نیتا جی کے ساتھ کیا ہوا، ہمیں یہ جاننے کا حق ہے: ممتا بنرجی

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 19th August 2019, 12:01 PM | ملکی خبریں |

کولکتا،19؍اگست (ایس او نیوز؍یو این آئی)  مغربی بنگال کی وزیر اعلی ممتا بنرجی نے اتوار کو نیتا جی سبھاش چندر بوس کو وطن کا عظیم سپوت بتایا اور ان کی برسی پر انہیں خراج عقیدت پیش کیا۔ بنرجی نے سوشل میڈیا پر لکھا ’’نیتا جی آج ہی کے دن 1945 میں تائیوان کے تا ئی هوكو ہوائی اڈے سے طیارے میں سوار ہوئے اور اس کے بعد وہ ہمیں ہمیشہ کے لئے چھوڑ کر چلے گئے۔

ہمیں آج تک یہ نہیں پتہ چل پایا ہے کہ ان کے ساتھ کیا ہوا۔ لوگوں کو وطن کے عظیم سپوت کے بارے میں جاننے کا حق ہے‘‘۔ سرکاری ریکارڈ کے مطابق سال 1945 کے اس دن نیتا جی تائیوان میں حادثے کا شکار ہوئے متسوبیشی جنگی کے آئی طیارے اي -21 پر سوار تھے۔

اگرچہ مکھرجی کمیشن نے 2005 کی اپنی رپورٹ میں کہا تھا کہ نیتا جی کو اس وقت کے سوویت یونین (اب روس) سے بچ نکلنے کے لئے طیارہ حادثے کی جھوٹی کہانی گھڑی گئی تھی۔ اس وقت کانگریس حکومت نے مکھرجی کمیشن کی رپورٹ کو مسترد کر دیا تھا۔ ملک کے کئی لوگوں کا خیال ہے کہ 1985 تک اتر پردیش کے فیض آباد میں رہ رہے گم نامی بابا ہی نیتا جی سبھاش چندر بوس تھے۔

ایسا اس لئے کیونکہ نیتا جی کی موت آج بھی ایک راز بنی ہوئی ہے۔ ایک ستمبر 2016 کو وزیر اعظم نریندر مودی حکومت نے جاپان حکومت کی تحقیقاتی رپورٹ کو عام کیا، جس میں بتایا گیا ہے کہ نیتا جی کی موت تائیوان میں طیارہ حادثے میں ہوئی تھی۔ ان کے کئی حامیوں کا خیال ہے کہ نیتا جی طیارہ حادثے میں بچ گئے تھے اور چھپ کر رہ رہے تھے۔

ایک نظر اس پر بھی

ہندوؤں کو اقلیتی درجہ دینے کا مطالبہ کرنے والی عرضی سپریم کورٹ سے خارج

سپریم کورٹ نے لفظ اقلیت کی تعریف کرنے اور ملک کی 9 ریاستوں میں اقلیتوں کی شناخت کےلئے ہدایت جاری کرنے سے متعلق عرضی جمعرات کو خارج کر دی۔ عرضی میں مطالبہ کیا گیا تھا کہ جن ریاستوں میں ہندوؤں کی تعداد کم ہے وہاں انہیں اقلیتی درجہ فراہم کیا جائے۔

اپہار آتشزدگی سانحہ: متاثرین کی ’كيوریٹو عرضی‘ خارج، انسل برادران نہیں جائیں گے جیل

سپریم کورٹ نے اپہار سینما آتشزدگی سانحہ میں لاپروائی کے مجرم اورملک کے جانےمانے بلڈر انسل برادران کو بڑی راحت دیتے ہوئے آتشزدگی شکار کی ایسوسی ایشن کی كيوریٹو عرضی خارج کردی ہے۔ اب سشیل انسل اور گوپال انسل کو جیل نہیں جانا پڑے گا۔

دہلی: ڈاکٹر کفیل کی رہائی کے لئے یوپی بھون پر مظاہرہ، جامعہ کے متعدد طلبا پولیس حراست میں

اتر پردیش میں سیاسی اور سماجی کارکنان کے خلاف استعمال کیے جانے والے سخت قوانین کے خلاف جامعہ ملیہ اسلامیہ کے طلبہ نے جمعرات کو یہاں اتر پردیش بھون کا گھیراؤ کرنے کی کوشش کی لیکن پولیس نے انھیں حراست میں لے لیا۔

کیرالہ: وزیر اعلیٰ وجین کا سڑک حادثے میں 20 افراد کی موت پر تعزیت کا اظہار

 کیرالہ کے وزیراعلی پنارائی وجین نے جمعرات کو تمل ناڈو کے تروپور ضلع کے اویناشی کے نزدیک قومی شاہراہ پرایک لاری کے کیرالہ ریاستی ٹرانسپورٹ کارپوریشن (کے ایس آرٹی سی) کی بس سے ٹکرانے کی وجہ سے ہوئے حادثے میں 20 افراد کی موت پر گہرے دکھ کا اظہار کیا ہے۔

نربھیا کیس: مجرم ونے شرما نے خود کو بتایا شدید ذہنی مریض، عدالت میں داخل کی عرضی

نربھیا عصمت دری اور قتل کیس کے قصورواروں میں سے ایک ونے تہاڑ جیل میں اپنے کمرے کی دیوار میں سر مار کر خود کو زخمی کر لیا اور اب عدالت میں عرضی دائر کی ہے کہ اس کی ذہنی حالت ٹھیک نہیں ہے لہٰذا اس کا علاج کروایا جائے۔