمیر میں 30 مقامات پر بھی چھاپے مارے۔

آنسو گیس کے گولوں سے کسان رہنما جگجیت سنگھ ڈلیوال کی طبیعت خراب، اسپتال کے ایمرجنسی وارڈ میں داخل

 کسان تحریک کے دوسرے مرحلے کے دوران اہم رہنما کے طور پر ابھرنے والے بھارتیہ کسان یونین لیڈر جگجیت سنگھ ڈلیوال کی طبیعت بدھ کی شام اچانک بگڑ گئی۔ انہیں پٹیالہ کے راجندرا اسپتال کے ایمرجنسی وارڈ میں داخل کرایا گیا ہے۔

احتجاج کررہےکسانوں نے اپنی مارچ دو دن کے لئے کی ملتوی

کسان پنجاب اور ہریانہ کی سرحدوں پر  ڈٹے ہوئے ہیں ۔ مشتعل کسانوں نے بدھ یعنی 21 فروری 2024 کو اپنی’دہلی چلو ‘ مارچ کو دوبارہ شروع کیا، لیکن وہ اس میں کامیاب نہیں ہو سکے۔ اس دوران کھنوری سرحد پر جھڑپ میں ایک نوجوان مظاہرہ کرنے والے  کی موت ہو گئی اور تقریباً 12 پولیس اہلکار زخمی ہو ...

کمٹہ میں سفر کے دوران گلے سے ہار اُڑانے والی دو برقعہ پوش خواتین گرفتار

  ہوناور سے بس میں سفر کے دوران گلے سے سونے کا منگل سوتر اڑانے والی دو برقعہ پوش خواتین کو کمٹہ میں گرفتار کیا گیا ہے  جن کی شناخت تملناڈو کی رہنے والی سندھیا سنجئے  (40 سال) اور راساتی مروگے (24 سال) کے طور پر کی گئی ہے ۔

مہاراشٹر: بلڈھانہ میں مذہبی تقریب کے دوران ’پرساد‘ کھا کر بیمار پڑے 200 افراد

مہاراشٹر کے بلڈھانہ میں ’پرساد‘ کھانے سے تقریباً 200 افراد بیمار پڑ گئے ہیں۔ بڑی تعداد میں لوگوں کی طبیعت ناساز ہونے سے علاقہ میں بھی افرا تفری کا ماحول دیکھنے کو مل رہا ہے۔ بتایا جاتا ہے کہ بلڈھانہ میں ایک مذہبی تقریب کے دوران سینکڑوں لوگوں نے پرساد کھایا تھا، جن میں سے کم و ...

بھٹکل:آج 21فروری سے آئی سی ایس ای ،دسویں جماعت کے امتحانات کا آغاز: تعلقہ میں کل 144طلبا و طالبات امتحان میں ہوں گے شریک

کونسل فور دی انڈین اسکول سرٹیفکٹ ایگزامنیشن کے زیراہتمام آئی سی ایس ای کےدسویں جماعت کےسالانہ ا متحانات ملک بھر میں  21فروری سے 28مارچ تک منعقد ہونگے۔ امسال بھٹکل تعلقہ میں کل 144طلبا و طالبات آئی سی ایس ای ، دسویں کے امتحانات میں شریک ہونگے۔