الریاض معاہدہ یمن میں امن واستحکام کا دیباچہ ثابت ہوگا:محمد بن سلمان

Source: S.O. News Service | By INS India | Published on 6th November 2019, 5:24 PM | عالمی خبریں |

 دبئی /6نومبر (آئی این ایس انڈیا)سعودی عرب کے ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان نے یمنی حکومت اور جنوبی عبوری کونسل کے مابین ریاض معاہدے کو یمنی عوام کی فتح اور جنگ زدہ ملک کے امن استحکام کے لیے نقطہ آغاز قرار دیا۔الریاض میں معاہدے سے قبل خطاب کرتے ہوئے سعودی ولی عہد نے کہا کہ خادم الحرمین الشریفین شاہ سلمان بن عبدالعزیز کی ہدایت اور ان کی سرپرستی میں یمنی بھائیوں کے مابین پائے جانے والے تنازعہ کو دور کرنے کے لیے تمام تر کوششیں بروئے کار لائی گئی ہیں۔منگل کو سعودی ولی عہد شہزادہ یمنی صدر عبد ربہ منصور ہادی اور ابوظہبی ولی عہد شہزادہ محمد بن زید کی موجودگی میں یمن کی آئینی حکومت اور جنوبی عبوری کونسل کے مابین ریاض معاہدے پر دستخط کی تقریب ہوئی۔شہزادہ محمد بن سلمان نے امید ظاہر کی کہ یہ معاہدہ یمن کے استحکام کے لیے ایک نیا آغازگا۔ انہوں نے مزید کہا کہ یہ معاہدہ سیاسی حل اور ملک میں جنگ کے خاتمے کی طرف ایک قدم ہے۔سعودی ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان نے کہا کہ سعودی عرب نے یمن کی آئینی حکومت کے مطالبے پرعبوری کونسل کے ساتھ مصالحت کی کوششیں کیں۔انہوں نے مزید کہا کہ ہم نے یمن اور خطے کی سلامتی کے لئے بہت کچھ حاصل کیا ہے اور ہم یمنی عوام کی امنگوں پر عمل پیرا رہیں گے۔ 

ایک نظر اس پر بھی

ہند۔چین ثالثی کیلئے ٹرمپ کی حیرت انگیز پیشکش

امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ نے ہندوستان اور چین کے مابین جاری سرحدی تنازعہ میں ثالثی کی پیش کش کرتے ہوئے گذشتہ سال پاکستان کے ساتھ تنازعہ کی یاد تازہ کردی- انہوں نے اس وقت بھی یہی پیش کش کی تھی اور کہا تھا کہ اگر ہندوستان اور پاکستان چاہیں تو وہ مسئلہ کشمیر پر ثالثی کر سکتے ہیں -

نیوزی لینڈ: زلزلہ نے وزیراعظم جیسنڈا آرڈرن کو بنایا عوامی توجہ کا مرکز

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق انتہائی پرسکون انداز میں ٹی وی میزبان Ryan Bridge کے پروگرام Newshub AM Show کرونا سے نمٹنے سے متعلق مباحثے کے دوران زلزلے کے جھٹکے شروع ہوئے اور کیمرے میں دکھائی دینے والی چیزیں حرکت کرنے لگیں۔