دنیا کو کرونا وائرس کے ساتھ جینا سیکھنا ہو گا: عالمی ادارۂ صحت

Source: S.O. News Service | Published on 14th May 2020, 3:53 PM | عالمی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

جنیوا،14؍مئی (ایس او نیوز؍ایجنسی) عالمی ادارۂ صحت نے خبردار کیا ہے کہ کرونا وائرس ختم ہونے والا نہیں اور دنیا کو اس وبا کے ساتھ ہی جینا سیکھنا ہو گا۔

دنیا بھر میں کرونا وائرس سے تین لاکھ سے زائد افراد ہلاک ہو چکے ہیں اور وبا پر قابو پانے کے لیے کئی ممالک لاک ڈاؤن اور دیگر پابندیوں میں نرمی کی طرف جا رہے ہیں۔ تاہم ماہرین مسلسل خبردار کر رہے ہیں کہ ایسا کرنے سے وبا کی شدت میں اضافہ ہو سکتا ہے۔

عالمی ادارۂ صحت نے بھی کرونا وائرس کے پھیلاؤ کو سنگین قرار دیا ہے۔

ادارے کے ہنگامی حالات کے ڈائریکٹر مائیکل ریان نے بدھ کو جنیوا میں ورچوئل پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ کرونا وائرس انسانیت میں سرایت کر چکا ہے اور اب یہ پیش گوئی نہیں کی جا سکتی کہ اس پر کب تک قابو پایا جا سکتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ دنیا سے اب تک ایچ آئی وی ختم نہیں ہوا اور اب اسے کرونا وائرس کی صورت میں ایک وبا کا چیلنج درپیش ہے جو جلد ختم ہونے والا نہیں ہے۔

ریان نے مزید کہا کہ بین الاقوامی برادری کے لیے یہ اچھا موقع ہے کہ کرونا وائرس کی ویکسین کی تیاری کے لیے مواقع تلاش کیے جائیں اور اس کی تیاری کے بعد اس کی رسائی ممکن بنائی جائے۔

عالمی ادارہ صحت کے سربراہ ٹیڈروس گیبریاسس کا بھی کہنا ہے کہ دنیا کے بیشتر ملک کرونا وائرس پر قابو پانے کے لیے مختلف اقدامات کر رہے ہیں۔ تاہم ادارے کی تجاویز بدستور یہی ہیں کہ جتنا زیادہ ممکن ہو اس کے پھیلاؤ کو روکنے کے لیے اقدامات کیے جائیں۔

گزشتہ سال کے اختتام پر چین کے شہر ووہان سے جنم لینے والے کرونا وائرس نے پوری دنیا کو اب تک اپنی لپیٹ میں لے رکھا ہے اور سب سے زیادہ متاثرہ ملک امریکہ ہے جہاں 80 ہزار سے زائد افراد ہلاک ہو چکے ہیں۔

وبا کے علاج کے لیے امریکہ اور برطانیہ سمیت دیگر ملکوں میں ویکسین کی تیاری پر کام جاری ہے۔ وبا کے پھیلاؤ کو روکنے کے لیے کہیں لاک ڈاؤن ہے تو کہیں شہریوں کو گھروں میں رہنے کی ہدایات کی جا رہی ہیں۔

چین سمیت یورپ کے بعض ملکوں میں معمولاتِ زندگی بحال کر دیے گئے ہیں لیکن شہریوں کو احتیاطی تدابیر پر عمل درآمد کی ہدایت کی جا رہی ہے۔

امریکہ کی مختلف ریاستوں میں لاک ڈاؤن کے خلاف آوازیں اٹھ رہی ہیں اور شہریوں کو آزادانہ نقل و حرکت کی اجازت دینے کے مطالبے میں مسلسل اضافہ ہو رہا ہے۔

صدر ڈونلڈ ٹرمپ کئی مواقع پر کاروبارِ زندگی بحال کرنے کا کہہ چکے ہیں۔ تاہم وبائی امراض کے ماہر امریکی ڈاکٹر انتھونی فاؤچی مسلسل خبردار کر رہے ہیں کہ لاک ڈاؤن میں نرمی کی صورت میں وبا مزید شدت اختیار کر سکتی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

ہانگ کانگ کے جمہوریت نواز میڈیا ٹائیکون جمی لائی گرفتار

ہانگ کانگ میں جمہوریت نواز میڈیا کی اہم شخصیت جمی لائی کے ایک قریبی ساتھی کا کہنا ہے کہ انہیں غیر ملک طاقتوں کے ساتھ ملی بھگت کے شبہے میں متنازعہ سکیورٹی قانون کے تحت گرفتار کیا گیا ہے۔ جمی لائی کی میڈیا کمپنی 'نیکسٹ ڈیجیٹل' سے وابستہ ایک سینیئر افسر مارک سائمن نے پیر 10 جولائی ...

افغانستان میں چند ماہ کے دوران امریکی فوجیوں کی تعداد 5 ہزار سے کم کردی جائیگی، امریکی وزیر دفاع

امریکی وزیر دفاع مارک ایسپر نے تصدیق کی ہے کہ افغانستان میں امریکی افواج کو نومبر کے اختتام تک کم از کم 5ہزارتک کم کر دیا جائیگا۔ایسپر نے فاکس نیوز کودیئے گئے ایک انٹرویو میں کہا ہے کہ ہم نومبر کے آخر تک یہ تعداد 5 ہزار سے کم کرنا چاہتے ہیں۔ ہمیں کانگریس کو بریف کرنا پڑے ...

بیروت دھماکوں کے بعد لبنان میں سیاسی دھماکے جاری ، وزیر اطلاعات منال عبدالصمد مستعفی

بیروت دھماکہ جن میں چھہ ہزار سے زیادہ لوگ زخمی ہوئے اور ڈیڑھ سو سے زائد افراد موت کا شکار ہوئے اس کے بعد سے لبنان میں حکومت کے خلاف پہلے سے موجود ناراضگی بڑھ گئی ہے ۔ اس بڑھتی ناراضگی کی وجہ سے لبنان کی وزیر اطلاعات منال عبدالصمد نے استعفی دے دیا ہے اور ابھی تک چھہ ارکان پارلیمنٹ ...

یلاپورکے دیہات میں محکمہ جنگلات کے افسران اور عملے کی طرف سے مسلسل ہراسانی کے خلاف بھٹکل میں دیا گیا میمورنڈم

ضلع شمالی کینرا کے یلاپور تعلقہ میں گولاپور نامی دیہاتی علاقے میں رہائش پزیر ایک 70سالہ خاتون اوراس کے خاندان کو محکمہ جنگلات کے افسران اور عملے کی جانب سے مسلسل ہراساں کیے جانے کا الزام لگاتے ہوئے جنگلاتی زمین پر بسنے والے لوگوں کے حقوق کے لیے جدوجہد میں مصروف تنظیم نے وزیر ...

کرناٹک کے وزیر صحت بی سری راملو کورونا پوزیٹیو

کرناٹک کے وزیرصحت بی سری راملوکے کورونا وائرس (کووڈ-19) سے متاثر ہونے کی تصدیق ہوئی ہے - سری راملو نے اتوار کو ٹوئٹ کرکے یہ اطلاع دی-انہوں نے بتایا کہ ہلکا بخار ہونے کے بعد کورونا جانچ کرائی گئی تھی، جس میں ان کی رپورٹ پوزیٹیوآئی ہے - وزیر کو بورنگ اسپتال میں بھرتی کرایا گیا ہے ۔