کرناٹک: بغیر کابینہ کے وزیراعلی یدی یورپا کے کام کرنے پر مچا گھمسان

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 14th August 2019, 11:18 PM | ریاستی خبریں |

بنگلورو،14اگست(ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا)کرناٹک میں صرف ایک شخص کی حکومت ہونے پر کانگریس حملہ آور ہے۔18 دن بعد بھی وزیر اعلی بی ایس یدی یورپا اپنی کابینہ کا قیام نہیں کر سکے ہیں۔کانگریس نے آئین کا حوالہ دیتے ہوئے کہا ہے کہ گورنر کابینہ کی مشاورت پر کام کرتے ہیں تو پھر 18 دن سے کس طرح بغیر کابینہ کے حکومت چل رہی ہے۔کانگریس کی طرف سے پارٹی کے ترجمان وی اگرپا نے گورنر کی خاموشی پر بھی سوال اٹھاتے ہوئے کہا کہ کیا ریاست میں آئین کے قوانین کے مطابق حکومت چل رہی ہے؟ ایک وزیر اعلی کو کیسے حکومت کہا جا سکتا ہے؟ کانگریس کے ترجمان نے کہا کہ گورنر کو اس مسئلے کو نوٹس میں لے کر حکومت برخاست کرنی چاہئے۔

وزراء کی فہرست فائنل کرنے کے لئے گزشتہ سات اگست کو دہلی پہنچے یدی یورپا کو بی جے پی صدر امت شاہ یہ کہہ کر لوٹا چکے ہیں کہ ابھی سیلاب ریلیف اور بحالی پر توجہ دیں۔کابینہ سے کہیں زیادہ ضروری عوام کی حفاظت ہے۔اب ذرائع بتا رہے ہیں کہ 15 اگست کے بعد 16 اگست کو یدی یورپا بی جے پی صدر امت شاہ سے ملنے کے لئے دہلی آ سکتے ہیں۔چونکہ کرناٹک میں جنتا دل (ایس) -کاگریس حکومت گرنے کے بعد اگرچہ تعداد بی جے پی کے حق میں ہیں، مگر زمین زیادہ مضبوط نہیں ہے۔ایسے میں یدی یورپا چاہتے ہیں کہ تمام مساوات کو ذہن میں رہ کر ہی وہ کابینہ بنائیں،جس سے کابینہ کو لے کر کسی طرح کی ناراضگی نہ رہے۔اس ناطے وہ مرکزی قیادت سے اس مسئلے پر مشاورت کے بعد ہی اپنی سطح سے وزراء کی فہرست فائنل کرنا چاہتے ہیں۔

اقلیت میں آنے کے بعد جنتا دل (ایس) -کاگریس مخلوط حکومت گر گئی تھی۔کئی دنوں کی اتھل پتھل کے بعد بی جے پی نے حکومت بنائی۔26 جولائی کو بی ایس یدی یورپا نے وزیر اعلی کے عہدے کا حلف لیا۔ان کے ساتھ کسی بھی وزیر نے حلف نہیں لیا تھا،کیونکہ اب تک بی ایس یدی یورپا بی جے پی کی اعلی قیادت کے ساتھ رائے شماری کرکے وزراء کی فہرست نہیں تیار کر سکے ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

ریاستی حکومت نے آئی ایم اے فراڈ کیس کی جانچ سی بی آئی کے حوالے کیا

ریاست کی سابقہ کانگریس جے ڈی ایس حکومت کے دور میں کی گئی مبینہ ٹیلی فون ٹیپنگ کی سی بی آئی جانچ کے ا حکامات صادر کرنے کے دودن بعد ہی آج ریاستی حکومت نے کروڑوں روپیوں کے آئی ایم اے فراڈ کیس کی جانچ سی بی آئی کے سپرد کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

کیا شمالی کینرا سے شیورام ہیبار کے لئے وزارت کا قلمدان محفوظ رکھا گیا ہے؟

کرناٹکاکے وزیراعلیٰ  ایڈی یورپا نے دو دن پہلے اپنی کابینہ کی جو تشکیل کی ہے اس میں ریاست کے 13اضلاع کو اہمیت دیتے ہوئے وہاں کے نمائندوں کو وزارتی قلمدان سے نوازا گیا ہے۔اور بقیہ 17اضلاع کو ابھی کابینہ میں نمائندگی نہیں دی گئی ہے۔

بنگلورو: نشے میں دھت شخص نے فٹ پاتھ پر 7 لوگوں کو کچل دیا

شراب کے نشے میں دھت ایک شخص نے بہت تیز رفتار کار فٹ پاتھ پر چڑھا دی اور فٹ پاتھ پر چل رہے 7 افراد اس کار کی زد میں آ گئے۔ زخمیوں کو فوراً اسپتال پہنچایا گیا اور خبر لکھے جانے تک ان لوگوں کی حلات نازک بنی ہوئی ہے۔ یہ واقعہ بینگلورو کے ایچ ایس آر لے آؤٹ علاقے کا ہے۔